کنگنکا رناوٹ کا صحافیوں سے معافی مانگنے سے انکار

ای میل

معافی نہیں مانگوں گی بلکہ درخواست کرتی ہوں کہ میرا بائیکاٹ کیا جائے، اداکارہ—فوٹو: فیس بک
معافی نہیں مانگوں گی بلکہ درخواست کرتی ہوں کہ میرا بائیکاٹ کیا جائے، اداکارہ—فوٹو: فیس بک

بولی وڈ ادکارہ کنگنا رناوٹ آئے دن ساتھی اداکاروں اور دیگر شوبز شخصیات سے اختلافات کی وجہ سے خبروں میں رہتی ہیں۔

ماضی میں جہاں انہوں نے ریتک روشن ، دپیکا پڈوکون، کرن جوہر، عالیہ بھٹ، رنبیر کپور، ادیتیہ پنچولی اور تاپسی پنو کو تنقید کا نشانہ بنا چکی ہیں۔

وہیں حال ہی میں انہوں نےاپنی فلم تشہیر کے دوران صحافی کو بھی ڈانٹ پلا دی۔

اداکارہ کی جانب سے پریس کانفرنس کے دوران سوال پوچھے جانے پر بھارتی شوبز رپورٹر جسٹن راؤ سے بدتمیزی کی گئی اور اسے اپنا دشمن قرار دیا تھا۔

پریس کانفرنس کے دوران جسٹن راؤ نے کنگنا رناوٹ سے فلم کے حوالے سے سوال پوچھنا چاہا، تاہم کنگنا نے انہیں تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ وہ ان کے سوالات کا جواب نہیں دیں گی، کیوں کہ وہ اس سے قبل ان کی فلم 'منی کارنیکا' کے خلاف بھی غلط باتیں تحریر کرتے آرہے ہیں۔

کنگنا رناوٹ نے جسٹن کی سوچ کو منفی کہتے ہوئے کہا کہ وہ ان کے دشمن بن چکے ہیں اور ان کے بارے میں گھٹیا باتیں لکھ رہے ہیں۔

رپورٹر نے کنگنا رناوٹ کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ 'یہ انداز صحیح نہیں، اگر آپ ایک طاقتور مقام پر بیٹھی ہیں اس کا یہ مطلب بالکل نہیں کہ رپورٹرز کو ڈرائیں'۔

رپورٹر سے بدتمیزی کرنے اور اسے ڈانٹ پلائے جانے کے بعد اداکارہ پر تنقید کی گئی اور صحافیوں کی تنظیم نے ان سے معافی مانگنے کا مطالبہ بھی کیا۔

کنگنا رناوٹ کے رویے پر ’انٹرٹینمنٹ جرنلسٹ گلڈ‘ ۰ای جے گی‘ نے اپنے بیان میں اداکارہ سے معافی مانگنے کا مطالبہ کیا اور ساتھ ہی اداکارہ پر واضح کیا کہ اگر وہ معافی نہیں مانگیں گی تو ان کا بائیکاٹ کیا جائے گا۔

صحافیوں کی تنظیم نے اداکارہ پر واضح کیا کہ معافی نہ مانگنے کی صورت میں ان کی آنے والی فلم ’ججمنٹل ہے کیا‘ کی تہشیر نہیں کی جائے گی۔

صحافیوں کی جانب سے دھمکی دیے جانے کے باوجود بھی کنگنا رناوٹ معافی مانگنے کو تیار نہیں۔

کنگنا رناوٹ کی بہن رنگولی نے ٹوئٹر پر اداکارہ کی دو نئی ویڈیوز شیئر کیں جس میں انہوں نے واضح کیا کہ وہ صحافیوں سے معافی نہیں مانگی گی بلکہ ان سے درخواست کرتی ہیں کہ صحافی ان کا بائیکاٹ کریں۔

اداکارہ نے اپنے خلاف واویلا کرنے والے صحافیوں کو غدار، دیش دروہی اور بکاؤ قرار دیتے ہوئے کہا کہ وہ ان سے معافی نہیں مانگیں گی۔

کنگنا رناوٹ نے مزید کہا کہ جس طرح دوسرے شعبوں میں اچھے اور برے لوگ ہوتے ہیں، اسی طرح صحافت میں بھی برے لوگ موجود ہیں۔

ساتھ ہی اداکارہ نے بھارتی صحافت کی تعریف بھی کی اور تسلیم کیا کہ ان کے دوست صحافیوں کی وجہ سے ہی وہ اس مقام پر پہنچی ہیں، تاہم انہوں نے واضح کیا کہ بھارتی صحافت کا ایک مخصوص سیکشن دیمک کی طرح دیش کو کھا رہا ہے۔

کنگنا رناوٹ نے کسی بھی صحافی کا نام لیے بغیر کہا کہ ایسے صحافی سیکولر بننے کا ناٹک کرتے ہیں، در حقیقت یہ دیش اور قوم کو دیمک کی طرح چاٹ رہے ہیں۔

اداکارہ نے دونوں ویڈیوز میں رپورٹر جسٹن راؤ کا نام لیے بغیر بتایا کہ کچھ دن قبل پریس کانفرنس کے دوران ملیں، وہ اور اسی طرح کے دوسرے صحافی ان کے اچھے منصوبوں کے خلاف بھی سازش کرتے رہے ہیں۔

کنگنا رناوٹ نے ایسے صحافیوں کو سستے دام پر فروخت ہونے والے صحافی قرار دیتے ہوئے کہا کہ یہ دیش فروش اور غدار صحافی ہیں، وہ ان سے معافی نہیں مانگیں بلکہ وہ ان سے منت کرتی ہیں کہ وہ اداکارہ کا بائیکاٹ کریں۔

اداکارہ نے دعویٰ کیا کہ ایسے صحافی ان سے متعلق خبریں بنا کر ہی روزی روٹی کما رہے ہیں۔

کنگنا رناوٹ جلد ہی فلم ججمنٹل ہے کیا میں نظر آئیں گی—فوٹو: فیس بک
کنگنا رناوٹ جلد ہی فلم ججمنٹل ہے کیا میں نظر آئیں گی—فوٹو: فیس بک