مشہور یوکرینی گلوکار کی لاش کو ان کی اہلیہ نے ٹکڑے کرکے فریج میں رکھ دیا

اپ ڈیٹ 05 اگست 2020

ای میل

30 سالہ گلوکار کا تعلق یوکرین سے تھا—فوٹو:بشکریہ ڈیلی میل
30 سالہ گلوکار کا تعلق یوکرین سے تھا—فوٹو:بشکریہ ڈیلی میل

یوکرین کے مشہور گلوکار کی اہلیہ پر الزام عائد کیا گیا ہے کہ انہوں نے اپنے شوہر کو قتل کے بعد لاش کے ٹکڑے کرکے فریج میں رکھا۔

ڈیلی میل کی رپورٹ کے مطابق 30 سالہ گلوکار اینڈی کارٹ رائٹ کی اہلیہ کو عدالت میں پیش کیا گیا۔

رپورٹ کے مطابق اینڈی کارٹ رائٹ کی لاش روس میں ان کی فلیٹ سے برآمد ہوئی تھی۔

ان کی اہلیہ نے دعویٰ کیا تھا کہ گلوکار نے سینٹ پیٹرزبرگ میں حد سے زیادہ منشیات کا استعمال کیا تھا۔

گلوکار کی 36 سالہ اہلیہ میرینا کوکھل کا کہنا تھا کہ وہ نہیں چاہتی تھیں کہ ان کے مداحوں کو پتہ چلے کہ ان کا انتقال اس حالت میں ہوگیا ہے اور چار روز تک ان کی لاش کو وہی رکھا۔

—فوٹو:ڈیلی میل
—فوٹو:ڈیلی میل

انہوں نے کہا کہ لاش کے ٹکڑوں کو سیاہ پلاسٹک بیگز میں ڈال کر فریج میں رکھ دیا۔

اینڈی رائٹ کے مداحوں سے بچا کر میرینا کوکھل کو عدالت پہنچایا گیا، انہیں ماسک پہنا کر لایا گیا تھا۔

رپورٹ کے مطابق عدالت میں پیشی کے دوران وہ اپنے وکیل سے مسلسل پوچھتی رہیں کہ میں کیا کر چکی ہوں۔

پولیس کے مطابق انہوں نے چاقو، ہتھوڑا، آری اور تختے کا استعمال کیا۔

رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ جوڑے کا دو سالہ بچہ بھی ہے جو اس وقت فلیٹ میں موجود تھا جب وہ اپنے شوہر کے لاش کے ٹکڑے کر رہی تھی۔

روسی پولیس کا کہنا تھا کہ مشہور گلوکار کے قتل کی تفتیش شروع کردی ہے اور ان کا اصل نام الیگزینڈر یوشکو تھا اور یوکرین سے تعلق تھا۔