امریکا کی ریاست نیو میکسیکو کے ہائی اسکول میں فائرنگ کے واقعے میں کم از کم 2 طلبہ ہلاک ہوگئے۔

فائرنگ کرنے والے حملہ آور کو بھی جوابی کارروائی میں ہلاک کردیا گیا۔

غیر ملکی خبر رساں ایجنسی ’اے ایف پی‘ کے مطابق ریاستی پولیس نے ٹویٹر پر کہا کہ ’خوفناک واقعہ ایزٹِک ہائی اسکول میں پیش آیا جس کے بعد اسے خالی کرا لیا گیا۔‘

پولیس کا کہنا تھا کہ فائرنگ کے واقعے میں کوئی زخمی نہیں ہوا، پولیس معاملے کی تحقیقات کر رہی ہے جبکہ افسران اسکول میں سیکیورٹی چیک کر رہے ہیں۔

سان جُوان کاؤنٹی شیرف کین کِرسٹیسن نے صحافیوں کو بتایا کہ ایزٹک ہائی اسکول میں فائرنگ سے 3 افراد ہلاک ہوئے۔

یہ بھی پڑھیں: امریکا: ٹیکساس کے چرچ میں فائرنگ، 26 افراد ہلاک

انہوں نے اپنے فیس بک پیج پر کہا کہ ’پولیس نے طلبہ کو لینے کے لیے آنے والے والدین کے لیے پارک میں جگہ مختص کردی ہے، جبکہ والدین کو مطلع کردیا گیا ہے۔‘

واضح رہے کہ ہائی اسکول ریاست کے قصبے ’فور کارنرز‘میں ’ناواجو نیشن‘ کے قریب واقع ہے۔