لندن: مصر کے اسٹار فٹبالر اور فارورڈ کھلاڑی محمد صلاح کی یوراگوئے کے خلاف فٹبال ورلڈ کپ 2018 کے ابتدائی میچ میں شرکت مشکوک ہے۔

مصری فٹبال ایسوسی ایشن (ای ایف اے) کا کہنا ہے کہ محمد صلاح نے ورلڈ کپ کے میچز سے قبل پریکٹس سیشنز میں شرکت کی۔

ای ایف اے کے مینیجنگ ڈائریکٹر احاب لیہیتا کا کہنا تھا کہ ابھی یہ بات کہنا قبل ازوقت ہوگا کہ محمد صلاح جنوبی امریکی ٹیم کے خلاف میچ میں شرکت کریں گے یا نہیں کریں گے۔

مزید پڑھیں: فٹبال کا ابھرتا ہوا مصری ستارہ، محمد صلاح

ان کا مزید کہنا تھا کہ مصری فارورڈ آہستہ آہستہ صحتیاب ہورہے ہیں، تاہم اس بات کی تصدیق نہیں کی جاسکتی کہ وہ اگلا میچ کھیلیں گے۔

مصری فٹبال ٹیم کے مینیجر میڈو کا کہنا ہے کہ ’میں اتنا کہہ سکتا ہوں کہ ہم سب پُر امید ہیں کہ محمد صلاح آئندہ میچ میں شرکت کریں گے‘۔

انہوں نے مزید کہا کہ ہمیں یہ اطلاعات مل رہی ہیں کہ محمد صلاح بہتر ہورہے ہیں، تاہم اب تک یہ واضح نہیں ہے کہ وہ میچ کے پہلے ہاف میں میدان میں آئیں گے یا پھر دوسرے ہاف میں ٹیم کا حصہ بنیں گے۔

یہ بھی پڑھیں: صلاح انجری کے باوجود مصر کے ورلڈ کپ اسکواڈ میں شامل

ان کا کہنا تھا کہ بہرحال ہمارے پاس ایک بہترین ٹیم ہے، جو بہت منظر ہے اور اسی سے ہمیں امید ہے کہ یہ بہتر کھیل کا مظاہرہ کریں گے اور ٹیم کو جتائیں گے۔

مصری ٹیم کے مینیجر کا کہنا تھا کہ ہم چاہتے ہیں محمد صلاح ٹیم کا حصہ بنیں کیونکہ انہوں نے اپنی ٹیم کو اپنے ساتھیوں کے ہمراہ اسے ورلڈ کپ تک پہنچانے میں بہت محنت کی ہے۔

خیال رہے کہ محمد صلاح، لیور پول اور ریال میڈریڈ کے درمیان چیمپیئز لیگ کے فائنل میں کندھے کی انجری کا شکار ہوگئے تھے۔ واضح رہے کہ مصر گروپ اے میں میزبان روس، سعودی عرب اور یوراگوئے کے ساتھ شامل ہے۔


یہ خبر 13 جون 2018 کو ڈان اخبار میں شائع ہوئی