• KHI: Maghrib 7:24pm Isha 8:51pm
  • LHR: Maghrib 7:09pm Isha 8:45pm
  • ISB: Maghrib 7:19pm Isha 9:00pm
  • KHI: Maghrib 7:24pm Isha 8:51pm
  • LHR: Maghrib 7:09pm Isha 8:45pm
  • ISB: Maghrib 7:19pm Isha 9:00pm

موٹر سائیکل والوں کیلئے پیٹرول پر 100 روپے سبسڈی دی جائے گی، مصدق ملک

شائع March 20, 2023
ڈاکٹر مصدق ملک نے کہا عوام کو ریلیف دینا حکومت کی ترجیحات میں شامل ہے — فوٹو: ڈان نیوز
ڈاکٹر مصدق ملک نے کہا عوام کو ریلیف دینا حکومت کی ترجیحات میں شامل ہے — فوٹو: ڈان نیوز

وزیر مملکت برائے پیٹرولیم ڈاکٹر مصدق ملک نے کہا ہے کہ وزیر اعظم شہباز شریف کی ہدایت پر ’سستا پیٹرول اسکیم‘ کے تحت موٹر سائیکل والوں کے لیے پیٹرول پر 100 روپے کی سبسڈی دی جائے گی۔

ماڈل ٹاؤن لاہور میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے ڈاکٹر مصدق ملک نے کہا کہ عوام کو ریلیف دینا حکومت کی ترجیحات میں شامل ہے، وزیر اعظم شہباز شریف کی ہدایت پر سستا پیٹرول اسکیم کے تحت موٹر سائیکل والوں کے لیے پیٹرول پر 50 روپے کے بجائے 100 روپے کی سبسڈی دی جائے گی اور چھ ہفتوں کے دوران اس اسکیم کو نافذ العمل کر دیا جائے گا۔

انہوں نے کہا کہ فیصلہ کر لیا گیا ہے کہ بڑی گاڑی والوں کو پیٹرول کی زیادہ قیمت ادا کرنا ہوگی کیونکہ یہاں پر غریب کا پاکستان الگ ہے اور امیر کا پاکستان الگ، عمران خان خود کو قانون سے بالا تر سمجھتے ہیں، اس لیے وہ عدالتوں میں پیش نہیں ہو رہے۔

ڈاکٹر مصدق ملک نے کہا کہ ہم نے وزیر اعظم شہباز شریف کی ہدایت پر سستا پیٹرول فراہم کرنے کی اسکیم پر کام کر نا شرو ع کر دیا ہے، اس پر ابتدائی طور پر یہ فیصلہ کیا گیا کہ پیٹرول کے ٹیرف میں غریب کو پچاس روپے سبسڈی دی جائے گی مگر اب وزیر اعظم نے ہمیں دوبارہ ہدایت کی ہے کہ سبسڈی کو بڑھا کر سو روپے کر دیا جائے۔

انہوں نے کہا کہ اس اسکیم کے تحت پیٹرول کی قیمت میں کمی لانے کے لیے کام جاری ہے جو چھ ہفتوں میں مکمل کر لیا جائے گا۔

وزیر مملکت برائے پیٹرولیم نے کہا کہ ہم نے ایسا مکانزم بنا لیا ہے کہ مالدار طبقے پر ٹیکس لگائیں گے اور غریب کو بھر پور ریلیف دیا جائے گا۔

انہوں نے کہا کہ حکومت رمضان المبارک میں عوام کو بھرپور ریلیف فراہم کر ے گی جس کی بہترین مثال مفت آٹے کی فراہمی ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ غریب کو سستی گیس فراہم کرنا بھی ہماری ترجیحات میں شامل تھا جس کے تحت یکم جنوری سے ہم نے گیس کے ٹیرف پر عملدرآمد شروع کر دیا ہے اور گیس کا سرکلر ڈیٹ ختم کر دیا گیا ہے۔

مصدق ملک نے کہا کہ بجلی کے حوالے سے بھی ہم نے پہلے ہی پالیسی بنا رکھی ہے، 100 یا 200 یونٹ استعمال کرنے والوں کو سستی بجلی دی جائے گی جبکہ اس سے زیادہ استعمال کر نے والوں کو پورا بل ادا کرنا ہوگا۔

انہوں نے کہا کہ ہم نے بجلی کی قیمتوں کے حوالے سے یکساں قانون بنایا ہے، اب کسی سیٹھ کو سستی بجلی فراہم نہیں کی جائے گی۔

وزیر مملکت نے کہا کہ پاکستان اس وقت مشکل حالات سے گزر رہا ہے اور ہم پرامید ہیں کہ ملک جلد بہتری کی طرف گامزن ہوگا۔

ان کا کہنا تھا کہ عوام کو ریلیف فراہم کرنے کے لیے ہم ایران سمیت تمام ممالک سے پیٹرول اور دیگر اشیائے ضرور یہ خریدنے کے لیے تیار ہیں، تاہم اس حوالے سے اس بات کو ملحوظ خاطر رکھا جائے گا کہ ہم پر بین الاقوامی پابندیاں عائد نہ ہو جائیں۔

