'چیخ' میں ولن بننا کیریئر کا بہترین فیصلہ تھا، بلال عباس

اپ ڈیٹ 06 ستمبر 2019

ای میل

چیخ میں بلال عباس ولن کے روپ میں نظر آئے —فوٹو/ اسکرین شاٹ
چیخ میں بلال عباس ولن کے روپ میں نظر آئے —فوٹو/ اسکرین شاٹ

نامور پاکستانی اداکار بلال عباس اپنے متعدد پروجیکٹس کی کامیابی کے بعد ٹیلی ویژن انڈسٹری کے بہترین اداکاروں میں سے ایک بنتے جارہے ہیں۔

بلال عباس کا ڈراما 'چیخ' بھی حال ہی میں اپنے اختتام کو پہنچا، جو کامیاب بھی ثابت ہوا۔

اس ڈرامے میں انہوں نے وجیہ نامی ولن کا کردار نبھایا تھا، جس نے کئی قتل کیے لیکن اس پر اسے کسی قسم کی شرمندگی نہیں تھی۔

اس ڈرامے کی کہانی کے ساتھ ساتھ اداکاروں کی اداکاری کو خوب سراہا گیا لیکن سب سے زیادہ مقبول ڈرامے کے 2 کردار ہوئے، جو بلال عباس اور صبا قمر کے کردار تھے۔

کیریئر کی ابتدا میں ولن کا کردار نبھانا یقیناً کسی بھی ہیرو کے لیے بڑے چیلنج سے کم نہیں اور بلال عباس بھی اس ڈرامے کی آفر ملنے کے بعد خود کو ولن کے طور پر دیکھنے کے لیے خاصے مطمئن نہیں تھے۔

یہ انکشاف اداکار نے ڈان کو دیے گئے ایک ٹیلی فونک انٹرویو میں کیا، اس دوران اداکار نے 'چیخ' میں ولن بننے کے حوالے سے بات بھی کی۔

بلال عباس کا کہنا تھا کہ 'جب مجھے اس کردار کی آفر ہوئی تو میں بالکل قائل نہیں تھا، جب ڈرامے کے ہدایت کار بدر محمود میرے پاس آئے تو میں بےحد حیران ہوا کہ انہوں نے ایک ایسے کردار کے لیے میرا انتخاب کیا لیکن میرا خیال ہے کہ وہ سمجھ گئے تھے کہ میں یہ کردار ادا کرسکتا ہوں'۔

اداکار کا مزید کہنا تھا کہ 'میں نے بس قسمت آزمائی، ہاں مجھے اس بات کی فکر تھی کہ لوگ مجھے اس کردار میں دیکھ کر کیا سوچیں گے لیکن میں خوش ہوں کہ ناظرین اس کردار کو سمجھے اور اسے میری اصل شخصیت سے نہیں جوڑا'۔

بلال عباس کے مطابق ایک جنونی اور قاتل کا کردار نبھانا یقیناً مشکل تھا لیکن وہ خوش ہیں کہ شائقین کو ان کا کام پسند آیا۔

یاد رہے کہ 'چیخ' میں بلال عباس اور صبا قمر کے ہمراہ اعجاز اسلم اور عماد عرفانی نے بھی اہم کردار نبھائے۔

30 اقساط پر مشتمل یہ ڈراما اے آر وائے انٹرٹینمنٹ پر نشر ہوا جس کی پروڈکشن فہد مصطفیٰ نے کی۔