ای میل

منہ میں پانی بھر دینے والے 15 پاکستانی پکوان

پاکستان کے پکوان یہاں کے عوام اور مقامات کے تنوع کی عکاسی کرتے ہیں۔

گوشت، سبزی، میٹھا، مٹھائی، پکوڑے یا سموسے سے لے کر بہت کچھ یہاں ہر طرح کے پکوان شوق سے کھائے جاتے ہیں اور ہر طرح کا ذائقہ دریافت کیا جاسکتا ہے۔

تو یہاں پاکستان کے چند ایسے کھانوں کے بارے میں جانیں جو منہ میں پانی لانے کے لیے کافی ہیں۔

کڑھی

فوٹو بشکریہ بسمہ ترمذی
فوٹو بشکریہ بسمہ ترمذی

بیسن اور دہی سے بننے والے اس لذیذ سالن کے درمیان موجود پکوڑے اس کا لطف دوبالا کر دیتے ہیں۔ راجستھانی، مارواڑی، گجراتی، سندھی، اور پنجابی، سب ہی اپنے اپنے مخصوص ذائقوں کی کڑھی بناتے ہیں۔ ان تمام میں رنگت اور ذائقوں کا تھوڑا بہت فرق ہوتا ہے، لیکن بنیادی اجزاء ایک ہی رہتے ہیں۔

قیمہ

شٹر اسٹاک فوٹو
شٹر اسٹاک فوٹو

قیمہ لذیذ اور مصالحے دار ہوتا ہے ، جو کہ پاکستان کے گھرانوں کا مشترکہ پسندیدہ پکوان بھی سمجھا جاسکتا ہے۔ قیمہ خالص شکل میں یا سبزیوں کے ساتھ اس کی موجودگی پسندیدہ اسٹریٹ فوڈ بھی ہے اور پاکستان بھر کے گلیوں کے ڈھابوں اور ریسٹورنٹس کے مینو میں اسے آرام سے دریافت کیا جاسکتا ہے۔ کھڑے مصالحے کا قیمہ تو اپنے ذائقے کی وجہ سے ہر کسی کے دل کو جیت لیتا ہے۔

مٹن کڑاہی گوشت

فوٹو بشکریہ وکی پیڈیا
فوٹو بشکریہ وکی پیڈیا

شنواری اور آفریدی قبائل اس خطے کے باسی ہیں اور اسے ہی بالٹی یا کڑاہی گوشت کا تاریخی گھر بھی تصور کیا جاتا ہے۔مٹن کڑاہی بکرے یا بھیڑ کے گوشت کے چھوٹے ٹکڑوں پر مشتمل ہوتی ہے، جسے ٹماٹروں، سبز مرچ، نمک اور ترجیحاً جانور کی چربی میں ہی پکایا جاتا ہے۔تازہ گوشت پکانے کے لیے چربی کی تہہ فراہم کرتا ہے اور اسے براہ راست کڑاہی میں گرما گرم نانوں کے ساتھ پیش کیا جاتا ہے۔

شامی کباب

شٹر اسٹاک فوٹو
شٹر اسٹاک فوٹو

شامی کباب پاکستان میں چائے کی ٹرالی کا شہنشاہ ہے، چاہے یہ عید کا موقع ہو یا کسی دوست کی آمد، یہ لذیذ سوغات ہمیشہ ہی گرما گرم لوازمہ ثابت ہوتی ہے۔ گرم مسالے، سرخ مرچ اور سبز مرچوں کے ساتھ یہ کباب نہ صرف چائے کا مزہ دوبالا کرتے ہیں بلکہ گفتگو کی چاشنی بھی بڑھ جاتی ہے۔

بریانی

شٹر اسٹاک فوٹو
شٹر اسٹاک فوٹو

چاہے آپ کھانے پینے کے شوقین ہوں یا نہ ہوں یہ سوال ضرور پوچھتے ہونگے کہ آخر بریانی میں ایسی کیا خاص بات ہے جو یہ سب کو ہر دل عزیز ہے۔ اس پکوان کے مختلف انداز ہیں ، جیسے آلو والی سندھی بریانی، تیز مصالحہ والی میمنی بریانی، بمبئی بریانی اور دیگر۔

نہاری

شٹر اسٹاک فوٹو
شٹر اسٹاک فوٹو

نہاری کے ذائقہ ہی کچھ ایسا ہے کہ کھانے والے کو نوالہ لیتے ہی احساس ہو جاتا ہے کہ کتنی احتیاط، دیکھ بھال سے اس کی تیاری کے لئے اجزاء ڈالے گئے ہیں۔کہا جاتا ہے کہ اسے کھانے کے بعد کڑاکے کی سردیوں میں بھی جسم گرم رہتا ہے۔اسے بونگ (گائے کی پنڈلی کا گوشت) اور ہڈیوں کے گودے کے ساتھ آہستہ آہستہ کمال پکایا جاتا ہے، ایک وقت میں سیر اور جی بھر کر کھانے کے لئے بہترین ہے۔

چپلی کباب

شٹر اسٹاک فوٹو
شٹر اسٹاک فوٹو

اصلی پشاوری چپلی کباب سے بہتر کوئی کباب نہیں ہوسکتا، کچے قیمے کے یہ کباب گرما گرم نان اور انار دانے کی چٹنی کے ساتھ منہ میں پانی بھرنے کے لیے کافی ثابت ہوتے ہیں، یہ پختونخوا کا فخریہ پکوان ہے مگر اسے پاکستان بھر میں بنایا جاتا ہے، پختون ریسیپی میں بیف اور آٹے کا مناسب استعمال کیا جاتا ہے، یہی وجہ ہے کہ یہ کباب ذائقے میں لطیف ہوتے ہیں۔

