’ہیڈن بھائی! تم پاکستان کی طرف ہو یا بھارت کی طرف؟‘

22 اکتوبر 2021
تصویر: بشکریہ پی سی بی
تصویر: بشکریہ پی سی بی

پاکستانی کرکٹ ٹیم کے بیٹنگ کوچ میتھیو ہیڈن نے اسپورٹس ویب سائٹ کرک انفو کو گزشتہ روز انٹرویو دیا اور روایتی حریف یعنی پاکستان اور بھارت کے درمیان کھیلے جانے والے میچ سے متعلق اپنی رائے کا اظہار کیا۔

میتھیو ہیڈن کے مطابق بھارتی بلے باز کے ایل راہول پاکستان کے لیے ‘ایک بڑا خطرہ‘ ثابت ہوسکتے ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ ’ذاتی طور پر یہ دیکھنا دلچسپ ہوگا کہ کھلاڑی دباؤ میں کس طرح کی کارکردگی کا مظاہرہ کرتے ہیں‘۔ انہوں نے بھارتی کھلاڑی رشب پنٹ کے حوالے سے بھی کہا کہ وہ باؤلرز کے حملوں کو ناکام بنانے کی صلاحیت رکھتے ہیں۔

میتھیو ہیڈن کے بیان نے شائقین کرکٹ کو کچھ تشویش میں مبتلا کردیا اور انہوں نے اس تشویش کے اظہار سوشل میڈیا پر خوب کیا۔ صارفین نے پہلا سوال تو یہی پوچھا کہ آخر ہیڈن پاکستان کے ساتھ ہیں یا بھارت کے ساتھ۔

ایک سوشل میڈیا صارف نے لکھا کہ ’شاید آپ کو بھارتی بلے بازوں سے زیادہ پاکستانی بلے بازوں پر توجہ دینی چاہیے‘۔

ٹوئٹر پر ایک صارف نے لکھا کہ ’پاکستانی کوچ بھی بھارتی کھلاڑیوں کا مداح ہے‘ تو دوسرے نے لکھا کہ ’کہیں ایسا نہ ہو کہ راہول اور پنٹ کی تیاری کرکے آئیں اور امتحان میں روہت شرما آجائے‘۔

میتھیو ہیڈن نے اپنے انٹرویو میں مزید کہا کہ پاک بھارت میچ کا دباؤ بھی ویسا ہی ہوتا ہے جیسا آسٹریلین ہوتے ہوئے انگلینڈ کے خلاف کھیلنے کا دباؤ ہوتا ہے لیکن یہ دباؤ اتنا ہی اثر کرتا ہے جتنا آپ اسے خود پر حاوی ہونے دیتے ہیں۔ اس وقت جو موقع میسر ہے وہ تاریخ ساز موقع ہے، اور میں محسوس کررہا ہوں کہ ہمارے کھلاڑی اس موقع کے لیے تیار ہیں۔

ضرور پڑھیں

تبصرے (0) بند ہیں