مچھلی کے تیل کے کیپسول دماغی تناؤ سے بچاؤ کیلئے مفید

24 اپريل 2018

ای میل

یہ دعویٰ امریکا میں ہونے والی ایک طبی تحقیق میں سامنے آیا— شٹر اسٹاک فوٹو
یہ دعویٰ امریکا میں ہونے والی ایک طبی تحقیق میں سامنے آیا— شٹر اسٹاک فوٹو

مچھلی کے تیل کے کیپسول دماغ کو شدید تناﺅ سے بچانے میں مدد دے سکتے ہیں۔

یہ دعویٰ امریکا میں ہونے والی ایک طبی تحقیق میں سامنے آیا۔

جان ہاپکنز یونیورسٹی کی تحقیق میں بتایا گیا کہ مچھلی کے تیل کے کیپسول کسی جان لیوا یا المناک واقعے کے بعد دماغ کو شدید تناﺅ سے بچانے میں مددگار ثابت ہوسکتے ہیں۔

مزید پڑھیں : کیا مچھلی کے تیل کے کیپسول پر پیسے خرچ کرنے چاہیے؟

تحقیق کے مطابق مچھلی کے تیل میں موجود اومیگا تھری فیٹی ایسڈز کسی افسوسناک واقعے کے بعد دماغ کے متاثر ہونے والے حصوں کی مرمت میں مددگار ہونے کے ساتھ ساتھ شدید تناﺅ کے منفی اثرات سے بھی بچاتے ہیں۔

دہائیوں سے سوچا جارہا ہے کہ مچھلی کے تیل کے کیپسول دماغی صحت کے لیے بہترین ہے تاہم حالیہ طبی تحقیقی رپورٹس میں اس پر پیسے کا ضیاع قرار دیا گیا تھا۔

تاہم اب اس نئی تحقیق میں یہ بتایا گیا ہے کہ یہ سپلیمنٹ ممکنہ طور ہر شدید تناﺅ جیسی علامات کے علاج کے لیے موثر ثابت ہوسکتا ہے۔

مسلسم ذہنی تناﺅ سے دماغ کا اعصابی نظام ہر وقت متحرک رہتا ہے جس کا اثر وقت گزرنے کے ساتھ صحت پر منفی انداز سے ہوتا ہے۔

تحقیق کے مطابق کسی حادثے یا واقعے کے بعد ڈپریشن، ذہنی بے چینی و تشویش اور جارحانہ رویوں جیسے عوارض کے لیے مچھلی کا تیل فائدہ مند ثابت ہوسکتا ہے۔

یہ بھی پڑھیں : حاملہ خواتین کے لیے مچھلی کا تیل فائدہ مند؟

اومیگا تھری فیٹی ایسڈز کے حوالے سے ماضی میں سامنے آنے والی تحقیقی رپورٹس میں بتایا جاچکا ہے کہ یہ جز دماغ کے ان حصوں میں عصبی خلیوں کی دوبارہ افزائش میں مدد دیتے ہیں جو کہ شدید تناﺅ سے متاثر ہوسکتے ہیں۔

اس نئی تحقیق میں یہ دعویٰ کیا گیا کہ مچھلی کے تیل کے کیپسول روزمرہ کے تناﺅ پر بھی مثبت اثرات مرتب کرسکتے ہیں۔

اس تحقیق کے نتائج طبی جریدے جرنل آف Psychotherapy and Psychosomatics میں شائع ہوں گے۔