دھاندلی کے گواہوں کو تحفظ ملے گا، عمران خان

25 اگست 2014

ای میل

پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے چیئرمین عمران خان—۔فوٹو اے ایف پی
پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے چیئرمین عمران خان—۔فوٹو اے ایف پی

اسلام آباد: پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے چیئرمین عمران خان نے اعلان کیا ہے کہ الیکشن میں دھاندلی کے خلاف جو لوگ بھی گواہی دینا چاہتے ہیں، انہیں مکمل تحفظ دیا جائے گا۔

ڈان نیوز ٹی وی کے مطابق پی ٹی آئی سربراہ نے ٹوئٹر پر جاری ہونے والے اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ 2013ء کے انتخابات میں ہونے والی دھاندلی کے خلاف گواہی دینے والے افراد کو تحفظ فراہم کیا جائے گا۔

عمران خان کا یہ بھی کہنا ہے کہ نواز شریف کا استعفیٰ اب لازمی ہو گیا ہے۔

اپنے ٹوئٹر پیغام میں پی ٹی آئی سربراہ عمران خان نے کہا کہ الیکشن میں دھاندلی کے معاملے پر ریٹائرڈ ایڈیشنل سیکرٹری الیکشن کمیشن کی گواہی نہایت خوش آئند پیش رفت ہے۔

یاد رہے کہ سابق ایڈیشنل سیکریٹری الیکشن کمیشن محمد افضل خان نے گزشتہ روز ایک نجی ٹی وی چینل کو دیئے گئے انٹرویو میں کہا تھا کہ 2013ء کے انتخابات میں دھاندلی میں دو سابق چیف جسٹس افتخار محمد چوہدری اور تصدق حسین جیلانی بھی ملؤث ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ الیکشن 2013ء میں عوام کا مینڈیٹ چوری کیا گیا اور چیف الیکشن کمشنر فخر الدین جی ابراہیم نے آنکھیں بند کرلی تھیں۔

انٹرویو میں سابق ایڈیشنل سیکریٹری الیکشن کمیشن افضل خان کا کہنا تھا کہ انتہائی منظم طریقے سے الیکشن میں کرپشن کی گئی، ریٹرننگ افسران کو الیکشن کمیشن کے بجائے افتخار چوہدری نے تعینات کیا اوردھاندلی کی شکایات کے کیسز کو جان بوجھ کر طوالت دی گئی۔

واضح رہے کہ محمد افضل خان 2013 میں انتخابات کے دوران الیکشن کمیشن کے ایڈیشنل سیکریٹری تھے، اب وہ ریٹائر ہو چکے ہیں۔