پشاور زلمی کا شاندار کھیل، لاہور قلندرز کو مسلسل تیسری شکست

اپ ڈیٹ 29 فروری 2020

ای میل

پشاور زلمی نے 16 رنز سے کامیابی حاصل کرلی—فوٹو:اے ایف پی
پشاور زلمی نے 16 رنز سے کامیابی حاصل کرلی—فوٹو:اے ایف پی
بینٹن 34 رنز بنا کر آؤٹ ہوئے—فوٹو:اے ایف پی
بینٹن 34 رنز بنا کر آؤٹ ہوئے—فوٹو:اے ایف پی

پاکستان سپر لیگ (پی ایس ایل) 2020 کے اہم میچ میں پشاور زلمی نے شان دار کھیل کا مظاہرہ کرتے ہوئے لاہور قلندرز کو باآسانی 16 رنز سے شکست دے دی۔

راولپنڈی کرکٹ اسٹیڈیم میں بارش کے باعث تاخیر کا شکار پاکستان سپر لیگ (پی ایس ایل) 2020 کے میچ میں لاہور قلندرز کے کپتان سہیل اختر نے ٹاس جیت کر پشاور زلمی کو پہلے بیٹنگ کی دعوت دی۔

پاکستان سپر لیگ میں لاہور قلندرز اور پشاور زلمی کے درمیان ایونٹ کا 11واں میچ بارش اور خراب آؤٹ فیلڈ کے سبب تاخیر کا شکار ہوا جس کے نتیجے میں میچ کو 12 اوورز تک محدود کردیا گیا۔

پشاور زلمی کی جانب سے کامران اکمل اور بینٹن نے جارحانہ آغاز کرتے ہوئے شاہین شاہ آفریدی اور سلمان ارشاد کے ابتدائی 3 اوورز میں 32 رنز بنائے۔

شاہین شاہ آفریدی نے کامران اکمل کی وکٹ لی لیکن اس وقت تک ان کے خلاف محض دو اوورز میں 25 رنز بنائے جاچکے تھے، کامران اکمل 14 رنز بنا کر آؤٹ ہوئے۔

پشاور زلمی نے پانچویں اوور میں ہی ٹیم کی نصف سنچری مکمل کی جس کے لیے نئے بلے باز حیدر علی نے بینٹن کا بھرپور ساتھ دیا اور دوسری وکٹ ڈیوڈ ویزے نے 69 رنز پر حاصل کی جب بینٹن 34 رنز بنا کر پویلین لوٹ گئے۔

لیونگسٹن 90 کے اسکور پر 5 رنز بنا کر آؤٹ ہوئے اور فوری بعد حیدر علی بھی آؤٹ ہوئے جنہوں نے برق رفتار 34 رنز بنائے۔

وکٹوں کے گرنے کے باوجود رن ریٹ میں فرق نہیں پڑا اور نئے آنے والے بلے بازوں نے جارحانہ انداز اپنائے رکھا، تاہم محمد محسن صفر اور گریگری 16 رنز بنا کر آؤٹ ہوئے۔

کپتان ڈیرن سیمی نے بھی ایک چھکے کی مدد سے 9 گیندوں پر 12 رنز بنائے اور آخری گیند پر شاہین شاہ آفریدی کی گیند پر دلبر حسین کا کیچ بنے۔

پشاور زلمی نے بارش کے باعث مختصر کیے گئے میچ کے مقررہ 12 اوورز میں 7 وکٹوں پر 132 رنز بنائے۔

وہاب ریاض نے آؤٹ ہوئے بغیر 10 گیندوں پر ایک چھکے کی مدد سے 13 رنز بنائے۔

لاہور قلندرز کی جانب سے دلبر حسین نے سب سے زیادہ 4 وکٹیں حاصل کی اور 3 اوور کے کوٹے میں 24 رنز دیے، ڈیوڈ ویزے نے 2 اور شاہین شاہ آفریدی نے 27 رنز کے عوض ایک وکٹ حاصل کی۔

مشکل ہدف کے تعاقب میں لاہور قلندرز کے اوپنرز نے 48 رنز کا آغاز کیا تاہم کرس لِن 15 گیندوں پر 4 چوکوں اور ایک چھکے کی مدد سے 30 رنز بنا کر آؤٹ ہوئے جس کے بعد محمد حفیظ صرف ایک رن کا اضافہ کرکے گریگری کی شان دار باؤلنگ کا شکار ہوئے۔

فخر زمان آؤٹ ہونے والے تیسرے بلے باز تھے جنہوں نے ایک چوکے اور ایک چھکے کی مدد سے 22 رنز بنائے اور 56 کے مجموعی اسکور پر پویلین کی راہ لی، ڈین ولاس بھی بڑی اننگز کھیلنے میں ناکام رہے اور 2 رنز بنا کر عامر خان کو وکٹ دے بیٹھے۔

