الیسٹرکک آخری ٹیسٹ یادگار بنانے کیلئے پرعزم، بھارت مشکل میں

10 ستمبر 2018

ای میل

—فوٹو:اے ایف پی
—فوٹو:اے ایف پی

انگلینڈ نے بھارت کے خلاف سیریز کے آخری ٹیسٹ کے تیسرے روز میچ پر گرفت مضبوط کرتے ہوئے دوسری اننگز میں 2 وکٹوں پر 114 رنز بنا کر 154 رنز کی مجموعی برتری حاصل کرلی جبکہ الیسٹرکک 46 رنز بنا کر وکٹ پر موجود ہیں۔

لندن میں کھیلے جارہے سیریز کے آخری میچ کے تیسرے روز جب کھیل کا آغاز ہوا تو بھارت نے 174 رنز بنائے تھے اور ان کی 6 وکٹیں گر چکی تھیں۔

بھارت کے بلے باز گید ہنوما وہاری 25 اور رویندرا جدیجا 8 رنز پر کھیل رہے تھے اور دونوں بلےبازوں نے ذمہ دارانہ بلےبازی کا مظاہرہ کرتے ہوئے اسکور کو 237 رنز تک پہنچا دیا۔

وہاری 56 رنز بنا کر آؤٹ ہوئے جس کے بعد جدیجا نے ذمہ داری سنبھالی لیکن دیگر بلے باز ان کا ساتھ نہ دے سکے اور جلد آؤٹ ہوئے۔

جدیجا نے 86 رنز بنا کر بھارت کو 292 رنز تک پہنچایا لیکن وہ انگلینڈ کے پہلی اننگز کے اسکور 332 تک ٹیم کو پہنچانے میں کامیاب نہیں ہوئے۔

انگلینڈ کے جیمز اینڈرسن صرف 2 وکٹوں کے فرق سے آسٹریلیا کے سابق باؤلر میک گرا کا ریکارڈ برابر کرنے میں ناکام رہے۔

مزید پڑھیں:جیمز اینڈرسن کو امپائر سے جارحانہ رویہ اپنانے پر جرمانے کا سامنا

اینڈرسن، بین اسٹوکس اور معین علی نے 2،2 وکٹیں حاصل کیں۔

الیسٹرکک ور کیٹن جیننگز نے دوسری اننگز میں پہلی وکٹ کی شراکت میں صرف 27 رنز بنائے جب جیننگز 10 رنز بنا کر محمد شامی کو وکٹ دے کر پویلین لوٹ گئے۔

معین علی کو دوسرے نمبر پر بیٹنگ کے لیے بھیجا گیا لیکن وہ بڑا اسکور کرنے میں ناکام رہے اور 20 رنز کا اضافہ کرکے 62 کے اسکور پر جدیجا کا شکار بنے۔

لندن ٹیسٹ کے تیسرے روز کھیل کے اختتام پر میزبان انگلینڈ نے 2 وکٹیں کھو کر 114 رنز بنالیے اور بھارت کے خلاف 154 رنز کی برتری حاصل کرلی۔

الیسٹرکک اپنے کریئر کے آخری ٹیسٹ کو یاد گار بنانے کے لیے پرعزم ہیں اور 46 رنز بنا کر وکٹ پر موجود ہیں اور کپتان جوروٹ 29 رنز بنا کر ان کا ساتھ دے رہے ہیں۔

خیال رہے کہ انگلینڈ نے سیریز کے 3 میچوں میں کامیابی حاصل کرکے سیریز میں 3-1 کی فیصلہ کن برتری حاصل کرلی ہے۔