اس موقع پر میڈیا کے سوالات کے جواب دیتے ہوئے ڈاکٹر مصدق ملک نے کہا کہ پیٹرول سستا کرنے کے لیے مکانزم بنانے پر کام جاری ہے، ہمارے پاس عوام کا ڈیٹا موجود ہے اور ایک غریب آدمی اپنے موٹر سائیکل پر ماہانہ 21 لیٹر پیٹرول استعمال کرتا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ ہماری کوشش ہوگی کہ سبسڈی کے اہل شہری کو ایک وقت میں دو سے تین لیٹر پیٹرول فراہم کیا جائے اور 800 سی سی یا اس سے کم والی گاڑی کو پیٹرول پر 30 لیٹر ماہانہ تک سبسڈی دی جائے گی اور ایک وقت میں گاڑی میں 5 سے 7 لیٹر پیٹرول ڈالا جائے گا۔

انہوں نے کہا کہ اس اسکیم کے اہل افراد کو ان کے موبائل پر میسج موصول ہوگا اور وہ اس میسج کو پیٹرول پمپ پر دکھا کر پیٹرول وصول کر سکے گا۔

ان کا کہنا تھا کہ پیٹرول پمپس والوں کو ایک ڈیوائس فراہم کی جائے گی جس پر سبسڈی حاصل کرنے والے کا ریکارڈ موجود ہوگا۔

واضح رہے کہ گزشتہ روز ہی وزیر اعظم نے موٹر سائیکل، رکشا اور 800 سی سی تک کی گاڑیوں کے لیے پیٹرول پر فی لیٹر 50 روپے سبسڈی دینے کا اعلان کیا تھا۔

انہوں نے ہدایت کی تھی کہ پیٹرولیم سبسڈی کا عملی پروگرام جلد از جلد مکمل کیا جائے اور سبسڈی پر مؤثر عمل درآمد کے لیے تمام متعلقہ ادارے باہمی تعاون سے جامع حکمت عملی مرتب کریں۔

شہباز شریف نے کہا تھا کہ موٹر سائیکل، رکشا اور چھوٹی گاڑیاں کم آمدن والے غریب عوام کی سواری ہے اور اس طرح کی پیٹرولیم سبسڈی براہ راست غریب عوام کے ریلیف کا باعث بنے گی، حکومت شدید معاشی مشکلات کے باوجود غریب عوام کی ہر ممکن مدد کے لیے کوشاں ہے۔

دوران اجلاس وزیر مملکت برائے پیٹرولیم مصدق ملک نے اجلاس کو کم آمدن افراد تک پیٹرولیم سبسڈی کی فراہمی کی حکمت عملی پر بریفنگ دی تھی۔

واضح رہے کہ حکومت نے 15 مارچ کو ہی پیٹرول کی قیمت میں 5 روپے اضافے کا اعلان کیا تھا، اس سے قبل گو کہ 28 فروری کو وزیر خزانہ اسحٰق ڈار نے پیٹرول کی قیمت میں پانچ روپے فی لیٹر کمی کا اعلان کیا تھا لیکن اس سے پہلے 16 فروری کو پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں ہوش رُبا اضافہ کیا گیا تھا۔

روپے کی گرتی ہوئی قدر کے پیش نظر حکومت پاکستان نے پیٹرول کی قیمت میں 22.20 روپے اور ڈیزل 17.20 روپے فی لیٹر اضافہ کردیا تھا۔

’عمران خان کے غلط اقدمات کی وجہ سے دو پاکستان بن چکے ہیں‘

وزیر مملکت برائے پیٹرولیم نے کہا کہ عمران خان کی اصلیت عوام کے سامنے کھل کر آچکی ہے وہ کسی قانون کو نہیں مانتے اور خود کو قانون سے بالاتر سمجھتے ہیں، عمران خان ریاست کو کھلے عام چیلنج کر رہا ہے کہ مجھے پکڑ کر دکھاؤ۔

انہوں نے کہا کہ عمران خان کے غلط اقدمات کی وجہ سے دو پاکستان بن چکے ہیں، غریب کا پاکستان الگ ہے اور امیر کا پاکستان الگ اور میں نے یہی بات جب وزیر اعظم شہباز شریف سے کہی تو انہوں نے مجھے کہا کہ ہم غریب کے پاکستان کے ساتھ کھڑے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ اسی مقصد کے لیے ہم نے فیصلہ کیا ہے کہ گیس کی قیمتوں کے بعد اب پیٹرول پر بھی ٹیرف الگ کیا جائے گا اور غریب کو ہر ممکن ریلیف دیا جائے گا۔

اس موقع پر انہوں نے سابق چیف جسٹس میاں ثاقب نثار کی مبینہ آڈیو لیک ہونے کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ اس پر وزارت داخلہ مکمل تحقیقات کرے گی۔

انہوں نے کہا کہ توشہ خانہ کے حوالے سے حکومت نے واضح قانون بنا لیا ہے جو بھی تحفہ وصول کرے گا وہ پوری قیمت ادا کر ے گا اور ہمارے پاس جو توشہ خانے کا ریکار ڈ موجود تھا وہ عوام کے سامنے رکھ دیا گیا ہے۔

کارٹون

کارٹون : 14 جولائی 2024
کارٹون : 11 جولائی 2024