غلاف کعبہ تبدیل کرنے کے روح پرور مناظر

اپ ڈیٹ 31 جولائ 2022
<p>صدارت عامہ کے جنرل صدرالشیخ عبدالرحمٰن السدیس و دیگر حکام غلاف کعبہ کی تبدیلی کے موقع پر موجود ہیں— فوٹو: العربیہ ویب سائٹ</p>

صدارت عامہ کے جنرل صدرالشیخ عبدالرحمٰن السدیس و دیگر حکام غلاف کعبہ کی تبدیلی کے موقع پر موجود ہیں— فوٹو: العربیہ ویب سائٹ

جمعے کی رات غلاف کعبہ کی تبدیلی کی تقریب منعقد ہوئی اور نئے ہجری سال کی آمد کے ساتھ غلاف کعبہ کو تبدیل کر دیا گیا۔

العربیہ ویب سائٹ کی رپورٹ کے مطابق غلاف کعبہ تبدیل کرنے کی تقریب کو براہ راست نشر کیا گیا، غلاف کعبہ کی تبدیلی کے عمل میں 4 گھنٹے لگے۔

اس سے قبل غلافِ کعبہ کی تبدیلی کے لیے 9 ذی الحج کی رات مقرر تھی مگر رواں سال ہجری سال کے آغاز پر غلاف کعبہ کی تبدیلی کا سرکاری فیصلہ کیا گیا تھا۔

یہ پہلا موقع ہےجب صدارت عامہ کی زیر نگرانی غلاف کعبہ کی تبدیلی کا عمل براہ راست نشر کیا گیا۔

خانہ کعبہ کے غلاف کو ہجری سال کے آغاز میں 'سب سے مہنگے لباس' سے بدل دیا جاتا ہے، جو خالص قدرتی ریشم سے بنا ہوا سیاہ رنگ کا ہوتا ہے، اور اسے قرآنی آیات اور اسلامی نقشوں سے مزین سونے کی کڑھائی سے سجایا جاتا ہے۔

غلاف کعبہ پر سونے اور چاندی کے دھاگوں سے کڑھائی کی جاتی ہے— فوٹو: العربیہ ویب سائٹ
غلاف کعبہ پر سونے اور چاندی کے دھاگوں سے کڑھائی کی جاتی ہے— فوٹو: العربیہ ویب سائٹ

لباس کی اونچائی 14 میٹر ہے اور اس کے اوپری حصے میں 95 سینٹی میٹر چوڑی، 47 میٹر لمبی اور 16 ٹکڑوں پر مشتمل ایک پٹی ہے جس کے چاروں طرف اسلامی سجاوٹ کا ایک مربع ہے

1962 میں پاکستان کو بھی غلاف کعبہ کی تبدیلی کے عمل کی سعادت حاصل ہوئی تھی— فوٹو: حرمین انفو ٹوئٹر
1962 میں پاکستان کو بھی غلاف کعبہ کی تبدیلی کے عمل کی سعادت حاصل ہوئی تھی— فوٹو: حرمین انفو ٹوئٹر

کسوہ چار ٹکڑوں پر مشتمل ہے، ہر ٹکڑا خانہ کعبہ کے ایک رخ کو ڈھانپتا ہے اور پانچواں ٹکڑا خانہ کعبہ کے دروازے پر لگایا جانے والا پردہ ہے، اس کی تیاری کئی مراحل سے گزر کر مکمل ہوتی ہے۔

ہزاروں لوگ غلاف کعبہ کی تبدیلی کے وقت موجود رہے— فوٹو: حرمین انفو ٹوئٹر
ہزاروں لوگ غلاف کعبہ کی تبدیلی کے وقت موجود رہے— فوٹو: حرمین انفو ٹوئٹر

کسوہ کے چاروں اطراف میں جاکورڈ کے تانے بانے کو جمع کیا جاتا ہے، پھر کعبہ کے اوپر نصب کرنے کی تیاری کے لیے اس پر بیلٹ اور پردے کے ٹکڑے لگائے جاتے ہیں۔

بڑی حفاظت کے ساتھ غلاف کعبہ کو تبدیل کرنے کے لیے لے کر جایا جا رہا ہے— فوٹو: حرمین انفو ٹوئٹر
بڑی حفاظت کے ساتھ غلاف کعبہ کو تبدیل کرنے کے لیے لے کر جایا جا رہا ہے— فوٹو: حرمین انفو ٹوئٹر

غلاف کعبہ کے ٹکڑوں کی تعداد 16 ہے، 6 ٹکڑے، پٹی کے نچلے حصے میں 12 چراغ اور کعبہ کے کونوں میں 4 اسٹیمن رکھے گئے ہیں، سیاہ کے اوپر 5 شمعوں کے ساتھ "اللہ اکبر" لکھا جاتا ہے۔

رواں سال ہجری سال کے آغاز پرغلاف کعبہ کی تبدیلی کا سرکاری فیصلہ کیا گیا— فوٹو: حرمین انفو ٹوئٹر
رواں سال ہجری سال کے آغاز پرغلاف کعبہ کی تبدیلی کا سرکاری فیصلہ کیا گیا— فوٹو: حرمین انفو ٹوئٹر

اس غلاف کا وزن 850 کلو گرام ہے، جسے کپڑے کے 47 ٹکڑوں میں تقسیم کیا گیا ہے، ہر ٹکڑا 98 سینٹی میٹر چوڑا اور 14سینٹی میٹر اونچا ہے۔

غلاف کعبہ شاہ عبدالعزیز کمپلیکس میں کسوہ کعبہ کی ذمہ دار جنرل پریذیڈنسی برائے امور حرمین شریفین کی نگرانی میں تیار کیا جاتا ہے، اس بار غلاف کعبہ کی تبدیلی کا یکم محرم الحرام 1444 کو کیا جا رہا ہے۔

غلاف کعبہ کے ٹکڑوں کی تعداد 16 ہے، 6 ٹکڑے، پٹی کے نچلے حصے میں 12 چراغ اور کعبہ کے کونوں میں 4 اسٹیمن رکھے گئے ہیں،سیاہ کے اوپر 5 شمعوں کے ساتھ "اللہ اکبر" لکھا جاتا ہے— فوٹو: العربیہ ویب سائٹ
غلاف کعبہ کے ٹکڑوں کی تعداد 16 ہے، 6 ٹکڑے، پٹی کے نچلے حصے میں 12 چراغ اور کعبہ کے کونوں میں 4 اسٹیمن رکھے گئے ہیں،سیاہ کے اوپر 5 شمعوں کے ساتھ "اللہ اکبر" لکھا جاتا ہے— فوٹو: العربیہ ویب سائٹ

تبصرے (0) بند ہیں