• KHI: Fajr 4:15am Sunrise 5:44am
  • LHR: Fajr 3:19am Sunrise 4:59am
  • ISB: Fajr 3:14am Sunrise 4:58am
  • KHI: Fajr 4:15am Sunrise 5:44am
  • LHR: Fajr 3:19am Sunrise 4:59am
  • ISB: Fajr 3:14am Sunrise 4:58am

پی ٹی آئی رہنما فرخ حبیب کے خلاف سیکیورٹی فورسز پر حملے کا مقدمہ درج

شائع January 27, 2023
پی ٹی آئی رہنما نے دعویٰ کیا کہ  اس کے باوجود عدالتی احکامات نظر انداز کردیے اور ہمارے اوپر فائر  بھی کیا—فوٹو:ڈان نیوز
پی ٹی آئی رہنما نے دعویٰ کیا کہ اس کے باوجود عدالتی احکامات نظر انداز کردیے اور ہمارے اوپر فائر بھی کیا—فوٹو:ڈان نیوز
ایف آئی آر میں کہا گیا ہے کہ فرخ حبیب نے کار سرکار میں مداخلت کی  اور پولیس اہلکاروں کی وردی پھاڑنے کا جرم کیا—فوٹو:ٹوئتر
ایف آئی آر میں کہا گیا ہے کہ فرخ حبیب نے کار سرکار میں مداخلت کی اور پولیس اہلکاروں کی وردی پھاڑنے کا جرم کیا—فوٹو:ٹوئتر
پی ٹی آئی رہنما نے دعویٰ کیا کہ  اس کے باوجود عدالتی احکامات نظر انداز کردیے اور ہمارے اوپر فائر  بھی کیا—فوٹو:ڈان نیوز
پی ٹی آئی رہنما نے دعویٰ کیا کہ اس کے باوجود عدالتی احکامات نظر انداز کردیے اور ہمارے اوپر فائر بھی کیا—فوٹو:ڈان نیوز

پنجاب پولیس نے پی ٹی آئی رہنما فرخ حبیب اور ان کی پارٹی کے کئی کارکنوں کے خلاف فواد چوہدری کی رہائی کے لیے قانون نافذ کرنے والے اہلکاروں پر حملہ کرنے اور ڈکیتی کے الزامات کے تحت مقدمہ درج کر لیا۔

ڈان اخبار کی رپورٹ کے مطابق پی ٹی آئی رہنما کے خلاف ایف آئی آر اسلام آباد پولیس کے اہلکار عدیل شوکت کی شکایت پر شیخوپورہ کے فیروز والا تھانے میں پاکستان پینل کوڈ کی دفعہ 148، 149، 186، 225، 341، 353 اور 395 کے تحت درج کی گئی۔

ایف آئی آر میں الزام لگایا گیا ہے کہ فرخ حبیب اور دیگر مسلح ملزمان نے کالا شاہ کاکو کے قریب پولیس اہلکاروں پر اس وقت حملہ کیا جب وہ پی ٹی آئی رہنما فواد چوہدری کو اسلام آباد لے جا رہے تھے۔

درج کی گئی ایف آئی آر میں کہا گیا ہے کہ فرخ حبیب نے کار سرکار میں مداخلت کی اور پولیس اہلکاروں کی وردی پھاڑنے کا جرم کیا۔

اس میں مزید کہا گیا ہے کہ پی ٹی آئی رہنما اور ان کے ساتھیوں نے پولیس کی گاڑی اور اسلحہ چھینے کی کوشش کی۔

واضح رہے کہ گزشتہ روز فواد چوہدری کو علی الصبح لاہور سے گرفتار کیے جانے کے بعد راہداری ریمانڈ کے لیے لاہور کی کینٹ کچہری میں پیش کیا گیا تھا جہاں پی ٹی آئی رہنما کا راہداری ریمانڈ منظور کرتے ہوئے انہیں اسلام آباد کی متعلقہ عدالت میں پیش کرنے کا حکم دیا گیا۔

اس کے بعد اسلام آباد پولیس انہیں لے کر روانہ ہوئی تھی جب کہ اسی دوران لاہور ہائی کورٹ نے فواد چوہدری کو عدالت میں پیش کرنے کا حکم دیا۔

فرخ حبیب نے لاہور ٹول پلازہ پر فواد چوہدری کو لے جانے والی سیکیورٹی اداروں کی گاڑی کو روکنے کی کوشش کی تھی جہاں ان کی اہلکاروں کے ساتھ تلخ کلامی ہوئی تھی۔

کارٹون

کارٹون : 22 جون 2024
کارٹون : 21 جون 2024