اسلام آباد سے دو گھنٹے سے بھی کم فاصلے پر واقع پنجاب کا علاقہ کوٹ فتح خان روایتی گھڑ سواری اور نیز بازی کے لیے مشہور ہے جہاں گھڑ سوار سفید پگڑیاں باندھے ہاتھوں میں نیزے لیے اپنے روایتی لباس میں کھیل کے لیے تیار تھے جبکہ شائقین دور دور سے اس کھیل کے دیکھنے کے لیے حاضر تھے۔

اے ایف پی کو کوٹ فتح خان کے اس روایتی کھیل کے روح رواں ملک عطامحمد خان کا کہنا تھا کہ 'یہ میلہ 18 ویں صدی میں شروع ہوا تھا'۔

عطامحمد خان کا کہنا تھا کہ '8 نسلوں قبل' ان کے آبا واجداد نے کابل میں حکمرانی کی جبکہ کوٹ فتح خان میں ایک ہفتے جاری رہنے والے اس میلے میں ایک ہزار گھوڑے شریک ہوں گے۔

ورلڈ کپ کے گولڈ میڈلسٹ ہارون بندیال نے گھڑ سواری کے کم ہوتے رواج پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے انھوں نے کہا کہ 'گھوڑے پالنے کا رواج اب چند خاندانوں تک محدود ہوگیا ہے'۔

ان کا کہنا تھا کہ 'نیزہ بازی پنجاب میں سب سے زیادہ کھیلا جاتا ہے لیکن خیبر پختونخوا میں یہ صرف تین خاندانوں تک محدود ہے، بلوچستان اور سندھ میں بھی شاید ایک خاندان اس کھیل میں شامل ہے'۔

—فوٹو:اے ایف پی
—فوٹو:اے ایف پی
—فوٹو:اے ایف پی
—فوٹو:اے ایف پی
—فوٹو:اے ایف پی
—فوٹو:اے ایف پی
—فوٹو:اے ایف پی
—فوٹو:اے ایف پی
—فوٹو:اے ایف پی
—فوٹو:اے ایف پی
—فوٹو:اے ایف پی
—فوٹو:اے ایف پی
—فوٹو:اے ایف پی
—فوٹو:اے ایف پی

ای میل

ویڈیوز

کارکردگی نہ دکھانے والے وزراء کو تبدیل کیا جا سکتا ہے،علیم خان
'خدا کا واسطہ پاکستان سے محبت کر لیں'
سفاری ٹرین میں پشاور سے اٹک تک کی سیر
پشاور کے کرنل شیر خان شہید اسٹیڈیم میں کار شو کا انعقاد

تصاویر

لاہور میں برائیڈل فیشن کے رنگ
فرانس کے بعد بیلجیم اور ہالینڈ میں مظاہرے
حسینہ عالم کا تاج میکسکو کی ’ونیسا‘ کے سر سج گیا
نیوزی لینڈ کی 49سال بعد فتح

تبصرے (0) بند ہیں