سیلاب زدگان کیلئے مختلف ممالک کی جانب سے امدادی سامان کی آمد جاری

اپ ڈیٹ 29 اگست 2022
<p>سیلاب متاثرین کی تعداد سوا 3 کروڑ سے زیادہ ہونے کے خدشات ہیں— فائل فوٹو: اے ایف پی</p>

سیلاب متاثرین کی تعداد سوا 3 کروڑ سے زیادہ ہونے کے خدشات ہیں— فائل فوٹو: اے ایف پی

تباہ کن اور ہلاکت خیز سیلاب کے بعد پاکستان کی جانب سے مدد کی اپیل کے جواب میں دنیا کے مختلف ممالک کی جانب سے امداد اور اظہار یکجہتی کے پیغامات کا سلسلہ جاری ہے جب کہ کینیڈا، فرانس، قطر، متحدہ عرب امارات، ترکی اور آذربائیجان نے مدد کے عزم کا اظہار کیا ہے۔

ڈان اخبار کی رپورٹ کے مطابق غیر ملکی خبر رساں ادارے اے ایف پی کے مطابق، پوپ فرانسس نے عالمی برادری سے پاکستان کی مدد کرنے پر زور دیتے ہوئے کہا کہ وہ متاثرین کے لیے دعاگو ہیں۔

کینیڈین وزیر برائے بین الاقوامی ترقی ہرجیت سجن نے ایک بیان میں کہا کہ کینیڈا کی حکومت نے پاکستان میں امدادی کارروائیوں کے لیے انٹرنیشنل فیڈریشن آف ریڈ کراس اور ریڈ کریسنٹ سوسائٹیز کو 20 ہزار ڈالر مختص کیے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں: سیلاب زدہ علاقوں تک امداد پہنچانے میں فلاحی تنظیموں کو مشکلات درپیش

یہ فنڈز پاکستان ریڈ کریسنٹ سوسائٹی پانی، صفائی اور حفظان صحت کی خدمات اور نقد امداد کے لیے استعمال کرے گی۔

ہرجیت سجن نے مزید کہا کہ ‘ہم صورتحال کی نگرانی جاری رکھے ہوئے ہیں اور ملکی شراکت داروں اور کثیرالجہتی تنظیموں کے ساتھ مل کر کام کر رہے ہیں تاکہ یہ دیکھیں کہ کینیڈا پاکستانی عوام کے لیے کیا اضافی مدد فراہم کر سکتا ہے’۔

کینیڈا، اقوام متحدہ کے سینٹرل ایمرجنسی رسپانس فنڈ (سی ای آر ایف) کا بھی عطیہ دہندہ ہے جس نے سیلاب سے نمٹنے کے لیے 30 لاکھ ڈالر مختص کیے ہیں۔

یہ فنڈنگ سیلاب سے متاثرہ علاقوں میں صحت، غذائیت، خوراک، پانی اور صفائی کے لیے استعمال کی جائے گی۔

کینیڈین وزیر اعظم جسٹن ٹروڈو نے ایک بیان میں کہا کہ کینیڈا خوراک، صاف پانی اور دیگر ضروری خدمات جلد از جلد فراہم کرنے کے لیے یو این سی ای آر ایف کے ذریعے مدد فراہم کر رہا ہے۔

مزید پڑھیں: اقوام متحدہ پاکستان کے سیلاب متاثرین کیلئے 16کروڑ ڈالر امداد کی اپیل کرے گی

انہوں نے کہا کہ ‘میری طرح ملک بھر کے عوام پاکستان میں تباہ کن سیلاب سے متاثر ہونے والے ہر فرد کے بارے میں فکرمند ہیں’۔

کینیڈا میں پاکستانی ہائی کمشنر ظہیر جنجوعہ نے پاکستان میں انسانی جانوں کے تحفظ کی کوششوں پر کینیڈین وزیر اعظم اور کینیڈین عوام کا شکریہ ادا کیا۔

کینیڈا کی وزیر خارجہ میلانی جولی نے کہا کہ ‘پاکستان میں سیلاب کی تصاویر دل دہلا دینے والی ہیں، ہمیں صورتحال پر گہری تشویش ہے اور ہم پاکستانی عوام کی حمایت جاری رکھیں گے’۔

پاکستانی نژاد کینیڈین رکن پارلیمنٹ سلمیٰ زاہد نے ایک بیان میں کہا کہ پاکستان میں سیلاب کی صورت حال انتہائی تشویشناک ہے، میرا دل خاص طور پر بچوں کے لیے افسردہ ہے، کینیڈا کو وزیر اعظم شہباز شریف کی مدد کی اپیل کا جواب دینا چاہیے’۔

انہوں نے کہا کہ ‘میں اپنے وزرا سے رابطہ کر رہی ہوں کہ وہ اس ہنگامی صورتحال میں پاکستانی عوام کی مدد کے لیے کینیڈین امداد بھیجیں’۔

