پاکستان کو’ناکام ریاست‘ کہنے والی بھارتی اداکارہ کا یوٹرن

ای میل

سوارا بھاسکر نے فلم میں مرکزی کردار ادا کیا ہے—فائل فوٹو: ہندوستان ٹائمز
سوارا بھاسکر نے فلم میں مرکزی کردار ادا کیا ہے—فائل فوٹو: ہندوستان ٹائمز

بولی وڈ اداکارہ سوارا بھاسکر نے گزشتہ ہفتے اپنی نئی ریلیز ہونے والی بولڈ کامیڈی فلم ’ویرے دی ویڈنگ‘ پر پاکستان میں پابندی عائد کیے جانے پر پاکستان کو غیر سیکولر اور ’ناکام ریاست‘ قرار دیا تھا۔

سوارا بھاسکر نے یہ بیان بھارتی ٹی وی چینل سی این این نیوز 18 کے ایک پروگرام کے دوران دیا تھا، اس سے قبل وہ 2015 میں پاکستان کے دوسرے دورے کے دوران پاکستانی ٹی وی چینل ’دنیا ٹی وی‘ کے شو ’مذاق رات‘ میں پاکستان کو پسندیدہ ملک اور لاہور کو سب سے بہترین شہر قرار دے چکی تھیں۔

سوارا بھاسکر کی جانب سے پاکستان کے خلاف دیے گئے حالیہ بیان پر جہاں پاکستانی اداکارہ عروہ حسین نے انہیں کھری کھری سنائیں، وہیں متعدد پاکستانی افراد نے انہیں سوشل میڈیا پر آئینہ دکھایا۔

نہ صرف پاکستانی لوگوں بلکہ سوارا بھاسکر کے اس بیان کو بھارت میں بھی تنقید کا نشانہ بنایا گیا۔

سوشل میڈیا پر پاکستانی و بھارتی افراد کی جانب سے سخت تنقید کیے جانے کے بعد سوارا بھاسکرنے یوٹرن لیتے ہوئے ایک بار پھر لاہور کو اپنا پسندیدہ شہر قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ ’لاہور ان کے دل کے قریب ترین ہے‘۔

یہ بھی پڑھیں: فلم پر پابندی لگنے کے بعد بھارتی اداکارہ نے پاکستان کو’ناکام ریاست‘ کہہ دیا

سوارا بھاسکر نے ایک مداح کی ٹوئیٹ کا جواب دیتے ہوئے اس بات کا اعتراف کیا کہ ہمیں ریاستوں و ملکوں کی حکومتوں اور وہاں کے رہنے والے عوام میں فرق رکھنا چاہیے۔

—اسکرین شاٹ
—اسکرین شاٹ

ساتھ ہی انہوں نے یوٹرن لیتے ہوئے لکھا کہ وہ پاکستانی عوام کے لیے نیک خواہشات رکھتی ہیں، کیوں کہ ان کے بہترین اور رازدار دوستوں میں چند پاکستانی بھی ہیں، جب کہ لاہور ان کے دل کے بہت قریب ہے۔

انہوں نے ایک اور ٹوئیٹ میں پاکستان اور بھارت کے درمیان بہتر تعلقات اور امن کی خواہش کا اظہار بھی کیا۔

مزید پڑھیں: 'ویرے دی ویڈنگ' پر پاکستان میں پابندی عائد

سوارا بھاسکر نے ایک اور ٹوئیٹ میں خود پر ہونے والی آن لائن تنقید کا عکس شیئر کرتے ہوئے لکھا کہ ’پاکستان اور بھارت کے درمیان امن اور دوستانہ تعلقات کو دیکھیں‘

اداکارہ کی جانب سے شیئر کی گئی اس پوسٹ میں انہیں نہ صرف پاکستانی بلکہ خود بھارتی مداحوں نے بھی تنقید کا نشانہ بنایا، ساتھ ہی کچھ افراد نے انہیں ’بی گریڈ‘ اداکارہ قرار دیا۔

یہ بھی پڑھیں: ’ویرے دی ویڈنگ‘ کا پہلے ہی دن کمائی کا ریکارڈ

واضح رہے کہ سوارا بھاسکر، کرینہ کپور، سونم کپور اور شیکھا تسلانی کی بولڈ کامیڈی فلم ’ویرے دی ویڈنگ‘ میں قابل اعتراض مناظر اور غیر اخلاقی ڈائلاگس کی وجہ سے اسے پاکستان میں نمائش کی اجازت نہیں دی گئی۔

’ویرے دی ویڈنگ‘ کو یکم جون کو بھارت سمیت دیگر ممالک میں ریلیز کیا گیا، فلم نے پہلے ہی دن بھارت بھر سے 10 کروڑ روپے سے زائد کی کمائی کی تھی۔

فلم کی کہانی چار سہیلیوں کے گرد گھومتی ہے، جو شادی کے مسائل میں پھنسی رہتی ہیں۔