• KHI: Zuhr 12:33pm Asr 5:15pm
  • LHR: Zuhr 12:03pm Asr 4:59pm
  • ISB: Zuhr 12:09pm Asr 5:09pm
  • KHI: Zuhr 12:33pm Asr 5:15pm
  • LHR: Zuhr 12:03pm Asr 4:59pm
  • ISB: Zuhr 12:09pm Asr 5:09pm

ایران نے امریکا کے ساتھ بالواسطہ مذاکرات کی تصدیق کر دی

شائع May 19, 2024
فائل فوٹو: رائٹرز
فائل فوٹو: رائٹرز

امریکا اور ایران کے مابین سفارتی تعلقات نا ہونے کے باوجود ایران نے عمان میں امریکا کے ساتھ بالواسطہ بات چیت کی تصدیق کردی۔

خبر رساں ادارے ’اے ایف پی‘ کی رپورٹ کے مطابق واشنگٹن اور تہران طویل عرصے سے ایران کے متنازع جوہری پروگرام اور اپنے اپنے اتحادیوں اسرائیل اور حماس کے درمیان جاری غزہ تنازع کی وجہ سے شدید اختلافات کا شکار ہیں۔

جمعے کو امریکی نیوز ویب سائٹ ایگزائس نے رپورٹ کیا کہ امریکی اور ایرانی حکام نے علاقائی حملوں میں اضافے سے بچنے کے لیے عمان میں بالواسطہ گفتگو کی ہے۔

ایران کی سرکاری خبر رساں ایجنسی ارنا نے ہفتہ کو کہا کہ اقوام متحدہ میں اسلامی جمہوریہ ایران کے نمائندے نے عمان میں ایران اور امریکا کے درمیان بالواسطہ مذاکرات کی تصدیق کردی۔

ارنا نے مذاکرات کا وقت اور جگہ بتائے بغیر حکام کا حوالہ دیتے ہوئے بتایا کہ اس طرح کے مذاکرات پہلی دفعہ نہیں ہوئے اور نا ہی یہ آخری ہوں گے۔

واضح رہے کہ یہ مذاکرات 13-14 اپریل کو دمشق میں ایرانی قونصل خانے پر اسرائیلی حملے کے جواب میں ایران کے اسرائیل پر حملے کے بعد سامنے آئے۔

یاد رہے کہ یکم اپریل کو اسرائیل کی جانب سے شام میں ایرانی قونصل خانے پر میزائل حملے میں ایرانی پاسداران انقلاب کے لیڈر سمیت 7 افراد شہید ہوگئے تھے۔

ایک ہفتے سے بھی کم عرصے بعد، ایران کے وسطی صوبے اصفہان میں دھماکوں کی آواز سنی گئی جس کو امریکی میڈیا نے ایرانی حملے کے جواب میں اسرائیلی ردعمل کے طور پر رپورٹ کیا۔

اس کے بعد تہران نے اسرائیلی حملے کی خبر کو مسترد کر تے ہوئے کہا تھا کہ جب تک ایرانی مفادات کو دوبارہ نشانہ نہیں بنایا جاتا وہ اس کا جواب نہیں دے گا۔

یاد رہے کہ اسرائیل 1979 کے اسلامی انقلاب کے بعد سے ایران کا دشمن رہا ہے۔

غزہ پٹی میں اسرائیل اور حماس تنازع کے آغاز کے بعد سے علاقائی کشیدگی میں اضافہ ہوگیا ہے۔

سوئٹزرلینڈ ایران میں واشنگٹن کے مفادات کی نمائندگی کرتا ہے۔

دونوں دشمن ممالک حالیہ برسوں میں تہران کے جوہری پروگرام کو روکنے کے اقدامات، قیدیوں کے تبادلے اور ایران کے بیرون ملک منجمد فنڈز کو جاری کرنے پر بالواسطہ بات چیت میں مصروف رہے ہیں۔

کارٹون

کارٹون : 16 جون 2024
کارٹون : 15 جون 2024