زینڈیا 'ایمی' ایوارڈ جیتنے والی کم عمر ترین اداکارہ بن گئیں

اپ ڈیٹ 22 ستمبر 2020

ای میل

رواں برس ایمی ایوارڈز کی 72 ویں سالانہ تقریب منعقد کی گئی تھی— فوٹو: اے پی
رواں برس ایمی ایوارڈز کی 72 ویں سالانہ تقریب منعقد کی گئی تھی— فوٹو: اے پی

ایچ بی او کی ڈراما سیریز ’یوفوریا‘ میں مرکزی کردار اداکاری کرنے والے زینڈیا 'ایمی' ایوارڈ جیتنے والی سب سے کم عمر ترین ڈراما ایکٹریس بن گئیں۔

’ایمی‘ ایوارڈز کو امریکی ٹیلی وژن کی دنیا کے سب سے معتبر ایوارڈ کا اعزاز حاصل ہے اور یہ ایوارڈز صرف ٹی وی پر چلنے والے پروگرامات اور ڈراموں کو دیے جاتے ہیں۔

’ایمی‘ ایوارڈز کا آغاز 1949 میں کیا گیا تھا اور رواں برس اس کی 72 ویں سالانہ تقریب منعقد کی گئی تھی۔

کورونا وائرس کے باعث رواں برس ’ایمی‘ ایوارڈز مختلف انداز میں منعقد ہوئے جس کی میزبانی جمی کمیل نے کی تھی۔

مزید پڑھیں: ایمی ایوارڈز کی ورچوئل تقریب، 30 ایوارڈز ایچ بی او کے نام

ایمی ایوارڈز میں اے ٹی اینڈ ٹی ایچ بی او نیٹ ورک نے سب سے زیادہ 30 ایوارڈز حاصل کیے، جن میں 'سکسیشن' اور 'واچ مین' ڈرامے بھی شامل ہیں اور سکسیشن نے بہترین ڈرامے کا اعزاز حاصل کیا۔

ایمی ایوارڈز کے دوران سب سے بڑا دھچکا اس وقت لگا جب ڈزنی چینل کی سابق اداکارہ 24 سالہ زینڈیا کو ایچ بی او کی ٹی وی سیریز یوفوریا میں بہترین ڈراما ایکٹریس کا ایوارڈ دیا گیا۔

اس حوالے سے ورچوئل بیک اسٹیج انٹرویو میں انہوں نےکہا کہ میں عام طور پر روتی نہیں ہوں لیکن یہ ایک بہت جذباتی لمحہ تھا، میں اب تک یقین نہیں کرپارہی۔

24 سالہ زینڈیا ایچ بی او سیریز میں بہترین اداکارہ کا ایوارڈ لینے کے بعد جذباتی ہوگئیں۔

زینڈیا ڈراما ایکٹریس کا ایمی ایوارڈ حاصل کرنے والی دوسری سیاہ فام اداکارہ ہیں، ان سے قبل 2015 میں ویولا ڈیوس کو 'ہاؤ ٹو گیٹ اوے ود مرڈر' کے لیے دیا گیا تھا۔

اداکار ہ نے ہوٹل میں ایوارڈ وصول کیا جس پر ان کے اہلخانہ اور دوست بھی کافی خوش تھے۔

یوفوریا میں زینڈیا نے روئے بینیٹ نامی منشیات کی عادی ایک نوجوان لڑکی کا کردار ادا کیا تھا جو سیریز میں اپنی سنجیدگی اور ریکوری سے جدوجہد کرتی دکھائی دیتی ہے۔

مذکورہ سیریز کی کہانی ہائی اسکول کے طلبہ کے درمیان منشیات، صدمے اور شناخت کے گرد گھومتی ہے۔

یہ بھی پڑھیں: کورونا کے باعث 'ایمی ایوارڈز' کی ورچوئل تقریب کے انعقاد کا اعلان

انہوں نے کہا کہ میں صرف یہ کہنا چاہتی ہوں کہ نوجوان افراد میں امید ہوتی ہے، میں جانتی ہوں کہ ہمارا شو ہمشہ اس کی عظیم مثال نہیں تھا۔

زینڈیا نے کہا کہ کورونا وائرس کی عالمی وبا کے باوجود وہ اپنی کامیابی کا یہ لمحہ اپنے اہلخانہ اور دوستوں کے ساتھ شیئر کرنے پر خوش ہیں۔

انہوں نے کہا کہ میرا خیال ہے کہ ایسے ہی لمحات ہوتے ہیں جن میں ہم رکنا اور خوش ہونا چاہتے ہیں۔

خیال رہے کہ زینڈیا کے علاوہ جینیفر اینسٹن، اولیویا کولمین، جوڈی کومر، لورا لینے اور سانڈرا او کو بہترین ڈراما ایکٹریس کے ایوارڈ کے لیے نامزد کیا گیا تھا۔