کم عمری میں ایک کے بعد ایک ریکارڈ بنانے والی گلوکارہ بلی آئلش

اپ ڈیٹ 16 جنوری 2020

ای میل

بلی آئلش کا پہلا ایلبم 2019 میں ریلیز ہوا تھا—فوٹو: رائٹرز
بلی آئلش کا پہلا ایلبم 2019 میں ریلیز ہوا تھا—فوٹو: رائٹرز

دسمبر 2019 میں 18 سال کی عمر کو پہنچنے والی امریکی پاپ گلوکارہ بلی آئلش نے ایک اور ریکارڈ اپنے نام کرتے ہوئے تاریخ رقم کردی۔

بلی آئلش کو یہ اعزاز حاصل ہے کہ وہ امریکی پاپ میوزک انڈسٹری کی وہ پہلی گلوکارہ ہیں جو سال 2000 کے بعد پیدا ہوئیں اور ان کا پہلا میوزک ایلبم ہی شاندار کامیابی سے ہمکنار ہوا۔

بلی آئلش کا پہلا گانا 2017 میں ریلیز ہوا تھا جو انتہائی کم وقت میں امریکا اور برطانیہ کے 15 مقبول گانوں میں شمار ہوا۔

امریکی پاپ گلوکارہ نے اپنا پہلا میوزک ایلبم ’وین وی آل فال اسلیپ، ویئر ڈو وئی گو‘ 2019 کے آغاز میں ریلیز ہوا تھا جو دیکھتے ہی دیکھتے امریکا اور یورپ میں بے حد مقبول ہوا۔

یہ بھی پڑھیں: بلی آئلش کے گانے ’بیڈ گائے‘ نے ریکارڈ بنالیے

پہلے میوزک ایلبم کے ریلیز ہوتے ہی بلی آئلش کو میوزک کے سب سے معتبر ایوارڈز ’گریمی‘ کے لیے نامزد کیا گیا اور وہ پہلی اداکارہ بنیں جو 17 سال کی عمر میں مذکورہ ایوارڈ کے لیے نامزد ہوئیں۔

انہیں گریمی ایوارڈ کی بہترین نئی گلوکارہ اور بہترین ایلبم کے لیے نامزد کیا گیا۔

گلوکارہ کا پہلا گانا ہی مقبول ہوا تھا—اسکرین شاٹ
گلوکارہ کا پہلا گانا ہی مقبول ہوا تھا—اسکرین شاٹ

اسی طرح بلی آئلش کو کم عمر مقبول گلوکارہ سمیت انتہائی کم وقت میں میڈیا کی توجہ حاصل کرنے والی گلوکارہ بھی قرار دیا گیا تھا اور وہ اپنے 22 سالہ بھائی گلوکار فنیس او کنیل کے ساتھ کام کرتی دکھائی دیں۔

اور اب وہ شہرت یافتہ ہولی وڈ جاسوس برطانوی فلم ’جیمز بانڈ‘ کی اگلی فلم کے لیے گانا تیار کریں گی اور وہ شہرہ آفاق فلم کے لیے گانا تیار کرنے والی پہلی کم عمر گلوکارہ ہوں گی۔

خبر رساں ادارے ‘رائٹرز‘ کے مطابق بلی آئلش جیمز بانڈ کی 25 ویں فلم ’نو ٹائم ٹو ڈائے‘ کے لیے گانا تیار کریں گی اور وہ اس فلم کے لیے گانا تیار کرنے والی پہلی 18 سالہ گلوکارہ ہوں گی۔

اچھوتے انداز کی و جہ سے بھی بلی آئلش کو شہریت حاصل ہوئی—فوٹو: انسٹاگرام
اچھوتے انداز کی و جہ سے بھی بلی آئلش کو شہریت حاصل ہوئی—فوٹو: انسٹاگرام

