مسافر ٹرین کے کرایوں میں ساڑھے 8 فیصد تک اضافہ

اپ ڈیٹ 01 جولائ 2019

ای میل

تمام خصوصی ٹرینوں کے کرائے قراقرم ایکسپریس کے کرائےکے برابر رکھے گئے ہیں — فائل فوٹو: اے ایف پی
تمام خصوصی ٹرینوں کے کرائے قراقرم ایکسپریس کے کرائےکے برابر رکھے گئے ہیں — فائل فوٹو: اے ایف پی

لاہور: پاکستان ریلوے نے آج (یکم جولائی) سے مسافر ٹرینوں کے کرایوں میں 2 سے ساڑھے 8 فیصد تک اضافہ کردیا۔

پاکستان ریلوے کے جاری کردہ اعلامیے کے مطابق کرایوں میں اضافہ تیل کی بڑھتی قیمتوں کے باعث کیا گیا، اس کے علاوہ ریلوے کو آئندہ مالی سال میں 3 سے 4 ارب روپے کے خسارے کا اضافی بوجھ برداشت کرنا پڑے گا۔

اعلامیے کے مطابق مسافر ٹرینوں کے کرایے میں 2 سے 8.5 فیصد تک اضافہ کیا گیا ہے جبکہ 50 کلو میٹر تک سفر پر کرایوں میں کوئی اضافہ نہیں کیا گیا۔

مزید پڑھیں: یکم جولائی سے ریلوے کرایوں میں 7 فیصد تک اضافہ

پاکستان ریلوے کے مطابق اکانومی کلاس کے کرایوں میں 100 روپے سے کم اضافہ کیا گیا ہے جبکہ سیلون کے کرایوں میں 8 فیصد اضافہ کیا گیا ہے۔

اعلامیے میں بتایا گیا کہ تمام خصوصی ٹرینوں کے کرائے قراقرم ایکسپریس کے کرائے کے برابر رکھے گئے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں: حکومت کا پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں تبدیلی نہ کرنے کا اعلان

خیال رہے کہ 22 جون کو وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید احمد نے کہا تھا کہ عالمی منڈی میں تیل کی قیمتیں بڑھنے سے ریلوے اخراجات میں اضافہ ہوا ہے، جس کی وجہ سے یکم جولائی سے ریلوے کرایوں میں 6 سے 7 فیصد اضافہ کرنے پر مجبور ہیں۔

انہوں نے بتایا تھا کہ جن افراد نے ٹرین کی ٹکٹیں پہلے سے ہی خریدی ہوئی ہیں ان پر اضافے کا اطلاق نہیں ہوگا۔