خواتین پر ہونے والے تشدد کو روکنے کے لیے آج عالمی سطح پر دن منایا گیا جہاں دنیا بھر میں اس مسئلے کے حل کے لیے خواتین سمیت مرد حضرات بھی سڑکوں پر نکل آئے۔

عوام نے حکومتوں سے مسئلے کے فوری حل کا مطالبہ کرتے ہوئے متاثرین سے یکجہتی کا بھی مظاہرہ کیا۔

اقوام متحدہ کے ادارہ برائے خواتین کی ایگزیکٹو ڈائریکٹر نے بھی اس مسئلے پر بیان جاری کرتے ہوئے ریپ کو معاشرے کے لیے ناقابل برداشت عمل قرار دیتے ہوئے اسے عالمی سطح پر غیر قانونی قرار دینے کا مطالبہ کیا۔

ان کا کہنا تھا کہ دنیا کے اس وقت آدھے سے زائد ممالک میں 'ازدواجی ریپ' یا 'مرضی کے اصولوں کے مخالف' ہونے والے ریپ کو مجرمانہ عمل قرار دینے کے قوانین موجود نہیں ہیں۔

بیلجیئم میں خواتین پر ہونے والے تشدد کو روکنے کے عالمی دن کے موقع پر مظاہرے کیے گئے — فوٹو: اے ایف پی
بیلجیئم میں خواتین پر ہونے والے تشدد کو روکنے کے عالمی دن کے موقع پر مظاہرے کیے گئے — فوٹو: اے ایف پی
بیلجیئم کے مظاہرے میں ایک بینر پر لکھا تھا کے می ٹو کے بعد اب لڑنے کا وقت ہے — فوٹو: رائٹرز
بیلجیئم کے مظاہرے میں ایک بینر پر لکھا تھا کے می ٹو کے بعد اب لڑنے کا وقت ہے — فوٹو: رائٹرز
فرانس میں ہونے والے مظاہروں میں لاکھوں خواتین سمیت مردوں کی بھی بڑی تعداد نے شرکت کی — فوٹو: اے ایف پی
فرانس میں ہونے والے مظاہروں میں لاکھوں خواتین سمیت مردوں کی بھی بڑی تعداد نے شرکت کی — فوٹو: اے ایف پی
ترکی میں بھی اس حوالے سے یونیورسٹی کی طالبات نے مظاہرے کیے — فوٹو: رائٹرز
ترکی میں بھی اس حوالے سے یونیورسٹی کی طالبات نے مظاہرے کیے — فوٹو: رائٹرز
احتجاج میں شامل ایک خاتون نے پلے کارڈ پکڑ رکھا ہے جس پر لکھا ہے کہ ہم مرنا نہیں چاہتے — فوٹو: رائٹرزpho
احتجاج میں شامل ایک خاتون نے پلے کارڈ پکڑ رکھا ہے جس پر لکھا ہے کہ ہم مرنا نہیں چاہتے — فوٹو: رائٹرزpho
تھائی لینڈ میں عالمی دن کے موقع پر مسلمان برادری کی جانب سے کانفرنس منعقد کی گئی جہاں خواتین سمیت گھریلو مسائل پر بحث کی گئی — فوٹو: اے ایف پی
تھائی لینڈ میں عالمی دن کے موقع پر مسلمان برادری کی جانب سے کانفرنس منعقد کی گئی جہاں خواتین سمیت گھریلو مسائل پر بحث کی گئی — فوٹو: اے ایف پی
تھائی لینڈ میں منعقدہ کانفرنس میں مردوں کی بھی بڑی تعداد نے شرکت کی — فوٹو: اے ایف پی
تھائی لینڈ میں منعقدہ کانفرنس میں مردوں کی بھی بڑی تعداد نے شرکت کی — فوٹو: اے ایف پی
بیلجیئم میں مظاہرین سرخ جوتے زمین پر رکھ کر مظاہرے کر رہے ہیں — فوٹو: رائٹرز
بیلجیئم میں مظاہرین سرخ جوتے زمین پر رکھ کر مظاہرے کر رہے ہیں — فوٹو: رائٹرز
میکسیکو میں بھی عالمی دن کے موقع پرعوام سڑکوں پر تشدد کا نشانہ بننے والی خواتین سے اظہار یکجہتی کے لیے پھول لیے نظر آئیں — فوٹو : اے پی
میکسیکو میں بھی عالمی دن کے موقع پرعوام سڑکوں پر تشدد کا نشانہ بننے والی خواتین سے اظہار یکجہتی کے لیے پھول لیے نظر آئیں — فوٹو : اے پی
اٹلی میں خواتین نے مشعل ہاتھوں میں اٹھائے مظاہرے کیے — فوٹو: اے ایف پی
اٹلی میں خواتین نے مشعل ہاتھوں میں اٹھائے مظاہرے کیے — فوٹو: اے ایف پی

ای میل

ویڈیوز

'پی آئی سی میں جو ہوا وہ نہیں ہونا چاہیے تھا'
'حسان نیازی کے خلاف بھرپور کارروائی کی جارہی ہے'
بھارتی وزیراعظم نریندر مودی منہ کے بل گر پڑے
'آصف زرداری، فریال تالپور اور مریم نواز بیرون ملک نہیں جاسکیں گے'

تصاویر

2 براعظموں میں واقع دنیا کے واحد شہر کی سیر
وکلا کا دل کے ہسپتال پر دھاوا
پاکستان میں 10سال بعد ٹیسٹ کرکٹ کی یادگار واپسی
پاکستان میں 10سال بعد ٹیسٹ کرکٹ کی واپسی

تبصرے (0) بند ہیں