ہمیں بہت سے چیلنجز درپیش ہیں، نگران وزیراعظم

اپ ڈیٹ 09 دسمبر 2023
نگران وزیراعظم نے کہا کہ شعبہ نرسنگ اورپولیس کو ری برینڈ کرنے کی ضرورت ہے—فوٹو: ڈان نیوز
نگران وزیراعظم نے کہا کہ شعبہ نرسنگ اورپولیس کو ری برینڈ کرنے کی ضرورت ہے—فوٹو: ڈان نیوز

نگران وزیراعظم انوار الحق کاکڑ نے کہا ہے کہ ہمیں بہت سے چیلنجز درپیش ہیں۔

اسلام آباد میں پولیس کے سابق انسپکٹر جنرلز کی 7ویں سالانہ کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے نگران وزیراعظم نے کہا کہ ہمیں بہت سے چیلنجز درپیش ہیں، پولیس نے ملک میں امن کے لیے بہت قربانیاں دی ہیں۔

انہوں نے کہا کہ کسی بھی پیشے سے تعلق رکھتے ہوں، اپنا کام ایمانداری اور پوری لگن سے کرنا چاہیے۔

نگران وزیراعظم نے کہا کہ پولیس ایک خدائی خاکروب ہے جو معاشرے کو صاف ستھرا رکھتی ہے، شعبہ نرسنگ اورپولیس کو ری برینڈ کرنے کی ضرورت ہے۔

انہوں نے کہا کہ سینیئر رینک کے پولیس افسر انسانی اسمگلنگ میں جرائم پیشہ افرادکے پارٹنربن گئے، پولیس عوام اور ان کے بچوں کو گلیوں اور ہر مقام پر تحفظ فراہم کرتی ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ ملک سعد، حامد شکیل، اور صفت غیور جیسے بہترین پولیس افسر بھی ہیں، کیا ہم اچھے اور برے لوگوں کا مجموعہ نہیں ہیں؟ پھر ہماری شناخت کا تعین کون کرے گا؟

نگران وزیراعظم نے کہا کہ میڈرڈ، لندن اور پیرس کی گلیوں میں کتنے خودکش بمبار گھوم رہے ہیں؟ کیا وہاں کوئی اینٹی ایئرکرافٹ گنز لے کر چلتا ہے یا طاقت کا مظاہرہ کرتا ہے؟

انہوں نے مزید استفسار کیا کہ کیا برطانیہ، امریکا، فرانس اور اسپین کے عوام ہماری سوسائٹی کی طرح اسلحے سے لیس ہیں؟

تبصرے (0) بند ہیں