دوسرا ٹیسٹ: پاکستان مشکل کا شکار،11 سال بعد واپسی کرنے والے فواد صفر پر آؤٹ

اپ ڈیٹ 14 اگست 2020

ای میل

فواد عالم صفر پر آؤٹ ہوکر اپنا انتخاب درست ثابت کرنے میں ناکام رہے—فوٹو:اے ایف پی
فواد عالم صفر پر آؤٹ ہوکر اپنا انتخاب درست ثابت کرنے میں ناکام رہے—فوٹو:اے ایف پی

پاکستان کو انگلینڈ کے خلاف دوسرے ٹیسٹ میچ میں پہلے بیٹنگ کرتے ہوئے شدید مشکلات کا سامنا ہے اور پہلے روز کھیل کے اختتام پر ٹیم کے 5 بلے باز صرف 126 رنز پر آؤٹ ہوچکے ہیں۔

پاکستان نے اننگز کا آغاز کیا تو پچھلے میچ میں سنچری بنانے والے شان مسعود مایہ ناز انگلش فاسٹ باؤلر جیمز اینڈرسن کی گیند پر اپنی وکٹیں محفوظ نہ رکھ سکے اور ایل بی ڈبلیو قرار پائے۔

شان مسعود کو آؤٹ کرنے کے بعد جیمز اینڈرسن کو ساتھی کھلاڑی مبارکباد دے رہے ہیں— فوٹو: اے ایف پی
شان مسعود کو آؤٹ کرنے کے بعد جیمز اینڈرسن کو ساتھی کھلاڑی مبارکباد دے رہے ہیں— فوٹو: اے ایف پی

اس کے بعد عابد علی کا ساتھ دینے کپتان اظہر علی آئے اور دونوں کھلاڑیوں نے سنبھل کر بیٹنگ کرتے ہوئے ابتدائی نقصان کا ازالہ کرنے کی کوشش کی۔

اس دوران عابد علی دو مرتبہ خوش قسمت بھی رہے جب گیند ان کے بلے کا باہری کنارہ لینے کے بعد سلپ میں گئی لیکن فیلڈر کیچ پکڑنے میں ناکام رہے۔

خیال رہے کہ کہ بارش کے باعث چائے کا وقفہ، وقت سے پہلے لیا گیا تو پاکستان نے پہلی اننگز میں ایک وکٹ کے نقصان پر 62 رنز بنائے تھے۔

وقفے کے بعد دونوں کھلاڑیوں نے ذمے دارانہ کھیل کا مظاہرہ کرتے ہوئے ٹیم کا اسکور 78 رنز تک پہنچایا تاہم اظہر 20 رنز بنا کر جیمز اینڈرسن کو وکٹ دے بیٹھے لیکن عابد علی اور بابراعظم نے ٹیم کی سنچری مکمل کی۔

عابد علی 66 رنز بنا کر آؤٹ ہوئے تو پاکستان کا اسکور 102 رنز تھا جس کے بعد اسد شفیق ایک مرتبہ پھر ناکام ہوئے اور صرف 5 رنزبنا کر پویلین لوٹ گئے۔

قومی ٹیم میں 11 سال کے طویل عرصےبعد واپسی کرنے والے فواد عالم کو اس وقت ہزیمت کا سامنا کرنا پڑا جب وہ کرس ووکس کی گیند پر ایل بی ڈبلیو قرار دیے گئے جبکہ انہیں کھاتہ کھولنے کی مہلت بھی نہیں دی گئی۔

فواد عالم ٹیسٹ کرکٹ میں اپنے انتخاب کو درست ثابت کرنے میں ناکام رہے۔

پہلے روز کھیل کے اختتام پر پاکستان نے 5 وکٹوں پر 126 رنز بنائے تھے۔

بابراعظم 25 رنز بنا کر وکٹ پر موجود ہیں اورمحمد رضوان 4 رنز بنا کر ان کا ساتھ دے رہے ہیں۔

انگلینڈ کی جانب سے جیمز اینڈرسن نے سب سے زیادہ 2 وکٹیں حاصل کیں۔

اس سے قبل پاکستان نے انگلینڈ کے خلاف دوسرے ٹیسٹ میچ میں ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کا فیصلہ کیا۔

اظہر علی نے کہا کہ اس وکٹ پر مانچسٹر کے مقابلے میں زیادہ گھاس ہے لیکن وکٹ اندر سے خشک ہے اور ہمیں امید ہے کہ ہم اچھا اسکور کرنے میں کامیاب رہیں گے۔

پاکستان نے میچ کے لیے ٹیم میں ایک تبدیلی کی، شاداب خان کی جگہ فواد عالم کو طویل عرصے بعد ٹیم کا حصہ بنایا گیا۔

اظہر علی کا کہنا تھا کہ اس وکٹ پر ایک اسپنر کافی ہے اور ہم اپنی بیٹنگ کو مضبوط کرنا چاہتے تھے اس لیے ہم نے فواد عالم کو ٹیم کا حصہ بنایا ہے۔

فواد عالم 11 سال بعد پہلا ٹیسٹ میچ کھیل رہے ہیں جہاں انہوں نے آخری مرتبہ 2009 میں ٹیسٹ میچ میں پاکستان کی نمائندگی کی تھی۔

واضح رہے کہ دونوں ٹیموں کے درمیان مانچسٹر میں کھیلے گئے سیریز کے پہلے ٹیسٹ میچ میں پاکستان کو 3 وکٹوں سے شکست کا سامنا کرنا پڑا تھا۔

انگلینڈ نے میچ کے لیے اپنی ٹیم میں دو تبدیلیاں کی ہیں اور بین اسٹوکس اور جوفرا آرچر کی جگہ زیک کرالی اور سیم کرن کو ٹیم کا حصہ بنایا گیا ہے۔

میچ کے لیے دونوں ٹیمیں ان کھلاڑیوں پر مشتمل ہیں۔

پاکستان: اظہر علی(کپتان)، شان مسعود، عابد علی، بابر اعظم، اسد شفیق، فواد عالم، محمد رضوان، یاسر شاہ، شاہین شاہ آفریدی، محمد عباس اور نسیم شاہ

انگلینڈ: جو روٹ(کپتان)، ڈوم سبلی، رورے برنز، زیک کرالی، اولی پوپ، جوز بٹلر، کرس ووکس، ڈوم بیس، سیم کرن، اسٹورٹ براڈ اور جیمز اینڈرسن