اینڈرائیڈ 11 آپریٹنگ سسٹم باضابطہ طور پر متعارف

08 ستمبر 2020

ای میل

— فوٹو بشکریہ گوگل
— فوٹو بشکریہ گوگل

گوگل نے اپنے نئے موبائل آپریٹنگ سسٹم اینڈرائیڈ 11 کو باضابطہ طور پر متعارف کرادیا ہے۔

یہ آپریٹنگ سسٹم کچھ ماہ قبل بیٹاورژن میں پیش کیا گیا تھا اور اب اسے اسمارٹ فونز کے لیے متعارف کرایا گیا ہے۔

اس بار صرف گوگل پکسل فونز کی بجائے دیگر کئی کمپنیوں کے فونز میں بھی اسے فوری اپ ڈیٹ کیا جارہا ہے۔

اس بار نئے اینڈرائیڈ آپریٹنگ سسٹم کو ون پلس، شیاؤمی، اوپو اور رئیل می فونز (مخصوص ماڈلز میں) گوگل پکسل فونز کے ساتھ آج سے ہی اپ ڈیٹ کیا جارہا ہے۔

یہ نیا آپریٹنگ سسٹم گوگل پکسل 2، 3، 3 اے اور 4 اے کے صارفین کے لیے دستیاب ہے۔

اسی طرح ون پلس 8 اور 8 پرو کے صارفین بھی اس اینڈرائیڈ آپریٹنگ سسٹم کو اپ ڈیٹ کرسکتے ہیں۔

گوگل نے یہ بھی وعدہ کیا ہے کہ مزید شراکت داروں کی جانب سے بھی آنے والے مہینوں میں ڈیوائسز میں آپریٹنگ سسٹم اپ ڈیٹ کیا جائے گا۔

اینڈرائیڈ 11 میں گوگل کی جانب سے متعدد نئے فیچرز کا اضافہ کیا جارہا ہے، حالانکہ اس بار سسٹم میں نئے فنکشنز کی بجائے پہلے کے فنکشنز کو زیادہ آسان بنانے پر توجہ دی گئی ہے۔

اینڈرائیڈ 11 میں سب سے بڑی تبدیلی میسجنگ ایپس میں گروپ نوٹیفکیشنز کے حوالے سے ہے جبکہ فیس بک میسنجر جیسا ببل انٹرفیس بھی میسجنگ کے لیے دیا جارہا ہے۔

اس کے علاوہ نئے میڈیا کنٹرولز، ایک نیا اسکرین شاٹ انٹرفیس، ایک سسٹم لیول اسمارٹ فون ہوم کنٹرول مینیو بھی دیا جارہا ہے جبکہ صارفین کی پرائیویسی کے تحفظ کے لیے پرمیشن سیٹنگز کو مزید سخت کیا جارہا ہے۔