قطری امداد

قطر ریڈ کریسنٹ سوسائٹی (کیو آر سی ایس) نے اپنے ڈیزاسٹر انفارمیشن مینجمنٹ سینٹر کو فعال کرتے ہوئے متاثرین کو فوری مدد فراہم کرنے کے لیے ایک لاکھ ڈالر مختص کرنے کا اعلان کیا۔

یہ بھی پڑھیں: امریکی نژاد پاکستانیوں کا پارٹی سیاست سے بالاتر ہو کر سیلاب کی متاثرین کی مدد پر زور

قطر ہلال احمرسوسائٹی نے اپنے ڈیزاسٹر رسپانس فنڈ سے ایک لاکھ ڈالرز مختص کیے ہیں تاکہ سیلاب متاثرین کو فوری ریلیف فراہم کیا جا سکے، ان پر بیتنے والی تباہی کے ہولناک اثرات کو کم کر کے ان کی بنیادی ضروریات کو پورا کیا جا سکے۔

قطر ہلال احمر سوسائٹی کے ہنگامی انسانی امداد کے منصوبے میں سندھ میں سیلاب سے متاثرہ 200 خاندانوں کے لیے ہنگامی پناہ گاہوں کے لیے خیمے، حفظان صحت کی کٹس اور ایک ہزار کمبل فراہم کرنا شامل ہے۔

ترکیہ کی جانب سے امداد

سیلاب زدگان کے لیے امدادی سامان کے ساتھ پہلا ترک طیارہ اتوار کی شام 8 بجے کے قریب پاکستان پہنچ گیا جب کہ ترکیہ سے ایک اور طیارہ بھی تقریباً 2 گھنٹے بعد 14 ٹن امدادی سامان لے کر کراچی پہنچا۔

اسی طرح ترک ہلال احمر سوسائٹی پی آر سی ایس کے تعاون سے جعفرآباد کے 300 خاندانوں کو 16 ہزار روپے کی نقد امداد، 300 حفظان صحت کی کٹس، 600 جیری کین اور 1500 مچھر دانیاں فراہم کر رہی ہے۔

مزید پڑھیں: سیلاب متاثرین کی مدد کرنا ہم پر فرض ہے، 9999 پر میسیج کرکے 10 روپے عطیہ دیں، وزیر خزانہ

مزید برآں، 100 خیمے اور 1000 کمبل ہوائی کارگو کے ذریعے انسانی امداد کے ساتھ وزارت داخلہ، ڈیزاسٹر اینڈ ایمرجنسی مینجمنٹ پریذیڈنسی آف ترکی کی طرف سے بھیجے جائیں گے۔

فرانسیسی صدر

فرانس کی وزیر خارجہ پاکستان میں سیلاب سے ہونے والی تباہی پر افسوس کا اظہار کیا اور اپنے ہم منصب بلاول بھٹو زرداری سے ٹیلی فونک رابطہ کے دوران تعاون کی پیشکش بھی کی۔

دفتر خارجہ کی طرف سے جاری کردہ ایک بیان کے مطابق، وزیر خارجہ بھٹو زرداری نے فرانس کی جانب سے اظہار یکجہتی اور ضرورت کی اس گھڑی میں پاکستانی عوام کے ساتھ مدد کی پیشکش پر فرانسیسی ہم منصب کا شکریہ ادا کیا۔

دفتر خارجہ نے کہا کہ وزیر خارجہ بلاول بھٹو نے اپنے فرانسیسی ہم منصب کو ملک بھر میں تباہ کن سیلاب سے ہونے والی وسیع تباہی کے بارے میں آگاہ کیا۔

یہ بھی پڑھیں: عالمی تنظیموں، مالیاتی اداروں کا سیلاب متاثرین کیلئے 50 کروڑ ڈالر امداد کا اعلان

دوسری جانب، اپنے ٹوئٹر ہینڈل پر فرانسیسی صدر ایمانوئل میکرون نے پاکستان کے سیلاب متاثرین سے اظہار یکجہتی کرتے ہوئے کہا کہ ان کا ملک پاکستان کی مدد کے لیے تیار ہے۔

اپنے پیغام میں انہوں نے لکھا کہ ہمارے جذبات اور احساسات خوفناک سیلاب کا سامنا کرنے والے پاکستانیوں، لاپتا افراد کے خاندانوں اور متاثرین کے ساتھ ہیں، فرانس متاثین کو مدد فراہم کرنے کے لیے تیار ہے۔

یو اے ای سے امدادی سامان پہنچ گیا

متحدہ عرب امارات (یو اے ای) سے پہلی پرواز 3 ہزار ٹن سے زائد امدادی سامان لے کر پی اے ایف بیس نور خان پہنچی جب کہ آنے والے دنوں میں متحدہ عرب امارات سے امدادی سامان کے کم از کم 15 طیارے ملک میں اتریں گے۔

پاکستان میں متحدہ عرب امارات کے سفیر حماد عبید ابراہیم الزابی نے امدادی سامان وزیر منصوبہ بندی احسن اقبال کے حوالے کیا۔

تبصرے (0) بند ہیں