• KHI: Maghrib 7:24pm Isha 8:52pm
  • LHR: Maghrib 7:09pm Isha 8:46pm
  • ISB: Maghrib 7:20pm Isha 9:00pm
  • KHI: Maghrib 7:24pm Isha 8:52pm
  • LHR: Maghrib 7:09pm Isha 8:46pm
  • ISB: Maghrib 7:20pm Isha 9:00pm

بریک ڈانسنگ اولمپک گیمز میں کھیل کے طور پر شامل

شائع December 9, 2020
بریک ڈانسنگ کو 2024 گیمز میں شامل کرلیا گیا ہے—فائل/فوٹو: اے ایف پی
بریک ڈانسنگ کو 2024 گیمز میں شامل کرلیا گیا ہے—فائل/فوٹو: اے ایف پی

انٹرنیشنل اولمپک کمیٹی نے بریک ڈانسنگ کو باقاعدہ طورپر کھیل تسلیم کرتے ہوئے پیرس گیمز 2024 میں شامل کرنے کا اعلان کردیا۔

خبرایجنسی اے پی کی رپورٹ کے مطابق اولمپک کمیٹی نے بریک ڈانسنگ کو میڈل کی فہرست میں شامل کرلیا ہے اور ایگزیکٹیو بورڈ نے اسکیٹ بورڈنگ، اسپورٹ کلائمبنگ اور سرفنگ کے ساتھ ساتھ بریک ڈانسنگ کو پریس گیمز کا حصہ بنانے کی تصدیق کردی۔

مزید پڑھیں: ٹوکیو اولمپکس کی نئی تاریخوں کا اعلان، 2021 میں انعقاد ہوگا

رپورٹ کے مطابق اسکیٹ بورڈنگ، اسپورٹ کلائمبنگ اور سرفنگ ٹوکیو گیمز میں پہلی مرتبہ شامل ہوں گے، جو کورونا کے باعث رواں برس ملتوی کردیے گئے ہیں اور اب شیڈول کے مطابق 23 جولائی سے 8 اگست 2021 تک ہوں گے۔

اولمپک کمیٹی نے پیرس گیمز میں ان کھیلوں کو شامل کردیا ہے لیکن ٹوکیو کے مقابلے میں 10 گیمز کم ہوں گے اور 2024 میں دنیا بھر سے مجموعی طور پر 10 ہزار 500 ایتھلیٹ حصہ لیں گے جو ٹوکیو گیمز کے مقابلے میں 600 کم ہے۔

ویٹ لفٹنگ اور باکسنگ میں ایتھلیٹس کی تعداد کو بڑی حد تک کم کردیا گیا ہے، پیرس میں ویٹ لفٹنگ کے 120 ایتھلیٹ ہوں گے جو ریوڈی جنیرو گیمز 2016 کے مقابلے میں نصف کم ہے۔

رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ ایتھلیٹس کی تعداد ڈوپنگ کے تاریخی مسئلے کی وجہ سے کم کر دیا گیا ہے اور اولمپک کمیٹی کو انٹرنیشنل ویٹ لفٹنگ فیڈریشن کی اصلاحات پر تشویش ہے۔

بریک ڈانسنگ کو اولمپک میں بریکنگ کا نام دیا جائے گا اور 1970 کی دہائی ہپ ہوپ نےامریکا میں شروع کیا تھا۔

رپورٹ کے مطابق اولمپک میں شامل کرنے کی تجویز پیرس گیمز کی انتظامیہ نے دو برس قبل 2018 میں بیونس آئرس میں یوتھ اولمپکس میں آزمائش کے بعد دی تھی۔

اولمپک کمیٹی اور مستقل اراکین کی جانب سے بریک ڈانسنگ کو 2019 میں مختلف مراحل میں منظوری دی گئی تھی۔

پیرس میں بریکنگ کو تاریخی مقام میں کھیلا جائے گا، پلیس ڈی لے کون کورڈ میں باسکٹ بال اور اسپورٹ کلائمبنگ کے ساتھ ہوگی۔

رواں برس اپریل میں کورونا وائرس سے عالمی سطح پر بڑھتی ہوئی ہلاکتوں اور وائرس سے متاثرہ کیسز سامنے کے بعد اکٹر ملکوں کی جانب سے ایونٹ کو ملتوی کرنے کے مطالبات کیے گئے تھے۔

یہ بھی پڑھیں: 'اگر اولمپکس 2021 میں بھی نہ ہوئے تو دوبارہ منعقد نہیں ہوں گے'

بالآخر مسلسل مطالبات کے پیش نظر انٹرنیشنل اولمپکس کمیٹی نے ٹوکیو اولمپکس کو ملتوی کرنے کا اعلان کردیا تھا۔

بعد ازاں ٹوکیو اولمپکس کی نئی تاریخوں کا اعلان کردیا گیا، جس کے مطابق اب گیمز کا انعقاد آئندہ سال 23جولائی سے ہو گا تاہم 2021 میں انعقاد ہونے کے باوجود اولمپکس کو 'ٹوکیو 2020' کا نام ہی دیا جائے گا۔

انٹرنیشنل اولمپکس کمیٹی کے صدر تھامس باک نے کہا تھا کہ ٹوکیو 2020 کی انتظامی کمیٹی، ٹوکیو میٹروپولیٹن گورنمنٹ، جاپانی حکومت اور دیگر تمام متعلقہ افراد کے ساتھ کام کرنے کے لیے پراعتماد ہوں۔

ٹوکیو اولمپکس کے سربراہ یوشیرو موری نے اپنے بیان میں کہا تھا کہ اگر ٹوکیو اولمپکس 2021 میں منعقد نہ ہوئے تو پھر یہ دوبارہ کبھی منعقد نہیں ہوسکیں گے۔

کارٹون

کارٹون : 11 جولائی 2024
کارٹون : 10 جولائی 2024