لاہور پولیس لائن حملے میں ملوث 8 ملزمان کو 21، 21برس قید کی سزا

15 مارچ 2019

ای میل

پولیس لائن پر حملے کے نتیجے میں کم از کم پانچ افراد ہلاک ہو گئے تھے— فائل فوٹو: اے ایف پی
پولیس لائن پر حملے کے نتیجے میں کم از کم پانچ افراد ہلاک ہو گئے تھے— فائل فوٹو: اے ایف پی

لاہور کی انسداد دہشت گردی کی عدالت نے پولیس لائن قلعہ گجر سنگھ پر حملے میں ملوث 8 ملزمان کو 21، 21 سال قید کی سزا سنادی۔

انسداد دہشت گردی کی عدالت نمبر تین کے جج جیل ٹرائل کی تکمیل پر جرم ثابت ہونے پر 8ملزمان کو سزا سنائی۔

مزید پڑھیں: مساجد پر حملہ: پاکستان سمیت متعدد ممالک کا اظہارِ مذمت

عدالت نے 8 ملزمان کو مختلف مقدمات میں مجموعی طور پر 21سال قید اور ان کی جائیداد قرق کرنے کی سزا سنائی۔

ملزمان کا تعلق لشکر جھنگوی اور تحریک طالبان پاکستان سے ہے اور ان کے قبضے سے خود کش جیکٹ، دستی بم اور کلاشنکوف برآمد ہوئی۔

سرکاری وکیل نے کہا کہ ملزم دوران تفتیش اقبال جرم کر چکے ہیں اور عدالت دلائل، ثبوتوں اور گواہوں کو مدنظر رکھتے ہوئے ملزمان کو سزا سنائی۔

عدالت نے ملزم قاری آصف، اعظم، آفتاب خان، عظیم، مشتاق، شفیق، عبیداللہ اور ثاقب سمیت 8ملزمان کو قید کی سزا کا حکم سنایا۔

یہ بھی پڑھیں: افغانستان: فضائی حملوں میں 31 دہشت گرد ہلاک

ملزمان کو بارودی مواد کی براامدگی کی دفعہ ⅘ کے تحت 7 سال، ناجائز اسلحہ کی دفعہ 13/20/65 کے تحت سات سال، دفعہ 122 اور دیگر مزید جرائم پر مجموعی طور پر 21سال قید کی سزا سنائی گئی۔

یاد رہے کہ 4 سال قبل فروری 2015 میں لاہور کے علاقے قلعہ گجر سنگھ میں پولیس لائن پر کیے گئے حملے میں دو پولیس اہلکاروں کم از کم 5افراد ہلاک اور درجنوں زخمی ہو گئے تھے۔