دبئی میں یوکرین سے تعلق رکھنے والی 29 سالہ خاتون کا اسلام قبول کرنے کے چند گھنٹے بعد انتقال ہوگیا، خاتون کی نماز جنازہ میں سیکڑوں افراد نے شرکت کی جس کی تصاویر سوشل میڈیا پر وائرل ہوگئیں۔

خلیج ٹائمز کی رپورٹ کے مطابق داریا کوٹسارینکو نامی یوکرائنی خاتون سیاحت کے لیے متحدہ عرب امارات پہنچی اور پھر یہاں نوکری کی تلاش شروع کر دی، اس دوران انہیں نہ صرف کیریئر کے مواقع ملے بلکہ مذہب اسلام سے بھی متاثر ہوئیں۔

خاتون کا تعلق مسیحی مذہب سے تھا اور انہوں نے 25 مارچ کو دبئی میں اسلام قبول کیا تھا۔

رپورٹ میں بتایا گیا کہ خاتون کے اسلام قبول کرنے کے چند گھنٹے بعد ہی انہیں دل کا دورہ پڑا اور وہ روزے کی حالت میں انتقال کرگئیں۔

سماجی پلیٹ فارم ایکس پر ’جنازہ یو اے ای‘ کی جانب سے کی گئی ایک پوسٹ میں کہا گیا کہ خاتون کا دبئی میں کوئی رشتہ دار نہیں تھا، خاتون کی نمازہ جنازہ کے لیے ہزاروں افراد القصیٰ قبرستان کی مسجد میں جمع ہوئے۔

یاد رہے کہ قبل ازیں سال 2022 میں لوئس جین مچل نامی 93 سالہ خاتون (جنہیں ام یحییٰ کے نام سے جانا جاتا ہے) اسلام قبول کرنے کے فوراً بعد انتقال کر گئی تھیں، اس وقت وہ اپنے بیٹے کے ساتھ متحدہ عرب امارات کے دورے پر تھیں۔

فوٹو: خلیج ٹائمز
فوٹو: خلیج ٹائمز

ضرور پڑھیں

تبصرے (0) بند ہیں