عامر خان پر بھارتی فوج اور ہندوؤں کے جذبات مجروح کرنے کا الزام

اپ ڈیٹ 13 اگست 2022
فلم میں عامر خان کو ذہنی مسائل کے شکار فوجی کے طور پر دکھایا گیا ہے—اسکرین شاٹ
فلم میں عامر خان کو ذہنی مسائل کے شکار فوجی کے طور پر دکھایا گیا ہے—اسکرین شاٹ

حال ہی میں ریلیز ہونے والی فلم ’لال سنگھ چڈھا‘ کے پروڈیوسر و ہیرو بولی وڈ مسٹر پرفیکشنسٹ عامر خان کے خلاف مقدمہ دائر کرنے کے لیے پولیس میں درخواست دائر کردی گئی۔

بھارتی اخبار ’ہندوستان ٹائمز‘ کے مطابق ممبئی پولیس کمشنر کے دفتر میں ونیت جندل نامی وکیل کی جانب سے درخواست دائر کی گئی ہے کہ عامر خان، ہدایت کار اجیت ایڈوت اور فلم کی پروڈکشن کمپنی پیراماؤنٹ کے خلاف بھارتی فوج اور ہندوؤں کے جذبات مجروح کرنے کا مقدمہ دائر کیا جائے۔

رپورٹ کے مطابق پولیس کو دی گئی درخواست میں استدعا کی گئی ہے کہ فلم کی ٹیم اور عامر خان کے خلاف انڈین پینل کوڈ (آئی پی سی) کی مختلف دفعات کے تحت فساد پیدا کرنے، مختلف عقائد کے لوگوں میں نفرت پیدا کرنے، عوامی فساد کو پھیلانے اور لوگوں کے مذہبی جذبات مجروح کرنے کے الزامات کے تحت مقدمہ دائر کیا جائے۔

وکیل کی جانب سے دائر درخواست میں موقف اختیار کیا گیا ہے کہ فلم میں عامر خان نے نہ صرف بھارتی فوج کی توہین کی ہے بلکہ انہوں نے ہندوؤں کے جذبات بھی مجروح کیے ہیں۔

فلم میں کرینہ کپور نے عامر خان کے پیار کا کردار ادا کیا ہے—اسکرین شاٹ
فلم میں کرینہ کپور نے عامر خان کے پیار کا کردار ادا کیا ہے—اسکرین شاٹ

درخواست میں ’لال سنگھ چڈھا‘ کے مناظر کو بیان کرتے ہوئے لکھا گیا ہے کہ فلم میں دکھایا گیا ہے کہ ذہنی مسائل کے شکار افراد کو بھارتی فوج میں بھرتی کرنے کے بعد اسے جنگ کے لیے کارگل پر بھیجا جاتا ہے۔

یہ بھی پڑھیں: انتہاپسند ہندؤں کے احتجاج کے باوجود ’لال سنگھ چڈھا‘ریلیز

درخواست میں موقف اختیار کیا گیا ہے کہ یہ حقیقت سب جانتے ہیں کہ بھارتی فوج میں ذہنی و جسمانی طور پر صحت مند افراد کو بھرتی کرکے کارگل پر جنگ لڑنے کے لیے بھیجا گیا تھا۔

درخواست میں کہا گیا ہے کہ فلم کے ایک منظر میں کارگل پر دکھایا گیا ہے کہ عامر خان سے ایک پاکستانی مسلمان فوجی نماز پڑھنے کی بات کرتا ہے اور انہیں بھی عبادت کرنے کا مشورہ دیتا ہے، جس پر عامر خان کہتے ہیں کہ ان کی والدہ انہیں بتاتی رہی ہیں کہ پوجا پاٹھ کی چیزیں بیماری ہوتی ہیں۔

درخواست کے مطابق عامر خان نے فلم میں ہندوؤں کے جذبات مجروح کیے اور پوجا پاٹھ کو بیماری قرار دیا جب کہ ذہنی مسائل کے شکار شخص کو بھارتی فوج کا جوان دکھانے سے بھی فوج کی توہین ہوئی ہے۔

وکیل کی درخواست پر پولیس نے فوری طور پر کوئی رد عمل نہیں دیا، عامر خان کی اسی فلم پر پہلے ہی بھارت بھر میں لوگوں نے ان کے پرانے انٹرویو کی بنیاد پر ان کے خلاف مظاہرے شروع کر رکھے ہیں۔

عامر خان کی حال ہی میں 2015 کا ویڈیو کلپ وائرل ہوا تھا، جس میں وہ بتاتے دکھائی دیے کہ انہیں بیوی کہتی رہی ہیں کہ چلیں بھارت چھوڑ کر بیرون ملک منتقل ہوجاتے ہیں۔

عامر خان کے پرانے ویڈیو کلپ پر ان کی فلم کے خلاف مظاہروں کی وجہ سے ان کی فلم کے 1300 شوز منسوخ بھی کیے گئے تھے۔

’لال سنگھ چڈھا‘ کو 11 اگست کو بھارت بھر میں ریلیز کیا گیا تھا اور اس نے پہلے دن 10 سے 12 کروڑ کی کمائی کی تھی۔

’لال سنگھ چڈھا‘ ہولی وڈ کی 1994 کی کلاسک فلم ’فارسٹ گمپ‘ کا ہندی ریمیک ہے، جس میں ٹام ہینکس نے مرکزی کردار ادا کیا تھا۔

’لال سنگھ چڈھا‘ میں ٹام ہینکس کا کردار عامر خان نے ادا کیا ہے جب کہ کرینہ کپور نے ان کے پیار کا کردار ادا کیا ہے۔

دلچسپ بات یہ ہے کہ اس فلم میں عامر خان کی والدہ کا کردار ان سے 17 سال کم عمر اداکارہ مونا سنگھ نے ادا کیا ہے۔

ضرور پڑھیں

تبصرے (2) بند ہیں

asif khan Aug 13, 2022 12:50pm
FOREST GUMP............. Indian log sirf Hollywood ko hi copy kartey hai..... Inki apni koi story nahi hoti.. alot of indian movies are copy of Hollywood Movies.
Murad Aug 13, 2022 01:35pm
Bollywood and its audience didn't deserve to have Aamir Khan.