حکومت نے پیٹرول کی قیمت میں 5.15 روپے کا اضافہ کردیا

01 اگست 2019

ای میل

اوگرا کی جانب سے 30 جولائی کو قیمتوں میں اضافے کی سفارش کی گئی تھی—فائل/فوٹو:اے ایف پی
اوگرا کی جانب سے 30 جولائی کو قیمتوں میں اضافے کی سفارش کی گئی تھی—فائل/فوٹو:اے ایف پی

وفاقی حکومت نے آئل اینڈ گیس ریگولیٹری اتھارٹی (اوگرا) کی سفارش کے مطابق پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ کردیا اور پیٹرول کی قیمت میں 5 روپے 15 پیسے بڑھادیے گئے ہیں۔

حکومتی ذرائع کا کہنا تھا کہ رواں ماہ کے لیے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ کردیا گیا جس کی سفارش اوگرا نے کردی تھی۔

پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے کے بعد پیٹرول کی فی لیٹر قیمت میں 5روپے 15پیسے اضافے کے بعد 117روپے 83پیسے، ہائی اسپیڈ ڈیزل کی قیمت میں 5 روپے 65 پیسے اضافہ کردیا گیا اور نئی قیمت 132روپے 47 پیسے فی لیٹر مقرر کردی گئی ہے۔

حکومت کی جانب سے لائٹ ڈیزل 8روپے 90پیسے مہنگا کردیا گیا اور نئی قیمت 90 روپے 52 پیسے فی لیٹر مقرر کردی گئی، اسی طرح مٹی کا تیل بھی 5روپے 38پیسے مہنگا کردیا گیا جس کے بعد نئی قیمت 103 روپے 84 پیسے فی لیٹر تک پہنچ گئی ہے۔

مزید پڑھیں:پیٹرولیم مصنوعات 8 روپے 90 پیسے مہنگی کرنے کی سفارش

خیال رہے کہ 30 جولائی کو اوگرا کی جانب سے پیٹرولیم ڈویژن کو ارسال کی گئی سمری میں پیٹرول 5 روپے 15 پیسے فی لیٹر اور ہائی اسپیڈ ڈیزل 5 روپے 65 پیسے فی لیٹر مہنگا کرنے کی تجویز دی گئی تھی۔

اوگرا نے لائٹ ڈیزل کی قیمت میں 8 روپے 90 پیسے فی لیٹر اور مٹی کے تیل کی قیمت میں 5 روپے 38 پیسے فی لیٹر اضافے کی تجویز دی تھی۔

اوگرا کی جانب سے مذکورہ سمری پیٹرولیم ڈویژن کو بھجوادی گئی تھی اور کہا گیا تھا کہ وفاقی کابینہ کے اجلاس میں وزیراعظم عمران خان کی منظوری کے بعد وزارت خزانہ نئی قیمتوں کا اعلان کرے گی۔

یہ بھی پڑھیں:حکومت کا رواں ماہ پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں تبدیلی نہ کرنے کا اعلان

خیال رہے کہ گزشتہ ماہ حکومت نے ٹیکس ریٹ میں ایڈجسٹمنٹ کیے جانے کے باعث پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں تبدیلی نہ کرنے کا اعلان کیا تھا۔

عیدالفطر سے قبل وفاقی حکومت نےاوگرا کی جانب سے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے کی تجویز کو منظور کرتے ہوئے پیٹرول کی قیمت میں 4 روپے 26 پیسے کا اضافہ کیا تھا جس کے بعد فی لیٹر پیٹرول 112 روپے 68 پیسے کا ہوگیا تھا.

اس سے قبل مئی میں پیٹرول کی قیمت میں 9 روپے 42 پیسے اضافہ کرتے ہوئے نئی قیمت 108 روپے 31 پیسے فی لیٹر مقرر کی گئی تھی۔