اداکار آغا علی نے ماضی کی تلخیوں پر گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ 2018 ان کے لیے مشکل ترین سال تھا، اس دوران انہوں نے سب کچھ کھو دیا تھا۔

حال ہی میں نادیہ خان اور اعجاز اسلم کی رمضان ٹرانسمیشن میں آغا علی نے اداکارہ امر خان کے ہمراہ شرکت کی۔

پروگرام کے دوران اعجاز اسلم نے سوال پوچھا کہ ایسا کوئی واقعہ بتائیں جس نے آپ کی زندگی مکمل طور پر تبدیل کردی ہو۔

جس پر آغا علی نے کہا کہ ’میں نے اس پر پہلے کبھی بات نہیں کی لیکن مجھے لگتا ہے کہ میں آج ایسی جگہ کھڑا ہوں جہاں اپنے آپ کو محفوظ تصور کرتا ہوں اور یہ بات بتا سکتا ہوں کہ 2018 میرے لیے مشکل ترین سال تھا‘۔

اداکار نے کہا کہ 2018 میں، انہوں نے انویسٹمنٹ کی، بینک اکاؤنٹ سے 80 سے 90 فیصد انویسٹ کردیے، اسی سال وہ ایک خاتون کے ساتھ تعلقات میں بھی رہے، 2018 ایسا سال تھا جس نے ان سے یہ سب کچھ چھین لیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ ’اس سال انڈسٹری میں میرا کردار کو خراب کیا گیا، 99 فیصد لوگ میرے بارے میں منفی باتیں کرتے تھے، سوشل میڈیا پر اپنے آپ کو صرف ویلن کے طور پر دیکھ سکتا تھا، میرا وزن بہت زیادہ بڑھ گیا تھا، خود پر دھیان رکھنا چھوڑ دیا تھا اور اسی سال میں نے عمرے کی سعادت حاصل کی۔‘

آغا علی نے کہا کہ عمرے کی سعادت حاصل کرنے کے بعد وہ نہ صرف اللہ کے قریب ہوگئے بلکہ 2018 کے تجربے نے ان کی زندگی کو دیکھنے کی سوچ کو تبدیل کرکے رکھ دیا۔

اداکار نے کہاکہ عمرے کے دوران انہوں نے اللہ سے رو کر دعا مانگی تھی، جس کے بعد انہوں نے زندگی بسر کرنے کا طریقہ تبدیل کردیا، ان کا کہنا تھا کہ ’آپ اگر 2018 کی تصویر کا موازنہ آج سے کریں تو سمجھ جائیں گے کہ میں کیا کہنا چاہ رہا ہوں‘۔

انہوں نے بتایا کہ 2018 کے دوران اس وقت ان کے حالات بہت بُرے تھے، انہیں ایسا لگتا تھا کہ جس کام میں وہ ہاتھ ڈالیں گے وہاں صرف تباہی ہے، ہر کام خراب ہورہا تھا، عمرے کی سعادت حاصل کرنے کے بعد اللہ نے خود ہی راستے کھولنا شروع کردیے۔

یاد رہے کہ آغا علی نے یہاں ایک خاتون سے تعلقات کا بھی ذکر کیاہے، اس سے متعلق یہاں یہ بات قابل ذکر ہے کہ 2018 میں آغا علی اداکارہ سارہ خان کے ساتھ تعلقات میں رہے تھے، یہ بھی خبریں گردش کررہی تھیں کہ وہ دونوں بہت جلد شادی کے بندھن میں بندھ جائیں گے۔

مگر بعد میں تعلق ختم ہوگیا اور 2019 میں انہوں نے ایک پرورگرام کے دوران تعلق ختم ہونے کی تصدیق کی تھی۔

ضرور پڑھیں

تبصرے (0) بند ہیں