ابوبکر البغدادی کی اہلیہ کو بھی گرفتار کر لیا ہے، ترک صدر

06 نومبر 2019

ای میل

بغدادی کی اہلیہ کی گرفتاری کا اعلان ان کی بہن کی گرفتاری کے چند روز بعد سامنے آیا — فائل فوٹو / اے ایف پی
بغدادی کی اہلیہ کی گرفتاری کا اعلان ان کی بہن کی گرفتاری کے چند روز بعد سامنے آیا — فائل فوٹو / اے ایف پی

ترک صدر رجب طیب اردوان کا کہنا ہے کہ ان کے ملک نے دہشت گرد تنظیم 'داعش' کے ہلاک ہونے والے سربراہ ابوبکر البغدادی کی اہلیہ کو بھی گرفتار کرلیا ہے۔

غیر ملکی خبر رساں ایجنسی 'اے پی' کے مطابق ترک صدر نے یہ اعلان انقرہ میں ایک خطاب کے دوران کیا تاہم مزید تفصیلات نہیں بتائیں۔

انہوں نے یہ بھی نہیں بتایا کہ خاتون کو کب اور کیسے گرفتار کیا گیا یا ان کی شناخت کیسے ہوئی۔

رجب طیب اردوان نے بغدادی کو ہلاک کرنے کے لیے مواصلاتی مہم کی قیادت پر امریکا کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ 'ہم نے ابوبکر البغدادی کی اہلیہ کو گرفتار کر لیا ہے لیکن ہم نے اس حوالے سے کوئی شور و غل نہیں کیا، جبکہ میں یہ اعلان پہلی بار کر رہا ہوں۔'

مزید پڑھیں: داعش نے سربراہ ابوبکر البغدادی کی ہلاکت کی تصدیق کردی

ترک صدر کی جانب سے البغدادی کی اہلیہ کی گرفتاری کا اعلان داعش کے سابق سربراہ کی بڑی بہن راسمیہ عَواد کی گرفتاری کے چند روز بعد ہی سامنے آیا ہے۔

راسمیہ کو شام کے شمال مغربی صوبے حلب کے قصبے عَزاز سے ترک فورسز نے گرفتار کیا تھا۔

سینئر ترک عہدیدار نے بتایا کہ گرفتار ہونے والوں میں ابوبکر البغدادی کی بہن، ان کے شوہر اور بہو شامل ہیں جن سے پوچھ گچھ جاری ہے۔

عہدیدار نے بتایا کہ 65 سالہ راسمیہ کو عزاز کے قریب ایک چھاپے میں حراست میں لیا گیا، ساتھ ہی انہوں نے یہ بھی بتایا کہ راسمیہ کے ہمراہ 5 بچے بھی تھے۔

ان کا کہنا تھا کہ ’ہمیں امید ہے کہ داعش کے اندرونی کاموں پر ابوبکر بغدادی کی بہن سے اہم معلومات حاصل کی جاسکیں گی۔'

یہ بھی پڑھیں: امریکا نے ابوبکر البغدادی پر حملے کی ویڈیو جاری کردی

واضح رہے کہ 27 اکتوبر کو امریکا نے کالعدم داعش کے سربراہ ابوبکر البغدادی کو ہلاک کرنے کا دعویٰ کیا تھا اور 3 دن بعد حملے کی ویڈیو بھی جاری کی تھی۔

بعدازاں داعش کی جانب سے ابوبکر البغدادی کی ہلاکت کی تصدیق کی گئی تھی اور ساتھ ہی تنظیم کے نئے سربراہ ابو ابراہیم الہاشمی القریشی کا اعلان کردیا تھا۔

داعش کی جانب سے جاری آڈیو بیان میں کہا گیا تھا کہ ’ اے وفادار کمانڈر ہم آپ کی موت پر افسردہ ہیں‘۔

یاد رہے کہ ابوبکر البغدادی نے 2014 سے داعش کی قیادت کی تھی اور وہ دنیا کے سب سے مطلوب ترین اشخاص میں سے ایک تھے۔