• KHI: Maghrib 7:16pm Isha 8:43pm
  • LHR: Maghrib 7:01pm Isha 8:38pm
  • ISB: Maghrib 7:11pm Isha 8:52pm
  • KHI: Maghrib 7:16pm Isha 8:43pm
  • LHR: Maghrib 7:01pm Isha 8:38pm
  • ISB: Maghrib 7:11pm Isha 8:52pm

ملیریا سے تحفظ کی دوسری ویکسین کے استعمال کی منظوری

شائع April 14, 2023
—فوٹو: اے پی
—فوٹو: اے پی

افریقی ملک گھانا نے ملیریا سے تحفظ کی آکسفورڈ یونیورسٹی کی ویکسین کے استعمال کی منظوری دے دی، حالانکہ مذکورہ ویکسین کی آزمائش کے حتمی نتائج کا تاحال اعلان ہی نہیں کیا گیا۔

خبر رساں ادارے ’ایسوسی ایٹڈ پریس‘ (اے پی) کے مطابق افریقی ملک گھانا کی وزارت صحت نے آکسفورڈ یونیورسٹی کی جانب سے بچوں کے لیے بنائی گئی ملیریا سے تحفظ کی خصوصی ویکسین کے استعمال کی اجازت دے دی۔

مذکورہ ویکسین کی آزمائش کے آخری اور چوتھے مرحلے کے نتائج تاحال جاری نہیں کیے گئے، تاہم اس کے پہلے نتائج سے ثابت ہوا تھا کہ ویکسین بیماری پر 80 فیصد اثر دکھاتی ہے۔

آکسفورڈ یونیورسٹی کی ویکسین کو خصوصی طور پر کم سن اور کم عمر بچوں کے لیے بنایا گیا ہے اور اس کی آزمائش گھانا، برکینا فاس اور کینیا سمیت دیگر افریقی ممالک میں کی گئی تھی۔

ویکسین کی آزمائش کے پہلے تینوں مراحل کے نتائج حوصلہ کن آئے تھے، جن سے معلوم ہوا تھا کہ ویکسین کے بعد بچے 80 فیصد ملیریا سے محفوط بن جاتے ہیں۔

مذکورہ ویکسین کی حتمی آزمائش اپنے آخری مراحل میں ہے، جس کے بعد آکسفورڈ یونیورسٹی عالمی ادارہ صحت (ڈبلیو ایچ او) سے اس کے استعمال کی منظوری لے گی، تاہم اس سے قبل ہی گھانا کی وزارت صحت نے ویکسین کو محفوظ قرار دے کر اس کے استعمال کی مںظوری دے دی۔

مذکورہ ویکسین ملیریا سے تحفظ کی اب تک کی دوسری جب کہ بچوں کے لیے پہلی ویکسین ہوگی۔

اس سے قبل 2021 میں برطانوی دوا ساز کمپنی گلیکسو اسمتھ کلائن (جی ایس کے) کی ویکسین کو عالمی ادارہ صحت نے استعمال کے لیے منظور کیا تھا جب کہ دوسری دوا ساز کمپنی بائیو این ٹیک کی ملیریا ویکسین کی آزمائش بھی گزشتہ برس شروع کی گئی تھی۔

بائیو این ٹیک کی ویکسین کے ساتھ ہی آکسفورڈ یونیورسٹی کی ویکسین کی آزمائش بھی شروع کی گئی تھی، جس کی آزمائش کا آخری مرحلہ مکمل ہونے سے قبل ہی گھانا نے اس کے استعمال کی مںظوری دے دی۔

مذکورہ ویکسین 5 سے 36 ماہ کے بچوں کے لیے بنائی گئی ہے اور اس کے اب تک کے نتائج کے مطابق ویکسین 80 فیصد تک بیماری سے محفوظ رکھتی ہے۔

کارٹون

کارٹون : 29 مئی 2024
کارٹون : 28 مئی 2024