آگ کے ساتھ رقص کرنا آسان نہیں، نورا فتیحی

اپ ڈیٹ 17 جولائ 2019

ای میل

گانے میں بہترین پرفارمنس کرنے کی کوشش کی ہے، ڈانسر—اسکرین شاٹ
گانے میں بہترین پرفارمنس کرنے کی کوشش کی ہے، ڈانسر—اسکرین شاٹ

مراکشی نژاد بولی وڈ ڈانسر نورا فتیحی نے گزشتہ برس اگست میں ریلیز ہونے والی گانے ’دلبر دلبر‘ کے ریمیک میں شاندار ڈانس کرکے سب کے دل جیت لیے تھے۔

’دلبر‘ میں شاندار پرفارمنس کے بعد نورا فتیحی کے لیے بولی وڈ کے دروازے کھل گئے تھے۔

اگرچہ نورا فتیحی ’دلبر‘ سے قبل بھی بولی وڈ میں کام کر رہی تھیں، تاہم انہیں شہرت ماضی کے اس مقبول گانے کے ریمیک سے ملی۔

’دلبر‘ کے بعد وہ ’کمریا‘ میں بھی پرفارنس کرتی دکھائی دیں اور اب انہوں نے ایک اور ماضی کے مقبول گانے کے نئے ریمیک میں ڈانس کا جادو جگایا، تاہم ان کا یہ گانا شہرت حاصل نہ کرسکا۔

نورا فتیحی جلد آنے والی فلم ’بٹلا ہاؤس‘ کے گانے ’ساقی‘ میں ڈانس کرتی دکھائی دیں، تاہم یہ گانا شائقین کی توجہ حاصل کرنے میں ناکام رہا۔

پرانے ساقی میں پرفارمنس کرنے والی اداکارہ کوئنا مترا نے بھی نورا فتیحی پر تنقید کی تھی—اسکرین شاٹ
پرانے ساقی میں پرفارمنس کرنے والی اداکارہ کوئنا مترا نے بھی نورا فتیحی پر تنقید کی تھی—اسکرین شاٹ

یہ گانا 2004 میں ریلیز ہونے والی فلم ’مسافر‘ کے گانے’ ساقی‘ کا آفیشیل ریمیک ہے، تاہم نیا گانا پرانے گانے کے سحر کو نہ توڑ سکا۔

یہ بھی پڑھیں: 'دلبر' فیم نورا فتیحی کا رقص بھی 'ساقی' کو بچا نہ سکا

جہاں مداحوں نے ’ساقی‘ کی ناکامی پر نورا فتیحی کو تنقید کا نشانہ بنایا، وہیں 2004 میں ساقی گانے پر ڈانس پرفارمنس کرنے والی اداکارا کوئنا مترا نے بھی نئے گانے کو تنقید کا نشانہ بنایا تھا۔

گانے کی ناکامی کے بعد اب نورا فتیحی نے اس حوالے سے پہلی بار بات کرتے ہوئے کہا ہے کہ اس گانے میں پرفارمنس کے لیے انہوں نے محض 3 دن میں تیاری کی۔

گانے میں ڈانس کی تیاری آخری تین دن میں کی، ڈانسر—اسکرین شاٹ
گانے میں ڈانس کی تیاری آخری تین دن میں کی، ڈانسر—اسکرین شاٹ

فلم فیئر کے مطابق نورا فتیحی نے ’ساقی‘ کی ناکامی کے بعد بات کرتے ہوئے کہا کہ انہیں ’ساقی‘ میں پرفارمنس کرنے کی تیاری کےلیے بہت زیادہ وقت نہ ملا اور انہوں نے محض آخری تین دن میں تیاری کی۔

ساتھ ہی مراکشی نژاد بولی وڈ اداکارہ کا کہنا تھا کہ اس گانے میں انہوں نے آگ کے ساتھ ڈانس پرفارمنس کی اور آگ کے ساتھ ڈانس کرنا آسان نہیں ہوتا۔

انہوں نے گانے کی میوزک اور اسے دوبارہ بنانے والی ٹیم اور گلوکاروں کی تعریف کرتے ہوئے کہا کہ انہوں نے ’ساقی‘ میں بہتر سے بہتر پرفارمنس کرنے کی کوشش کی۔

اداکارہ نے بتایا کہ ’ساقی‘ میں بہت سارے لوگوں کے ساتھ انہیں آگ کے ساتھ رقص کرنا پڑا اور سب سے اہم یہ کہ انہوں نے اس گانے کی تیاری محض تین دن میں کی۔

مزید پڑھیں: ‘دلبر’ رقص نے مراکشی ڈانسر کیلئے بھارت میں دروازے کھول دیے

اگرچہ اداکارہ نے کم وقت اور آگ کے ساتھ پرفارمنس کو گانے کی ناکامی قرار نہیں دیا، تاہم انہوں نے ’ساقی‘ میں ڈانس پرفارمنس کو مشکل قرار دیا۔

ساتھ ہی نورا فتیحی نے کہا کہ اہم بات یہ ہے کہ ’بٹلا ہاؤس‘ میں انہوں نے نہ صرف گانے میں پرفارمنس کی ہے بلکہ وہ اس میں اداکاری بھی کرتی دکھائی دیں گی اور وہ اس فلم کے حوالے سے انتہائی پر امید ہیں۔

واضح رہے کہ نورا فتیحی مراکش میں پیدا ہوئیں، تاہم ان کی زیادہ کا زیادہ وقت کینیڈا میں گزرا اور ان کے پاس دونوں ممالک کی شہریت ہے۔

نورا فتیحی نے 2014 میں بھارت میں ماڈلنگ، اداکاری و ڈانس کیریئر کا آغاز کیا اور اب تک وہ ہندی سمیت ملایلم، تیلگو اور تامل فلموں میں مختصر کرداروں سمیت ان میں آئٹم گانے کر چکی ہیں۔

انہیں سب سے زیادہ شہرت ’دلبر دلبر‘ کے ریمیک سے ملی، بعد ازاں ان کا گانا ’کمریا‘ بھی ریلیز ہوا جو اب ریلیز ہونے والے ’ساقی‘ کی طرح لوگوں کی توجہ حاصل کرنے میں ناکام رہا۔

نورا فتیحی نہ صرف بھارت بلکہ مشرق وسطیٰ کی بھی معروف ڈانسر ہیں اور انہوں نے ’دلبر‘ کے عربی ورژن سمیت کئی عربی گانوں میں شاندار پرفارمنس کرکے لوگوں کے دل جیتے۔