آمیزون کے بانی دنیا کے امیر ترین شخص بن گئے

27 اکتوبر 2017

ای میل

— اے ایف پی فائل فوٹو
— اے ایف پی فائل فوٹو

معروف آن لائن ریٹیلر آمیزون کے بانی جیف بیزوز نے ایک بار پھر بل گیٹس سے دنیا کے امیر ترین شخص کا اعزاز چھین لیا ہے۔

گزشتہ شب اچھی سہ ماہی رپورٹ کے بعد آمیزون کے حصص میں اضافے نے جیف بیزوز کو امیر ترین افراد کی فہرست میں نمبرون پوزیشن پر پہنچا دیا ہے، جن کے اثاثوں میں راتوں رات لگ بھگ 7 ارب ڈالرز کا اضافہ ہوا۔

اس وقت جیف بیزوز کے اثاثے 90 ارب ڈالرز (94 کھرب پاکستانی روپوں سے زائد) سے زائد ہیں جبکہ مائیکرو سافٹ کے بانی بل گیٹس کے اثاثوں کی مالیت 88.5 ارب ڈالرز (90 کھرب پاکستانی روپے سے زائد) ہے۔

ویسے یہ پہلی بار نہیں کہ جیف بیزوز دنیا کے امیر ترین شخص کا اعزاز حاصل کرنے میں کامیاب ہوئے، رواں سال جولائی میں بھی وہ بل گیٹس کو پیچھے چھوڑنے میں کامیاب رہے تھے، مگر یہ اعزاز ایک دن بھی ان کے پاس نہیں رہ سکا۔

اب بھی اگر آمیزون کے حصص کی قیمت نیچے گرتی ہے تو بل گیٹس ایک بار پھر امیر ترین فرد بن جائیں گے تاہم رواں سال آمیزون کی مالی کارکردگی میں نمایاں بہتری کو دیکھتے ہوئے یہ ضرور کہا جاسکتا ہے کہ بہت جلد جیف بیزوز ہی اس اعزاز کے مستقل حقدار ہوں گے۔

یہ بھی پڑھیں : 12 آئیڈیاز جن کے مالک ارب پتی بن گئے

جیف بیزوز گزشتہ تیس برسوں کے دوران دنیا کے امیر ترین شخص کا اعزاز پانے والے چھٹے فرد ہیں جبکہ وہ ارب پتی افراد کی فہرست میں بیس سال قبل شامل ہوئے تھے۔

دلچسپ بات یہ ہے کہ جیف بیزوز بنیادی طور پر متوسط طبقے سے تعلق رکھنے والے فرد ہیں جنھوں نے عملی زندگی کا آغاز بھی ایک معمولی ملازمت سے کیا تھا، مگر بہت جلد ترقی کی اور پھر اپنے آن لائن کاروبار کی بنیاد رکھی۔

ان کی زندگی کا احوال یہاں پڑھیں : معمولی ملازمت سے دنیا کا دوسرا امیر ترین شخص بننے کا سفر

1994 میں قائم کی جانے والی کمپنی آمیزون اس وقت امریکا سمیت متعدد ممالک میں آن لائن ریٹیل خریداری میں آگے ہے تاہم اسے اصل میں انٹرنیٹ بک اسٹور کے طور پر متعارف کرایا گیا تھا۔

آج یہ دنیا بھر میں کتابوں سے لے کر لگ بھگ ہر چیز کو آن لائن فروخت کررہی ہے اور اپنے قیام کے بیس سال بعد اس کے اثاثوں کی مالیت 457 ارب ڈالرز تک پہنچ چکی ہے اور تجزیہ کاروں کا تخمینہ ہے کہ یہ دنیا کی پہلی ٹریلین ڈالر کمپنی بن سکتی ہے۔