• KHI: Maghrib 7:24pm Isha 8:53pm
  • LHR: Maghrib 7:10pm Isha 8:50pm
  • ISB: Maghrib 7:21pm Isha 9:05pm
  • KHI: Maghrib 7:24pm Isha 8:53pm
  • LHR: Maghrib 7:10pm Isha 8:50pm
  • ISB: Maghrib 7:21pm Isha 9:05pm

پاک - بھارت مقابلے کے دوران بارش کی پیشگوئی، میچ متاثر ہونے کا خدشہ

شائع June 9, 2024
فوٹو: آئی سی سی
فوٹو: آئی سی سی

ٹی20 ورلڈکپ 2024 میں آج پاکستان اور بھارت کے مقابلے کے دوران نیویارک میں بارش کی پیش گوئی کی جارہی ہے جس کی وجہ سے میچ میں کچھ دیر کی تاخیر ہوسکتی ہے، تاہم میچ متاثر ہونے کے زیادہ امکانات نہیں ہیں اور شائقین کرکٹ کو پورے 20 اوورز کا کھیل دیکھنے کو ملے گا۔

امریکا اور ویسٹ انڈیز میں جاری ٹی20 ورلڈکپ میں پاکستانی ٹیم میزبان امریکا کے ہاتھوں پہلا میچ ہارنے کے بعد مشکلات کا شکار ہے اور اپنے دوسرے میچ میں ہی کرو یا مرو کی پوزیشن میں آچکی ہے، ایسے میں پاکستان کے پاس اگلے مرحلے میں رسائی کے لیے اب غلطی کی کوئی گنجائش نہیں ہے۔

پاکستان کرکٹ ٹیم کے کپتان بابراعظم اور ہیڈ کوچ گیری کرسٹن بھارت کے خلاف نیویارک کے ناساؤ کاؤنٹی انٹرنیشنل کرکٹ اسٹیڈیم میں ہونے والے مقابلے میں کم بیک کے لیے پرامید ہیں۔

تاہم بارش قومی ٹیم کی امیدوں پر پانی پھیر سکتی ہے، اگر بارش کی وجہ سے میچ متاثر ہوا تو دونوں ٹیموں کو ایک ایک پوائنٹ مل جائے گا، جو شاہینوں کی مشکلات میں مزید اضافہ کردے گا۔

انٹرنیشنل کرکٹ کونسل (آئی سی سی) کی جانب سے کسی بھی ٹیم کے لیے میچ کا اضافی دن نہیں رکھا گیا ہے، لہذا بارش یا کسی بھی وجہ سے میچ متاثر ہونے کی صورت دوبارہ مقابلہ نہیں ہوگا بلکہ دونوں ٹیموں کو برابر پوائنٹس مل جائیں گے۔

بھارتی میڈیا رپورٹس میں پاکستان اور بھارت کے میچ کے دوران نیویارک میں ہلکی بارش کی پیش گوئی کی گئی ہے، رپورٹس میں بتایا گیا کہ بارش کے باعث ٹاس میں کچھ دیر کی تاخیر ہوسکتی ہے، البتہ دونوں ٹیموں کو اضافی وقت مل سکتا ہے جس کے باعث میچ متاثر ہونے کے زیادہ امکانات نہیں ہیں۔

رپورٹس میں بتایا گیا کہ نیویارک میں صبح کے وقت 9 فیصد بارش کے امکانات ہیں اور مقامی وقت کے مطابق دن 11 سے 12 بجے کے وقت بارش کے امکانات بڑھ جائیں گے۔

اگر بارش سے میچ متاثر ہوا تو کیا ہوگا؟

پاکستان اور بھارت کے میچ کے دوران بارش کی وجہ سے میچ نہیں ہوسکا تو دونوں ٹیموں کو ایک ایک پوائنٹ ملے گا، جس سے قومی ٹیم کی مشکلات میں اضافہ ہوجائے گا کیوں کہ پاکستان کے لیے یہ میچ جیتنا انتہائی اہم ہے۔

ٹی20 ورلڈکپ کے گروپ اے میں امریکا پہلے ہی 2 میچز جیت چکا ہے اور بھارت بھی ایک میچ جیت کر 2 پوائنٹس حاصل کرچکا ہے، ایسے میں بھارت کے خلاف صرف ایک پوائنٹ قومی ٹیم کی سپر ایٹ مرحلے میں رسائی کے درمیان رکاؤٹ بن سکتا ہے۔

پچ کی صورتحال

نیویارک کے نساؤ کاؤنٹی انٹرنیشنل کرکٹ اسٹیڈیم کی پچ کی بات کریں تو یہ اب تک انتہائی خطرناک ثابت ہوئی ہے اور اس پچ سے متعلق حتمی طور پر کچھ نہیں کہا جاسکتا، البتہ بھارت اور آئرلینڈ کے میچ کے بعد یہ اندازہ لگانا مشکل نہیں ہے کہ اس پچ پر بیٹنگ کرنا آسان نہیں ہوگا اور یہ ہمارے بلےبازوں کا اصل امتحان ہوگا۔

انٹرنیشنل کرکٹ کونسل (آئی سی سی) ایونٹس میں پاک – بھارت ٹاکرے کی بات کریں تو اس میں بلاشبہ بھارت کا پلڑا بھاری ہے، جو 12 میں سے 3 میچز اپنے نام کرچکا ہے اور پاکستان کو صرف 3 میں کامیابی ملی ہے، جب کہ آخری بار دونوں ٹیموں کا آمنا سامنا 2022 کے ٹی20 ورلڈکپ میں میلبرن میں ہوا تھا، جہاں ویرات کوہلی نے شاندار اننگز کھیل کر پاکستانیوں کی امیدوں پر پانی پھیر دیا تھا۔

تاہم، پاکستان دبئی میں ہونے والے ٹی20 ورلڈکپ 2021 کی یادیں بھی تازہ کرسکتا ہے، جہاں شاہین شاہ آفریدی نے بھارت کے ٹاپ آرڈر کا صفایا کردیا تھا اور اس بار شاہین آفریدی کے ساتھ محمد عامر اور نسیم شاہ بھی موجود ہیں، ایسے میں پاکستان ایک بار پھر تاریخ دہراسکتا ہے۔

کارٹون

کارٹون : 17 جون 2024
کارٹون : 16 جون 2024