کراچی میں 7 یا 8 جولائی کو مون سون کی دوسری بارش ہوگی، محکمہ موسمیات

اپ ڈیٹ 02 جولائ 2022
چیف میٹرولوجسٹ نے کہا کہ بارش سے شہر کے انفرااسٹرکچر کو نقصان ہوسکتا ہے —فوئل/فوٹو: اے پی پی
چیف میٹرولوجسٹ نے کہا کہ بارش سے شہر کے انفرااسٹرکچر کو نقصان ہوسکتا ہے —فوئل/فوٹو: اے پی پی

محکمہ موسمیات نے 2 جولائی کو مون سون کی پہلی بارش کے بعد 7 یا 8 جولائی کو سیزن کی دوسری بارش کی پیش گوئی کردی۔

چیف میٹرولوجسٹ سردار سرفراز احمد نے ڈان نیوز ڈاٹ ٹی وی سے بات کرتے ہوئے کہا کہ کراچی اور سندھ کے دیگر علاقوں میں 2 جولائی سے مون سون کی پہلی بارش کا امکان ہے۔

مزید پڑھیں: کراچی سمیت سندھ کے مختلف اضلاع میں 2 جولائی سے موسلادھار بارش کی پیشگوئی

انہوں نے کہا کہ سندھ کے مختلف علاقوں میں یکم جولائی سے 15 جولائی تک مون سون کی بارش کا امکان ہے اور خاص کر کراچی میں 7 یا 8 جولائی کو مون سون کی دوسری بارش کا امکان ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ دوسری بارش 3 سے 4 روز تک جاری رہنے کا امکان ہے لیکن بارش کی شدت کے حوالے سے پیش گوئی کرنا قبل از وقت ہوگا۔

مون سون کی پہلی بارش کے حوالے سے انہوں نے کہا کہ 2 جولائی کو کراچی سمیت صوبے بھر میں ممکنہ طور پر ہوائیں داخل ہوں گی۔

انہوں نے کہا کہ کراچی میں 3 جولائی سے 5 جولائی کے درمیان گرج چمک کے ساتھ بارش ہوگی اور اس کے نتیجے میں شہر کے مختلف علاقوں میں سیلاب آسکتا ہے۔

چیف میٹرولوجسٹ کا کہنا تھا کہ شہر میں بارش سے پہلے گرد آلود ہوائیں اور آندھی کا بھی امکان ہے اور خبردار کیا کہ طوفان سے شہر کے کمزور انفرااسٹرکچر کو نقصان پہنچ سکتا ہے۔

انہوں نے ماہی گیروں سے کہا کہ بارش کے دوران احتیاط برتیں کیونکہ اس دوران سمندر کی صورت حال خراب ہوگی۔

یہ بھی پڑھیں: کراچی میں 2 جولائی کو بارش کا امکان ہے، محکمہ موسمیات

خیال رہے کہ محکمہ موسمیات نے گزشتہ روز پیش گوئی کی تھی کہ کراچی اور حیدر آباد سمیت سندھ کے مختلف اضلاع میں 2 سے 5 جولائی کے دوران گرج چمک کے ساتھ موسلادھار بارش ہوگی، جس کی وجہ سے سیلابی کیفیت ہوسکتی ہے۔

محکمہ موسمیات نے سندھ میں ممکنہ بارشوں کے حوالے سے جاری ایڈوائزری میں کہا تھا کہ بحیرہ عرب اور خلیج بنگال سے نم ہوائیں مشرقی سندھ میں 2 جولائی سے داخل ہونے کا امکان ہے۔

ایڈوائزری میں کہا گیا تھا کہ اس موسمی نظام کے زیر اثر تھرپارکر، عمر کوٹ، سانگھڑ، بدین، میرپور خاص، ٹھٹہ، ٹنڈو محمد خان، ٹنڈو الہٰیار، دادو اور جامشورو کے اضلاع میں 2 سے 5 جولائی کے دوران وسیع پیمانے پر آندھی، گرج چمک کے ساتھ موسلادھار بارش کا امکان ہے۔

محکمہ موسمیات نے کہا تھا کہ کراچی کے علاوہ حیدر آباد میں بھی گرج چمک کے ساتھ موسلادھار بارش کا امکان ہے۔

ایڈوائزری میں بتایا گیا تھا کہ اس دوران نواب شاہ، نوشہرو فیروز، سکھر، لاڑکانہ، خیرپور، شکار پور، قمبر شہداد کوٹ، گھوٹکی اور کشمور کے اضلاع میں بھی چند ایک مقامات پر تیز ہواؤں اور گرج چمک کے ساتھ موسلادھار بارش کا امکان ہے۔

مزید پڑھیں: کراچی: موسم گرما کی پہلی بارش، دیوار گرنے سے دو بچے جاں بحق

محکمہ موسمیات نے بتایا تھا کہ موسلادھار بارش کراچی، حیدر آباد، ٹھٹہ، بدین، میرپورخاص، عمرکوٹ اور دادو کے اضلاع میں سیلابی کیفیت کا باعث بن سکتی ہے۔

اس سے قبل 27 جون کو بھی محکمہ موسمیات نے کہا تھا کہ 2 جولائی کو شام یا رات کو کراچی میں بارشوں کا امکان ہے، جس کی وجہ 30 جون سے پاکستان میں خلیج بنگال سے داخل ہونے والی مون سون ہوائیں ہیں۔

محکمہ موسمیات نے بتایا تھا کہ مون سون کا یہ سسٹم ملک کے بیشتر علاقوں میں اثر انداز ہوسکتا ہے جس کے سبب سندھ میں تھرپارکر، عمرکوٹ اور دیگر علاقوں میں یکم جولائی کی رات سے بارش ہوسکتی ہے۔

مزید بتایا گیا تھا کہ 3 سے 4 دن اور چند علاقوں میں 5 دن تک وقفے وقفے سے بارشوں کا امکان ہے، حالیہ موسمیاتی جائزے کے مطابق یہ سسٹم تیز بارشوں کا باعث بن سکتا ہے۔

واضح رہے کہ گزشتہ ہفتے 23 جون کو کراچی میں آندھی اور گرج چمک کے ساتھ موسم گرما کی پہلی بارش سے شہر میں گرمی کا زور ٹوٹ گیا تھا جبکہ بارش کے سبب دیوار گرنے سے دو بچے جاں بحق اور 3 زخمی ہو گئے تھے۔

کراچی میں دن بھر شدید گرمی کے بعد شہر کے شمالی حصے میں آندھی کے ساتھ تیز بارش کا سلسلہ شروع ہوا تھا جو پورے شہر تک پھیل گیا جبکہ مختلف علاقوں میں بجلی کے متعدد فیڈرز ٹرپ کر گئے تھے۔

شہر کے جن علاقوں میں آندھی کے بعد بارش ہوئی ان میں بحریہ ٹاؤن، سپر ہائی وے، گڈاپ، ملیر، ایئرپورٹ، شاہراہ فیصل، نرسری، کورنگی اور گلشنِ اقبال شامل ہیں۔

ضرور پڑھیں

کراچی کی بہتری کے لیے کیا چیز ضروری ہے؟

کراچی کی بہتری کے لیے کیا چیز ضروری ہے؟

کراچی میں اگر امن وامان، دیانت داری، فرض شناسی اور ذمہ داری کا احساس کرنے والی قیادت منتخب ہو جائے تو عوام کو اچھی سڑکیں، اسپتال، اسکول اور پانی تو نصیب ہوگا۔

تبصرے (0) بند ہیں