فاسٹ فوڈ کھانا سنگین امراض جتنا خطرناک

13 جنوری 2018

Email


یہ دعویٰ جرمنی میں ہونے والی ایک تحقیق میں سامنے آیا— اے ایف پی فائل فوٹو
یہ دعویٰ جرمنی میں ہونے والی ایک تحقیق میں سامنے آیا— اے ایف پی فائل فوٹو

برگر اور فرنچ فرائیز کو کھانا اتنا ہی نقصان دہ ہے جتنا کوئی جان لیوا مرض جیسے کینسر یا ہارٹ اٹیک آپ کو شکار بنالے۔

یہ دعویٰ جرمنی میں ہونے والی ایک تحقیق میں سامنے آیا۔

بون یونیورسٹی کی تحقیق میں دریافت کیا گیا کہ فاسٹ یا جنک فوڈ کا استعمال جسم کے دفاعی نظام کو اتنا کمزر کردیتا ہے جیسے کسی سنگین مرض نے آپ پر حملہ کیا ہو۔

مزید پڑھیں : فاسٹ فوڈ کا سب سے بڑا نقصان

تحقیق میں بتایا گیا کہ اکثر فاسٹ فوڈ کھانے کی عادت کے نتیجے میں جسمانی دفاعی نظام کے خلیات وقت گزرنے کے ساتھ زیادہ جارحانہ انداز اختیار کرلیتے ہیں جس کے نتیجے میں سنگین امراض کا خطرہ بڑھ جاتا ہے۔

محققین کا کہنا تھا کہ نتائج سے فاسٹ فوڈ اور شریانوں کی اکڑن کے درمیان تعلق کی وضاحت کی جاسکتی ہے۔

تحقیق کے مطابق چونکہ فاسٹ فوڈ چربی، چینی اور نمک سے بھرپور ہوتا ہے جن کے صحت پر منفی اثرات مرتب ہوتے ہیں جیسے ذیابیطس، خون کی شریانوں کے امراض جو کہ ہارٹ اٹیک اور فالج کا باعث سکتے ہیں جبکہ آنتوں کی کینسر وغیرہ کا خطرہ بڑھتا ہے۔

یہ بھی پڑھیں : فاسٹ فوڈ کا زیادہ استعمال کینسر کا باعث

تحقیق کے دوران محققین نے چوہوں اور انسانوں پر تجربات کیے اور نتائج سے معلوم ہوا کہ اس کے نتیجے میں جسم میں جسمانی دفاعی نظام پر منفی اثرات مرتب ہوتے ہیں۔

انہوں نے دریافت کیا کہ ایسے مخصوص خلیات کی تعداد میں اضافہ ہوتا ہے جو کہ وقت گزرنے کے ساتھ جان لیوا امراض کا خطرہ بڑھاتے ہیں۔

اس تحقیق کے نتائج طبی جریدے جرنل سیل میں شائع ہوئے۔