• KHI: Fajr 4:13am Sunrise 5:42am
  • LHR: Fajr 3:18am Sunrise 4:57am
  • ISB: Fajr 3:13am Sunrise 4:57am
  • KHI: Fajr 4:13am Sunrise 5:42am
  • LHR: Fajr 3:18am Sunrise 4:57am
  • ISB: Fajr 3:13am Sunrise 4:57am

ایوانِ صدر کا کرغزستان میں پاکستانی سفیر سے رابطہ کرکے پرتشدد صورتحال پر اظہار تشویش

شائع May 19, 2024
— فائل فوٹو: اے ایف پی
— فائل فوٹو: اے ایف پی

صدر مملکت آصف علی زرداری کی ہدایت پر ایوانِ صدر نے کرغزستان میں پاکستانی سفیر سے رابطہ کرکے پرتشدد صورتحال پر تشویش کا اظہار کیا ہے۔

‎ڈان نیوز کے مطابق ایوانِ صدر نے بشکیک میں پاکستانی طلبہ کی حفاظت کے لیے اقدامات لینے کی ضرورت پر زور دیا ہے۔

ایوان صدر کے مطابق کرغزستان میں پاکستانی طلبہ کو تعلیم کے لیے سازگار ماحول فراہم کرنے کی ضرورت ہے، طلبہ کی حفاظت اور تعلیم جاری رکھنے کے لیے اقدامات کیے جائیں۔

پاکستانی سفیر نے کہا کہ کرغزستان میں پاکستانی طلبہ کی سیکیورٹی کی صورتحال بہتر ہو رہی ہے، ‎پاکستانی طلبہ کی سیکیورٹی کے لیے اقدامات لے رہے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ كرغز حکومت کے ساتھ رابطے میں ہیں، ‎کرغز حکومت اور جامعات پاکستان واپس جانے والے طلبہ کے لیے آن لائن کلاسز کا اہتمام کرےگی۔

واضح رہے کہ 18 مئی کو کرغزستان میں طلبہ کے ہاسٹل پر مقامی انتہا پسند عناصر نے حملہ کیا تھا جس میں متعدد طالبعلم زخمی ہو گئے تھے اور ان حملوں کے بعد پاکستانی طالبعلم بشکیک میں محصور ہو کر رہ گئے تھے۔

سرکاری خبر رساں ادارے ’اے پی پی‘ نے بشکیک میں پاکستانی سفارتخانے کے حوالے سے بتایا کہ بشکیک میں مقامی افراد نے مقیم غیر ملکی طلبہ بشمول پاکستانیوں پرحملہ کر دیا، جن کا چند روز قبل مصری شہریوں کے ساتھ جھگڑا ہوا تھا۔

بشکیک میں میڈیکل یونیورسٹیوں کے متعدد ہاسٹلز اور پاکستانیوں سمیت بین الاقوامی طلبہ کی نجی رہائش گاہوں پر حملے کیے گئے۔

گزشتہ رات کرغزستان میں حملوں کے بعد پاکستانی طالب علموں کی روانگی شروع ہوئی تھی، رات 12 بجے کے بعد پہلی پرواز 140 پاکستانی طلبا سمیت 180 مسافروں کو لے کر لاہور پہنچی تھی۔

کارٹون

کارٹون : 12 جون 2024
کارٹون : 11 جون 2024