• KHI: Zuhr 12:39pm Asr 5:19pm
  • LHR: Zuhr 12:09pm Asr 5:01pm
  • ISB: Zuhr 12:14pm Asr 5:10pm
  • KHI: Zuhr 12:39pm Asr 5:19pm
  • LHR: Zuhr 12:09pm Asr 5:01pm
  • ISB: Zuhr 12:14pm Asr 5:10pm

مقتول بھارتی گلوکار سدھو موسے والا کیلئے دعا کرنے پر شے گِل کو تنقید کا سامنا

شائع May 31, 2022
شے گِل کو مذہبی تفریق کا نشانہ بنایا گیا—اسکرین شاٹ
شے گِل کو مذہبی تفریق کا نشانہ بنایا گیا—اسکرین شاٹ

’پسوڑی‘ فیم گلوکارہ شے گِل کو تین دن قبل قتل کیے گئے بھارتی گلوکار سدھو موسے والا کے لیے دعا کرنے پر مداحوں نے آن لائن تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے انہیں مذہبی بنیاد پر تفریق کا نشانہ بھی بنایا۔

بھارتی گلوکار اور مرکزی اپوزیشن جماعت کانگریس کے رہنما سدھو موسے والا کو 29 مئی کو بھارتی پنجاب میں قتل کردیا گیا تھا۔

ان کے قتل پر جہاں دیگر لوگوں نے اظہار افسوس کیا تھا، وہیں پاکستانی گلوکارہ شے گِل نے بھی دکھ کا اظہار کرتے ہوئے ان کے اہل خانہ کے لیے نیک خواہشات کا اظہار کیا تھا۔

یہ بھی پڑھیں: بھارت: پنجابی گلوکار و کانگریس رہنما سیکیورٹی واپس لیے جانے کے بعد قتل

شے گِل نے سدھو موسے والا کیلئے دعا کرتے ہوئے ان کے لواحقین کے لیے صبر کی دعا کی تھی، تاہم لوگ ان کی بات پر ناخوش دکھائی دیے اور انہیں مذہبی تفریق کا نشانہ بنا ڈالا۔

شے گِل نے لوگوں کی جانب سے آن لائن تنقید کا نشانہ بنائے جانے کے اسکرین شاٹس شیئر کیے، جن میں انہیں لوگوں نے مذہبی تفریق کا نشانہ بھی بنایا۔

لوگوں نے انہیں سمجھایا کہ وہ ایک مسلمان ہیں اور وہ غیر مسلم افراد کے لیے دعا نہیں کر سکتیں۔

لوگوں کی جانب سے پیغامات موصول ہونے کے بعد شے گِل نے انسٹاگرام اسٹوریز میں واضح کیا کہ وہ مسلمان نہیں بلکہ مسیحی ہیں اور وہ دوسرے مذہب سے تعلق رکھنے والے افراد کے لیے دعا کر سکتی ہیں۔

شے گِل نے دوسرے لوگوں کے پیغامات کے اسکرین شاٹ بھی شیئر کیے، جن میں بعض لوگوں نے انہیں بتایا کہ اگر کوئی انہیں بطور مسلمان دوسرے مذہب سے تعلق رکھنے والے افراد کے لیے دعا کرنے سے روک رہے ہیں تو وہ لوگ غلط ہیں۔

بعض لوگوں نے انہیں بتایا کہ مذہب اسلام تمام مذاہب اور خاص طور پر مسیحیت کی عزت اور احترام کی تلقین کرتا ہے، کیوں کہ حضرت عیسیٰ علیہ السلام کا قرآن پاک میں ذکر ہے۔

گلوکارہ نے ایسے میسیجز کے جواب میں بتایا کہ وہ اپنی مذہبی شناخت ظاہر نہیں کرنا چاہتی تھیں مگر چوں کہ انہیں زیادہ تر خراب پیغامات موصول ہو رہے تھے، اس لیے انہوں نے ایسا کیا۔

شے گِل نے تنقید کرنے والے بعض افراد کو بلاک بھی کیا اور بتایا کہ اگر ان کے ساتھ کوئی بھی بدتمیزی کرے گا تو وہ انہیں بلاک کردیں گی اور یہ کہ وہ ہر کسی کے پیغامات پڑھتی ہیں مگر بعض اوقات انہیں دیر ہوجاتی ہیں۔

مزید پڑھیں: ’کوک اسٹوڈیو سیزن 14‘ کے گانے ’پسوڑی‘ نے مداحوں کے دل جیت لیے

انہوں نے بھارتی سِکھ گلوکار کے لیے دعا کرنے پر گالیاں دینے والے افراد کے اسکرین شاٹ بھی شیئر کیے اور اس بات پر افسوس کا اظہار کیا کہ لوگوں نے انہیں مذہبی تفریق کا نشانہ بنایا۔

خیال رہے کہ شے گِل رواں برس ریلیز ہونے والے ’کوک اسٹوڈیو سیزن 14‘ کے گانے ’پسوڑی‘ سے مشہور ہوئی تھیں، جو کہ انہوں نے علی سیٹھی کے ہمراہ گایا تھا۔

تبصرے (1) بند ہیں

RIZWAN Jun 01, 2022 09:09am
ایک مسلمان غیر مسلم کے لیے اس کی زندگی میں یدایت کی دعا تو کرسکتا ہے مگر اس کی موت کے بعد اس کے لیے مغفرت کی نہیں اس کے لیے منع فرمایا گیا ہے مگر ایک دوسرا غیرمسلم اگر کررہاہے تو کوی ایشو نہیں

کارٹون

کارٹون : 23 جولائی 2024
کارٹون : 22 جولائی 2024