کورونا وائرس: میڈیا عوام میں خوف کی فضا ختم کرے، پیمرا

اپ ڈیٹ 26 مارچ 2020

ای میل

علاوہ ازیں پیمرا نے چینلز کو کورونا وائرس کے خلاف پوری قوم کو متحرک کرنے پر زوردیا —فائل فوٹو: ڈان
علاوہ ازیں پیمرا نے چینلز کو کورونا وائرس کے خلاف پوری قوم کو متحرک کرنے پر زوردیا —فائل فوٹو: ڈان

پاکستان الیکٹرانک میڈیا ریگولیٹری اتھارٹی (پیمرا) میڈیا کوہدایت کی ہے کہ وہ کوروناوائرس سے متعلق خبریں نشرکرتے ہوئے عوام میں خوف کی فضا ختم کرے۔

ریڈیو پاکستان کی رپورٹ کے مطابق پیمرا نے اپنے ہدایت نامے میں نیوز چینلز کو مخاطب کرکے کہا کہ ’اس آفت سے ثابت قدمی اورنظم وضبط کے ساتھ نمٹنے کے لیے عوام میں امید کو فروغ دیا جائے‘۔

مزیدپڑھیں: پیمرا نے نجی چینل کے پروگرام پر ایک ماہ کی پابندی عائد کردی

پیمرا نے کورونا وائرس سے متاثرہ زیر افراد علاج کی کوریج میں احتیاط برتنے کی ہدایت کی۔

اعلامیے میں کہا گیا کہ ’کورونا وائرس سے متاثرہ مریضوں اور زیرعلاج افراد کی خبریں دیتے ہوئے ضرورت سے زیادہ تشہیرکرنے اورسنسنی پیداکرنے سے گریزکیا جائے‘۔

علاوہ ازیں پیمرا نے ٹی وی چینلز پر زور دیا کہ وہ کورونا وائرس کے خلاف پوری قوم کو متحرک کریں۔

اعلامیے میں کہا گیا کہ چینلز کو اپنی توانائیاں اور وسائل احتیاطی تدابیر اور ضروری اقدامات کے لیے پوری قوم کومتحرک کرنے پرخرچ کئے جائیں تاکہ اس وبا پرقابو پایا جاسکے۔

پیمرا نے اس امر پر زور دیا گیا کہ ناظرین میں امید پیداکرنے کے لیے وفاقی اور صوبائی حکومتوں، اداروں سمیت عالمی محققین کی جانب سے کی گئی کوششوں کو بھی اجاگر کیا جائے۔

یہ بھی پڑھیں: وفاقی حکومت کا پیمرا اور پریس کونسل کو ختم کرنے کا فیصلہ

واضح رہے کہ ملک میں کوروناوائرس کے بڑھتے ہوئے واقعات اور لاک ڈاؤن کے نتیجے میں پیدا ہونے کی صورتحال پر میڈیا خصوصی رپورٹس اور خبریں پیش کررہا ہے۔

اگر پاکستان کی بات کی جائے تو دنیا بھر میں ہزاروں اموات کا باعث بننے والا مہلک کورونا وائرس پاکستان میں بھی تیزی سے پھیل رہا ہے اور ایک ماہ کے دوران یہاں کیسز کی تعداد 1100 کے قریب پہنچ گئی ہے۔

26 فروری 2020 کو پاکستان میں پہلا کیس سامنے آیا تھا اور آج 26 مارچ کو ایک ماہ مکمل ہونے تک ملک میں کورونا وائرس کے مزید نئے کیسز سامنے آنے سے تعداد1118ہوگئی ہے۔

اس عالمی وبا نے دنیا بھر میں تباہی مچا دی ہے اور 20 ہزار سے زائد افراد ہلاک اور ساڑھے 4 لاکھ سے زائد متاثر ہوچکے ہیں۔

پاکستان ایک ماہ کے عرصے میں سندھ میں سب سے زیادہ 413 کیسز رپورٹ ہوئے، جس کے بعد پنجاب کے کیسز کی تعداد ہے جو 323 ہے۔

مزیدپڑھیں: کورونا وائرس: ایک ماہ کے دوران متاثرین کی تعداد 1098 تک جاپہنچی

اسی طرح بلوچستان میں 131 کیسز اور خیبرپختونخوا میں 121 کیسز ہیں جبکہ اسلام آباد میں یہ تعداد 25 تک پہنچ چکی ہے۔

گلگت بلتستان میں 84 اور آزاد جموں کشمیر میں ایک کیس رپورٹ ہوا ہے۔