اگرچہ بلی آئلش سے قبل آسٹریلوی نژاد برطانوی گلوکارہ اڈیلے بھی جیمز بانڈ کی فلم کے لیے کم عمری میں گانا تیار کر چکی ہیں تاہم وہ بلی آئلش سے زیادہ عمر کی تھیں۔

بلی آئلش نے جیمز بانڈ کی 25 ویں فلم کے لیے گانا تیار کرنے کو اپنا اعزاز قرار دیتے ہوئے مداحوں کا شکریہ بھی ادا کیا ہے۔

بلی آئلش سے قبل اڈیلے نے 2012 میں ریلیز ہونے والی جیمز بانڈ کی فلم ’اسکائے فال‘ کے لیے گانا گایا تھا جس نے ’آسکر‘ سمیت دیگر ایوارڈز جیتے تھے اور اب خیال کیا جا رہا ہے کہ بلی آئلش کا گانا بھی کئی ایوارڈز جیتنے میں کامیاب ہو جائے گا۔

A photo posted by Instagram (@instagram) on

خیال رہے کہ جیمز بانڈ کی 25 ویں فلم کو رواں برس 8 اپریل 2020 کو ریلیز کیا جائے گا۔

مزید پڑھیں: بندوقوں، لڑکیوں اور ایکشن سے بھرپور جیمز بانڈ کی فلم ’نو ٹائم ٹو ڈائے‘

جیمز بانڈ سیریز کی 25 ویں فلم کی کہانی کی دلچسپت بات یہ ہے کہ اس بار جاسوس جیمز بانڈ کو امریکی خفیہ ادارے سی آئی اے سے تعلق رکھنے والے ایک دوست سے مدد مانگتے ہوئے دکھایا جائے گا جب کہ اس بار جیمز بانڈ کے کردار کو فلم میں ریٹائر ہوکر عام زندگی کی طرف لوٹتے ہوئے بھی دکھایا جائے گا۔

جیمز بانڈ کی 25 ویں فلم رواں برس اپریل میں ریلیز ہوگی—اسکرین شاٹ
جیمز بانڈ کی 25 ویں فلم رواں برس اپریل میں ریلیز ہوگی—اسکرین شاٹ

جیمز بانڈ کی 25 ویں فلم ‘نو ٹائم ٹو ڈائے‘ میں جاسوس کو اغوا ہونے والے ایک سائنسدان کو تلاش کرتے ہوئے دکھایا جائے گا اور اس موقع پر انہیں کئی خطرناک لوگوں اور نئی ٹیکنالوجی کے ہتھیاروں کا سامنا کرنا پڑے گا۔

فلم کی کہانی کے مطابق آخر میں مشن کی کامیابی کے بعد جیمز بانڈ ریٹائرڈ ہوجائیں گے، جس کے بعد ان کی ذمہ داریاں ممکنہ طور پر ایک خاتون کو دی جائیں گی جو سیریز کی اگلی فلم میں جاسوس کے روپ میں دکھائی دیں گی۔

جیمز بانڈ کی 25 ویں فلم میں ڈینیئل کریک آخری بار جاسوس بنیں گے—اسکرین شاٹ
جیمز بانڈ کی 25 ویں فلم میں ڈینیئل کریک آخری بار جاسوس بنیں گے—اسکرین شاٹ

رپورٹس ہیں کہ جیمز بانڈ کی اگلی فلم میں جیمز بانڈ کا کردار ایک خاتون نبھائیں گی اور اس 25 ویں فلم میں اس خاتون یعنی لشانا لائنچ کو بھی دکھایا گیا ہے جو جیمز بانڈ کا ساتھ دیتی دکھائی دیتی ہیں۔

جیمز بانڈ کی اگلی یعنی '26 ویں فلم' وہ پہلی فلم ہوگی جس میں برطانوی جاسوس جیمز بانڈ کا کردار کوئی خاتون یعنی لشانا لائنچ ادا کرتی دکھائی دیں گی۔