• KHI: Maghrib 7:24pm Isha 8:51pm
  • LHR: Maghrib 7:09pm Isha 8:45pm
  • ISB: Maghrib 7:19pm Isha 8:59pm
  • KHI: Maghrib 7:24pm Isha 8:51pm
  • LHR: Maghrib 7:09pm Isha 8:45pm
  • ISB: Maghrib 7:19pm Isha 8:59pm

خاتون فلم ساز نے بولڈ منظر کے لیے میرے کپڑے تک پھاڑ دیے، عرفی جاوید

شائع September 6, 2023
— فوٹو: انسٹاگرام
— فوٹو: انسٹاگرام

متنازع لباس پہننے اور منفرد فیشن انداز اپنانے کی وجہ سے تنقید کا سامنا کرنے والی بھارتی اداکارہ و ماڈل عرفی جاوید نے انکشاف کیا ہے کہ ایک خاتون فلم ساز نے بولڈ منظر شوٹ کرنے کے لیے شوٹنگ سیٹ پر ان کے کپڑے تک پھاڑ دیے۔

عرفی جاوید نے ’بی بی سی ہندی‘ کو دیے گئے انٹرویو میں پہلی بار اپنی زندگی پر کھل کر بات کی اور بتایا کہ وہ کم عمری میں لکھنؤ میں اپنے والدین کے گھر سے دو بہنوں کے ہمراہ بھاگ آئی تھیں۔

انہوں نے بتایا کہ ان کے ہمراہ ان کی بڑی اور چھوٹی بہن بھی گھر سے بھاگیں اور تینوں بہنیں پہلے دارالحکومت نئی دہلی آئیں، جہاں سے بعد میں وہ تنہا ریاست مہاراشٹر کے دارالحکومت ممبئی آئیں اور اس وقت ان کی عمر 19 برس تھی۔

عرفی جاوید کے مطابق ان کے والد ان سمیت ان کی بہنوں پر تشدد کرتے تھے، یہاں تک کہ وہ انہیں انتہائی غلیظ گالیاں تک دیتے تھے، جس وجہ سے وہ سب گھر سے فرار ہوئیں۔

ان کا کہنا تھا کہ ممبئی آتے ہی انہوں نے ٹی وی چینلز پر آڈیشن دینا شروع کردیے اور کچھ ہی عرصے بعد انہیں چھوٹے موٹے کام ملنے لگے اور ان کا سلسلہ چل پڑا۔

عرفی جاوید کے مطابق ممبئی میں انہوں نے اپنی مرضی کی زندگی گزاری، وہ تنہا تھیں، وہ اپنی مرضی سے شراب نوشی کرنے سمیت دیگر کام کرتی رہیں لیکن پھر آہستہ آہستہ وہ مصروف ہوگئیں۔

انہوں نے اعتراف کیا کہ انہوں نے شوبز میں جگہ بنانے کے لیے متعدد میک اپ سرجریاں کروائیں، انہوں نے اپنے دانت بنوانے سمیت اپنے ہونٹوں کو بھی موٹا کروایا اور چہرے کی بھی خوبصورتی بڑھوائی۔

ماڈل و اداکارہ کا کہنا تھا کہ ان کے دانت باہر نکلے ہوئے تھے اور ان کے ہونٹ انتہائی پتلے تھے، جس وجہ سے انہیں مشورے بھی دیے گئے اور پھر انہوں نے بھی خود محسوس کیا کہ انہیں میک اپ سرجریاں کروانی چاہئیں۔

انہوں نے کہا کہ انہیں ان کے لباس اور انداز پر بدترین تنقید کی جاتی ہے لیکن اب وہ اس بات کی عادی ہوچکی ہیں۔

عرفی جاوید کے مطابق انہیں منفرد ڈیزائن کا لباس تیار کرنے میں بعض اوقات ایک ماہ سے زیادہ کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

شوبز میں پیش آنے والے بدترین واقعات کا ذکر کرتے ہوئے عرفی جاوید نے کہا کہ ان کے ساتھ متعدد بار نازیبا سلوک اختیار کیا جا چکا ہے۔

عرفی جاوید نے ایک واقعہ بیان کرتے ہوئے دعویٰ کیا کہ ویب سیریز کی شوٹنگ کے دوران خاتون فلم ساز نے برہنہ منظر شوٹ کروانے کے لیے زبردستی ان کے کپڑے پھاڑ کر انہیں شوٹنگ میں حصہ لینے پر مجبور کیا۔

انہوں نے خاتون فلم ساز کا نام لیے بغیر کہا کہ پہلے انہیں صرف یہی بتایا گیا تھا کہ ویب سیریز میں رومانوی منظر ہیں لیکن جب وہ شوٹنگ کے لیے پہنچیں تو ان سے انتہائی نامناسب سین کرنے کو کہا گیا۔

ماڈل نے دعویٰ کیا کہ ان سے ہم جنس پرستی کا برہنہ منظر شوٹ کروانے کا کہا گیا اور ان پر تشدد کرکے ان کے کپڑے تک پھاڑ دیے گئے، جس کے بعد وہ اداکاروں کی تنظیم کے پاس شکایت لے کر پہنچیں، جس نے انہیں پولیس میں رپورٹ درج کروانے کا مشورہ دیا۔

عرفی جاوید کے مطابق ان کی شکایت پر پولیس نے ویب سیریز کی ٹیم کو گرفتار کرلیا لیکن پھر ان پر بہت زیادہ دباؤ ڈالا گیا جس کے بعد انہوں نے اپنی درخواست واپس لی اور ویب سیریز کی ٹیم آزاد ہوگئی۔

کارٹون

کارٹون : 15 جولائی 2024
کارٹون : 14 جولائی 2024