جسٹس گلزار احمد اگلے چیف جسٹس نامزد، سمری وزیر اعظم کو ارسال

22 نومبر 2019

ای میل

جسٹس گلزار احمد 22 دسمبر 2019 کو عہدہ سنبھالیں گے — فائل فوٹو / سپریم کورٹ ویب سائٹ
جسٹس گلزار احمد 22 دسمبر 2019 کو عہدہ سنبھالیں گے — فائل فوٹو / سپریم کورٹ ویب سائٹ

وزارت قانون نے جسٹس گلزار احمد کو نئے چیف جسٹس آف پاکستان نامزد کرنے کی سمری وزیر اعظم عمران خان کو ارسال کردی۔

وزیر اعظم عمران خان سمری صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی کو بھجوائیں گے اور صدر کی منظوری کے بعد وزارت قانون ان کی تعیناتی کا نوٹی فکیشن جاری کرے گا۔

نئے چیف جسٹس آف پاکستان کے طور پر جسٹس گلزار احمد 22 دسمبر 2019 کو عہدہ سنبھالیں گے اور فروری 2022 تک چیف جسٹس آف پاکستان رہیں گے۔

جسٹس گلزار احمد 27 اگست 2002 کو سندھ ہائی کورٹ کے جج جبکہ 16 نومبر 2011 کو سپریم کورٹ کے جج بنے۔

یہ بھی پڑھیں: جسٹس گلزار احمد نے قائم مقام چیف جسٹس کے عہدے کا حلف اٹھالیا

یاد رہے کہ موجودہ چیف جسٹس آصف سعید کھوسہ 21 دسمبر کو ریٹائر ہو جائیں گے۔

چیف جسٹس آصف سعید کھوسہ سابق وزرائے اعظم نواز شریف کے خلاف پاناما کیس اور یوسف رضا گیلانی کے خلاف توہین عدالت کیس کا فیصلے سنانے والے بینچ کا حصہ رہے ہیں۔

دونوں فیصلوں میں اس وقت کے وزرائے اعظم کو نااہل قرار دے کر عہدہ چھوڑنے کا حکم دیا گیا۔

مزید پڑھیں: تمام ادارے خراب ہوچکے، ملک کا نظام ایڈہاک ازم پر چل رہا ہے، جسٹس گلزار

چیف جسٹس آصف سعید کھوسہ 3 نومبر 2007 کی ایمرجنسی سے متعلق فیصلے کے خلاف پرویز مشرف کی نظرثانی درخواست مسترد کرنے والے بینچ میں بھی شامل رہے۔

اس کے علاوہ وہ 21ویں آئینی ترمیم اور فوجی عدالتوں کو درست قرار دینے والے عدالتی بینچ کا بھی حصہ تھے۔