سمیت پٹیل نے مشکل وقت میں ٹیم کی نیا پار لگانے کے لیے کوشش ضرور کی لیکن یہ کوشش بارآور ثابت نہ ہوسکی کیونکہ دوسرے اینڈ سے وکٹیں گرنے کا سلسلہ بدستور جاری تھا۔

کپتان سہیل اختر 12 اور ڈیوڈ ویزے 9 رنز بنا کر 89 رنز کے مجموعی اسکور پر آؤٹ ہوچکے تھے لیکن سمیت پٹیل نے ہمت نہیں ہاری اور جارحانہ بیٹنگ جاری رکھی تاہم ٹیم کوفتح دلانے میں ناکام ہوئے۔

لاہور قلندرز نے مقررہ 12 اوورز میں 6 وکٹوں پر 116 رنز بنائے اور میچ میں 16 رنز سے شکست کھائی جو ان کی مسلسل تیسری شکست ہے۔

سمیت پٹیل 15 گیندوں پر 5 چوکوں اور ایک چھکے کی مدد سے 34 رنز اور سلمان ارشاد 2 رنز بنا کر ناٹ آؤٹ رہے۔

پشاور زلمی کی جانب سے گریگری نے 4 وکٹیں حاصل کیں، وہاب ریاض اور عامر خان نے ایک،ایک کھلاڑی کو آؤٹ کیا۔

گریگری کو میچ کا بہترین کھلاڑی قرار دیا گیا۔

میچ کے لیے دونوں ٹیموں نے تبدیلیاں کیں، لاہور قلندر انجری کے باعث حارث روؤف سے محروم ہوچکی ہے جو آئندہ چند میچوں کے لیے دستیاب نہیں ہوں گے۔

پشاورزلمی نے بھی اپنی ٹیم میں تبدیلی کی ہے اور سینئر کھلاڑی شعیب ملک کو شامل نہیں کیا اور ان کی جگہ محمد محسن کو ٹیم کا حصہ بنایا جبکہ عامر خان کو بھی موقع دیا گیا تھا۔

میچ کے لیے دونوں ٹیمیں ان کھلاڑیوں پر مشتمل تھیں۔

پشاور زلمی: ڈیرن سیمی (کپتان)، کامران اکمل، ٹام بینٹن، محمد محسن، لیام لیونگسٹن، حیدرعلی، ڈیرن سیمی، لیوس گریگری، وہاب ریاض، حسن علی، راحت علی، عامر خان

لاہور قلندرز: سہیل اختر (کپتان)، کرس لِن، فخر زمان، محمد حفیظ، ڈین ولاس، ڈیوڈ ویزے، سمیت پٹیل، شاہین آفریدی، دلبر حسین، معاذ خان، سلمان ارشاد

راولپنڈی میں گزشتہ رات اور آج ہونے والی بارش کے سبب راولپنڈی کرکٹ اسٹیڈیم کی آؤٹ فیلڈ بری طرح متاثر ہوئی اور میدان میں جگہ جگہ پانی کھڑا ہو گیا تھا۔

بارش کے سبب راولپنڈی کرکٹ اسٹیڈیم میں شائقین نے خود کو ڈھکا ہوا ہے — فوٹو: اے ایف پی
بارش کے سبب راولپنڈی کرکٹ اسٹیڈیم میں شائقین نے خود کو ڈھکا ہوا ہے — فوٹو: اے ایف پی

ممکنہ بارش کے پیش نظر راولپنڈی کرکٹ اسٹیڈیم میں نکاسی آب کے لیے ٹیمیں پہلے ہی متحرک ہو چکی تھیں تاکہ میچ کو بارش کی صورت میں میچ کو متاثر ہونے سے بچایا جا سکے۔

قبل ازیں پاکستان کرکٹ بورڈ کا کہنا تھا کہ اگر بارش کے باعث ٹاس نہ ہو سکا تو ٹکٹ کی 100فیصد رقم شائقین کو واپس کردی جائے گی جبکہ 5اوورز سے کم کا کھیل کھیلا گیا تو 75فیصد ٹکٹ ریفنڈ ہوگا۔

پاکستان سپر لیگ میں پشاور زلمی نے اس سے قبل تین میں سے ایک میچ میں فتح حاصل کی تھی جبکہ لاہور کو اپنے دونوں ابتدائی میچوں میں ناکامی کا منہ دیکھنا پڑا تھا۔

زلمی پشاور زلمی نے اپنے فینز کے لیے میچ دیکھنے کے خصوصی انتظامات کیے ہیں اور پشاور سے پانچ بسوں کے ذریعے شائقین میچ کے لیے راولپنڈی پہنچ گئے تھے۔

اس کے ساتھ ساتھ پشاور زلمی کی جانب سے مقامی شائقین کی دلچسپی کا بھی خصوصی طور پر خیال رکھتے ہوئے کرنل شیر خان اسٹیڈیم میں بھی فینز کے لیے بڑی اسکرین کا انتظام کیا گیا تھا۔