ول اسمتھ نے تھپڑ مارنے پر کرس راک سے معافی مانگ لی

ول اسمتھ — رائٹرز فوٹو
ول اسمتھ — رائٹرز فوٹو

اداکار ول اسمتھ نے آسکر ایوارڈز کی تقریب میں تھپڑ مارنے پر کامیڈین کرس راک سے معافی مانگ لی ہے۔

ول اسمتھ نے معافی کا بیان اس وقت جاری کیا جب ایوارڈ انتظامیہ نے کہا تھا کہ ایوارڈ جیتنے والے اداکار کے کلاف کارروائی کی جاسکتی ہے کیونکہ اس واقعے نے فلمی صنعت کے سب سے بڑے ایوارڈز کی تقریب کو متاثر کیا۔

ول اسمتھ نے انسٹاگرام پوسٹ میں کہا کہ ٹیلی ویژن پر نشر ہونے والی تقریب میں ان کا رویہ ناقابل قبول اور ناقابل عذر ہے۔

انہوں نے کہا 'میں عوامی سطح پر کرس سے معافی مانگنا چاہتا ہوں، میں حد سے باہر گیا اور میں غلط ہوں'۔

خیال رہے کہ یہ واقعہ اس وقت پیش آیا جب کرس راک نے اسٹیج پر ول اسمتھ کی بیوی کے بالوں پر مذاق کیا تھا۔

اس مذاق پر ول اسمتھ اسٹیج پر گئے اور کامیڈین کو تھپڑ دے مارا۔

اس موقع پر امریکا میں آسکر ٹیلی کاسٹ کو میوٹ کیا گیا مگر جاپان اور دیگر ممالک میں یہ منظر نشر ہوا۔

اس صورتحال میں سکتے کا شکار ہونے والے کرس راک نے کہا 'ول اسمتھ نے ابھی مجھے مارا'۔

یہ واضح نہیں کہ کرس راک کو ول اسمتھ کی بیوی کے بال جھڑنے کا باعث بننے والی بیماری کا علم ہے یا نہیں، اس حوالے سے ول اسمتھ نے اپنی پوسٹ میں کہا 'جیڈا کے طبی مسئلے کے بارے میں مذاق میری برداشت سے باہر ہوگیا تھا اور میں نے جذباتی انداز سے ردعمل ظاہر کیا'۔

انہوں نے مزید کہا 'میں شرمندہ ہوں اور محبت اور مہربانی والی دنیا میں تشدد کی کوئی جگہ نہیں'۔

اس سے قبل اکیڈمی آف موشن پکچرز آرٹس اینڈ سائنسز نے ول اسمتھ کی حرکت کی مذمت کرتے ہوئے کہا تھا کہ ہم اس معاملے پر نظرثانی کررہے ہیں۔

بیان میں کہا گیا 'ہم باضابطہ طور پر واقعے کا جائزہ لے رہے ہیں اور ہمارے اصول، قوانین اور کیلیفورنیا کے قوانین کے تحت مزید کارروائی اور اقدامات پر غور کیا جائے گا'۔

اکیڈمی کی پالیسی واضح طور پر تشدد، ہراساں کرنے یا امتیاز کے خلاف ہے اور بیان کے مطابق اکیڈمی اراکین انسانی وقار کے احترام کے اصولوں کو اہمیت دیتے ہیں۔

ان اصولوں کی خلاف ورزی پر رکنیت معطل ہونے یا ادارے سے اخراج، آسکر ایوارڈز منسوخ کرنے یا آئندہ کے ایوارڈز کے لیے اہل نہ ہونے جیسے اقدامات کیے جاسکتے ہیں۔

اداکاروں کی نمائندہ تنظیم Sag-Aftra نے ول اسمتھ کی جانب سے تھپڑ مارنے کو ناقابل قبول قرار دیا ہے اور اس کا کہنا ہے کہ وہ اکیڈمی اور براڈکاسٹر اے بی سی سے رابطے میں ہے، تاکہ اس رویے پر مناسب طریقے پر کارروائی کی جاسکے۔

اس سے پہلے پروڈیوسر ہاروے ونسٹن کی رکنیت کو ایک درجن سے زیادہ خواتین پر حنسی حملے کے الزام پر اکیڈمی سے خارج کیا گیا تھا۔

اپنے بیان میں ول اسمتھ نے اکیڈمی، شو پروڈیوسرز، تقریب میں شریک افراد، ناظرین، ولیمز فیملی اور اپنی فلم کنگ رچرڈ کے افراد سے بھی معذرت کی۔

دوسری جانب اسٹوڈیو عہدیداران نے ول اسمتھ کے حوالے سے خاموشی اختیار کی ہوئی ہے۔

53 سا؛پ اداکار اس وقت نیٹ فلیکس، والڈ ڈزنی اور ایپل ٹی وی پلس کے ساتھ مختلف پراجیکٹس پر کام کررہے ہیں اور ان کمپنیوں نے فی الحال کوئی بیان نہیں دیا۔

آسکر ایوارڈز کے پروڈیوسرز کو توقع تھی کہ کورونا کی وبا کے دوران کم ریٹنگز والی تقاریب کے بعد اس سال کی تقریب یدگار ہوگی، اس مقصد کے لیے انہوں نے کافی اقدامات بھی کیے۔

مگر ان کوششوں کی بجائے ول اسمتھ اور کرس راک کا واقعہ وائرل ہوا اور ٹی وی دیکھنے والوں کی تعداد میں بھی 2021 کے مقابلے میں 56 فیصد اضافہ ہوا۔

ضرور پڑھیں

تبصرے (0) بند ہیں