کنگنا رناوٹ کے رویے سے تنگ آکر اداکار نے فلم چھوڑ دی؟

ای میل

کنگنا رناوٹ منی کارنیکا کی شوٹنگ میں مصروف ہیں—فوٹو: فیس بک
کنگنا رناوٹ منی کارنیکا کی شوٹنگ میں مصروف ہیں—فوٹو: فیس بک

بولی وڈ ‘کوئین’ کنگنا رناوٹ جسے بے باک اداکارہ بھی کہا جاتا ہے، وہ انڈسٹری میں اسکینڈل کوئی کے نام سے بھی مشہور ہیں۔

کچھ دن قبل ہی ان کے حوالے سے خبر سامنے آئی تھی کہ ان کے خلاف ایک بروکر نے گھر دلانے کے کمیشن کے پیسے ہڑپ کرجانے کی شکایت پولیس میں درج کرائی ہے۔

ابھی وہ معاملہ ختم ہی نہیں ہوا تھا کہ اچانک کنگنا رناوٹ کی آنے والی فلم ‘منی کارنیکا: دی کوئین آف جھانسی’ کی شوٹنگ سے ایک کلپ بورڈ کی تصویر سامنے آئی، جس پر اداکارہ کا نام ہدایت کار کے خانے میں درج تھا۔

تصویر سوشل میڈیا پر وائرل ہونے کے بعد بھارتی میڈیا میں بھی یہ چہ مگوئیاں ہونے لگیں کہ کنگنا رناوٹ فلم ‘منی کارنیکا: دی کوئین آف جھانسی’ کی ہدایت کاری بھی کر رہی ہیں۔

تاہم بعد ازاں اداکارہ نے انسٹاگرام پوسٹ کے ذریعے وضاحت کی کہ وہ فلم کی ہدایات نہیں دے رہیں، بلکہ وہ خود اس میں اداکاری کر رہی ہیں۔

اداکارہ کے مطابق کلپ بورڈ کی وائرل ہونے والی تصویر سے کنفیوژن پھیل رہی ہے، تاہم وہ واضح کرنا چاہتی ہیں کہ وہ فلم میں بطور اداکارہ شامل ہیں۔

ساتھ ہی اداکارہ نے فلم کی ریلیز کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ اسے آئندہ برس 25 جنوری کو ریلیز کیا جائے گا۔

تاہم اب یہ خبر سامنے آئی ہے کہ کنگنا رناوٹ کے مبینہ غیر ذمہ دارانہ رویے کے باعث فلم کے مرکزی ہیرو سونو سود نے فلم کی شوٹنگ چھوڑ کر خود کو اس سے الگ کرلیا۔

ممبئی مرر کے مطابق فلم میں سداشوارو بھاؤ کا کردار ادا کرنے والے اداکار سونو سود نے کنگنا رناوٹ کے ساتھ ہونے والے تنازعات کے باعث فلم کو چھوڑ دیا۔

رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ اطلاعات ہیں کہ کنگنا رناوٹ کی جانب سے فلم کی ہدایات دیے جانے کے بعد سونو سود کا کردار مختصر کیا گیا، جس وجہ سے اداکار نے فلم کو ہی چھوڈ دیا۔

یہ بھی پڑھیں: ’پدماوت‘ کے بعد کنگنا کی فلم ’منی کارنیکا‘ پر تنازع

علاوہ ازیں یہ اطلاعات بھی ہیں کہ سونو سود ‘سمبا’ سمیت دوسری فلموں کی شوٹنگ میں مصروف ہیں، جس وجہ سے وہ ‘منی کارنیکا: دی کوئین آف جھانسی’ کی ٹیم کو فوری طور پر وقت نہیں دے سکتے، لیکن فلم کی ٹیم ان پر وقت دیے جانے کا دباؤ ڈال رہی ہے۔

ایسی اطلاعات کے بعد سونو سود کے ترجمان نے بھی بیان جاری کیا ہے، جس میں کہا گیا ہے کہ اداکار نے ہمیشہ پیشہ ورانہ ذمہ داریوں کو اہمیت دی اور انہوں نے ‘منی کارنیکا: دی کوئین آف جھانسی’ کی ٹیم کو اپنے ٹائم اور شیڈول کے حوالے سے پہلے ہی آگاہ کردیا تھا۔

دوسری جانب فلم کے پروڈیوسر کمال جین نے بھی اداکار سونو سود کی حمایت میں بیان دیتے ہوئے کہا ہے کہ انہوں نے پہلے ہی ہمیں آگاہ کیا تھا کہ وہ پہلے ‘سمبا’ کی شوٹنگ مکمل کریں گے، جو رواں برس دسمبر میں ریلیز ہونی ہے، اس کے بعد ہی ‘منی کارنیکا: دی کوئین آف جھانسی’ کی شوٹنگ میں حصہ لیں گے۔

فلم پروڈیوسر کے مطابق سونو سود اور ‘منی کارنیکا: دی کوئین آف جھانسی’ کی ٹیم ایک خاندان کی طرح ہیں۔

خیال رہے کہ ‘منی کارنیکا: دی کوئین آف جھانسی’ کی شوٹنگ 2017 کے آغاز سے جاری ہے، اس فلم کی شوٹنگ کے دوران کنگنا رناوٹ 2 بار زخمی بھی ہوئی تھیں۔

کنگنا رناوٹ اس فلم میں جھانسی کی رانی کا کردار ادا کرتی نظر آئیں گی، اس فلم کی ریلیز سے قبل ہی اس پر مقدمات دائر کیے گئے ہیں۔

’منی کارنیکا: دی کوئین آف جھانسی‘ پر ریاست راجستھان کے برہمن گروپ ’سروا برہمن مہاسابھا‘ نے احتجاج کرتے ہوئے الزام عائد کیا ہے کہ فلم میں ان کی رانی یعنی ’جھانسی کی رانی‘ کے نامناسب سین ہیں۔

مزید پڑھیں: فلم منی کارنیکا میں کوئی بھی نامناسب سین نہیں، کنگنا رناوٹ

برہمن گروپ کے رہنماؤں کا دعویٰ ہے کہ انہیں اپنے ذرائع سے خبر ملی ہے کہ حال ہی میں فلم میں ’جھانسی کی رانی‘ اور ایسٹ انڈیا کمپنی کے برٹش انگریز عہدیدار کے درمیان رومانوی مناظر پر مبنی گانے کی شوٹنگ کی گئی ہے‘۔

تاہم اب برہمن انتہاپسندوں کے الزامات کو مسترد کرتے ہوئے کنگنا رناوٹ کہ چکی ہیں کہ ان کی فلم کے خلاف وہ لوگ ہی تنازع کھڑا کر رہے ہیں جو ایسے واقعات سے شہرت حاصل کرنا چاہتے ہیں، انہوں نے واضح کیا تھا کہ فلم میں کوئی نامناسب سین نہیں۔

علاوہ ازیں فلم کی شوٹنگ کے حوالے سے بھی فلم کی ٹیم کے درمیان تنازعات کی خبریں سامنے آتی رہتی ہیں، پہلے یہ خیال کیا جا رہا تھا کہ فلم کو 2018 کے آخر تک ریلیز کردیا جائے گا۔

تاہم اب کہا جا رہا ہے کہ اسے 25 جنوری 2019 کو ریلیز کیا جائے گا۔

فلم میں اداکارہ جھانسی کی رانی کے روپ میں نظر آئیں گی—پرومو فوٹو
فلم میں اداکارہ جھانسی کی رانی کے روپ میں نظر آئیں گی—پرومو فوٹو