اقوامِ متحدہ کے سیکریٹری جنرل کے دورہِ پاکستان کا امکان

اپ ڈیٹ 10 فروری 2020

ای میل

اقوامِ متحدہ کا کمیشن برائے مہاجرین اس کانفرنس کا شریک میزبان ہے —فائل فوٹو: اے ایف پی
اقوامِ متحدہ کا کمیشن برائے مہاجرین اس کانفرنس کا شریک میزبان ہے —فائل فوٹو: اے ایف پی

واشنگٹن: رواں ماہ پناہ گزینوں سے متعلق ایک کانفرنس میں شرکت کے لیے اقوامِ متحدہ کے سیکریٹری جنرل انتونیو گوتریس کا پاکستان کے دورے کا امکان ہے۔

اقوام متحدہ اور سفارتی ذرائع نے ڈان کو بتایا کہ انتونیو گوتریس کا رواں ماہ کے اواخر میں دورہ پاکستان متوقع ہے۔

اسلام آباد سے جاری ایک سرکاری بیان میں کہا گیا کہ پاکستان، ملک میں افغان مہاجرین کی موجودگی کے 40 برس مکمل ہونے پر رواں ماہ ایک بین الاقوامی کانفرنس منعقد کرے گا۔

بیان کے مطابق ’افغان مہاجرین کی پاکستان میں موجودگی کے 40 سال: یکجہتی کے لیے ایک نئی شراکت داری‘ کے عنوان سے 2 روزہ کانفرنس اسلام آباد میں 17 اور 18 فروری کو منعقد کی جائے گی۔

یہ بھی پڑھیں: پاکستان معاشی بحران کی زد میں ہے، اقوامِ متحدہ

وزارت خارجہ کے جاری بیان میں کہا گیا کہ اس کانفرنس کا افتتاح وزیر اعظم عمران خان کریں گے، جس میں 20 ممالک سے شرکا آئیں گے۔

اس حوالے سے نیویارک میں موجود ذرائع کا کہنا تھا کہ چونکہ اقوامِ متحدہ کا کمیشن برائے مہاجرین (یو این ایچ سی آر) اس کانفرنس کا شریک میزبان ہے اس لیے اقوامِ متحدہ کے سیکریٹری جنرل اور دیگر اہم اعہدیدار بھی شرکت کریں گے۔

اقوامِ متحدہ کے علاوہ کثیر الجہتی ترقیاتی بینکس، مہاجرین کے بین الاقوامی ادارے اور بڑی غیر سرکاری تنطیمیں بھی اپنے نمائندوں کو اس میں شرکت کے لیے بھیجیں گی۔

مزید پڑھیں: پاک بھارت جنگ روکنے کیلئے اقوامِ متحدہ سے فیصلہ کن اقدامات کا مطالبہ

اس ضمن میں اسلام آباد میں ترجمان دفتر خارجہ نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ’اس کانفرنس کا انعقاد (ایک ایسے) انتہائی اہم موقع پر کیا جائے گا کہ جب افغانستان میں امن کو مستحکم کرنے کی کوششوں میں پیش رفت ہورہی ہے‘۔

دوسری جانب واشنگٹن میں موجود سفارتی مبصرین کا کہنا تھا کہ اقوامِ متحدہ کے سیکریٹری جنرل ایسے وقت میں اسلام آباد پہنچیں گے کہ جب مقبوضہ کشمیر کو بڑے انسانی اور سیکیورٹی بحران کا سامنا ہے۔


یہ خبر 10 فروری 2020 کو ڈان اخبار میں شائع ہوئی۔