قورمہ

شٹر اسٹاک فوٹو
شٹر اسٹاک فوٹو

ایک بہترین پکے ہوئے قورمے سے زیادہ بہتر سالن اور کوئی ہو ہی نہیں سکتا۔بہترین قورمہ وہ ہے جس میں دہی پر مشتمل شوربے میں تلی ہوئی پیاز، ثابت گرم مصالحے، الائچی، تیز پات اور کیوڑے کا پانی ڈالا جاتا ہے۔ برصغیر میں جتنے خطّے ہیں اتنی ہی قورمے کی ترکیبیں ہیں، ہر خطّے کے اپنے مصالحے، بنیادی اجزاء اور سجاوٹ ہیں لیکن جو سالن تلی ہوئی پیاز سے تیار ہوتا ہے وہی اصل 'قورمہ' کہلاتا ہے۔

سرسوں کا ساگ

شٹر اسٹاک فوٹو
شٹر اسٹاک فوٹو

پنجاب کی اصل پہچان سرسوں کے ساگ اور مکئی کی روٹی سے بہتر اور کوئی نہیں، اس سوغات میں ذائقہ، غذائیت اور رنگ کی بہتات ہے بالکل پنجاب کے لوگوں کی طرح، جو کہ سردیوں اور بہار کی سوغات ہے۔ حالانکہ یہ ایک مرغن کھانا ہے لیکن اس کی خالصیت، تازہ اور نباتاتی ساخت نے پراسیسڈ کھانوں کی دنیا میں اسے فاتح بنا دیا ہے۔

لاہوری مچھلی

فوٹو بشکریہ محمد عمر
فوٹو بشکریہ محمد عمر

اس کا خستہ اور لطیف ذائقہ ہمیں بار بار اپنی طرف کھینچتا ہے، جبکہ اسے پکانے کے لئے زیادہ وقت درکار نہیں ہوتا بس آپ کو تھوڑا سا مکھن، لال مرچ، نمک، لہسن، ادرک اور تلنے کے لئے کڑاہی درکار ہوتی ہے اور دس منٹ میں ایک شاندار ڈنر تیار ہو جاتا ہے۔

بگھارے بینگن

فوٹو بشکریہ وکی پیڈیا
فوٹو بشکریہ وکی پیڈیا

بینگن ایک مزیدار سبزی ہے جسے جیسے چاہے پکائیں ہر بار ایک مختلف ذائقہ دے گی، چاہے وہ بینگن کے پکوڑے ہوں، بینگن کا بھرتا، آلو بینگن، بینگن کے پراٹھے، بادام جان ہو مگر ان سب کا بادشاہ حیدرآباد کے بگھارے بینگن ہیں جن کا ذائقہ ایک بار کھانے کے بعد کوئی بھول نہیں پاتا۔

کوفتے

شٹر اسٹاک فوٹو
شٹر اسٹاک فوٹو

رائتہ، سلاد کے امتزاج، دال اور روٹی یا چاول کے ساتھ کھائے جانے والے کوفتے برصغیر کے پکوانوں میں سب سے زیادہ نمایاں ہیں۔ یہ سبزی یا گوشت کے ہوسکتے ہیں، جو مصالحے میں ڈوبے ہوتے ہیں، مگر کوفتہ ہر ایک کو بھاتا ہے۔ وفتے عام طور پر ہاتھوں سے بنتے ہیں۔ کوفتوں کو چولہے پر سالن کی صورت میں تیار کیا جاسکتا ہے۔

سجی

فوٹو بشکریہ محمد عمر
فوٹو بشکریہ محمد عمر

سجی ایک پکوان ہے جو زیادہ تر بلوچستان میں پکایا جاتا ہے اور اس کا رواج روایتی طور پر بلوچستان میں ہوتا ہے تاہم اب پاکستان بھر میں یہ عام ہوتی جارہی ہے مگر یہ کہنا غلط نہیں ہوگا کہ سجی بلوچ ثقافت کا ایک اہم پکوان ہے، تاہم وہاں یہ بکرے کی ران کی شکل میں ہوتی ہے جبکہ دیگر علاقوں میں چکن کو بھی سالم سجی کی شکل میں پیش کیا جاتا ہے۔

طاہری

فوٹو بشکریہ فواد احمد
فوٹو بشکریہ فواد احمد

دھنیا پودینہ، چٹنی اور سرکے میں ڈوبی کٹی ہوئی پیاز کے ساتھ طاہری کی سادہ اچھائی کا کوئی جواب نہیں۔ یہ مزیدار ہوتی ہے، اسے بنانے میں جیب پر بوجھ بھی نہیں پڑتا جبکہ یہ جسم اور روح کو مناسب حد تک غذائیت بھی فراہم کرتی ہے اور یہ کہنے کی ضرورت نہیں کہ یہ اتنی مصالحے دار ضرور ہوتی ہے کہ دیسی پکوانوں کے شوقین کو مطمئن کر دیتی ہے۔

بہاری کباب

شٹر اسٹاک فوٹو
شٹر اسٹاک فوٹو

بہاری کباب گوشت کے ٹکڑوں سے پکایا جاتا ہے، جو انتہائی لذیذ اور منہ میں گھل جانے والی چیز ہے جسے دہی، مصالحوں، اور گوشت گلانے والے پپیتے کے ساتھ تیار کیا جاتا ہے۔ گوشت گلانے کے لیے کباب چینی، خشخاش، جائفل اور پپیتے کا استعمال اسے بے حد نرم بنا دیتا ہے۔