فلک شبیر اور سارہ خان کے درمیان تعلقات کیسے استوار ہوئے؟

اپ ڈیٹ 21 جولائ 2020

ای میل

دونوں نے 17 جولائی کو شادی کی تھی—فوٹو: انسٹاگرام
دونوں نے 17 جولائی کو شادی کی تھی—فوٹو: انسٹاگرام

حال ہی میں رشتہ ازدواج میں منسلک ہونے والے گلوکار فلک شبیر اور اداکارہ سارہ خان کی اچانک شادی سے کئی لوگ حیران تھے۔

دونوں نے 14 جولائی کو منگنی کا اعلان کیا اور اگلے ہی دن دونوں کی شادی کی تقریبات کا آغاز ہوا اور دونوں 17 جولائی کو شادی کے بندھن میں بندھ گئے۔

دونوں کی اچانک منگنی اور شادی کے حوالے سے کئی لوگ اس لیے بھی حیران ہوئے کہ انہیں اتنا زیادہ ایک ساتھ نہیں دیکھا گیا تھا۔

اور اب فلک شبیر نے پہلی بار بتایا ہے کہ کس طرح ان کے اور سارہ خان کے درمیان تعلقات استوار ہوئے اور کس طرح انہوں نے اداکارہ کو شادی کی پیش کش کی۔

یہ بھی پڑھیں: سارہ خان اور فلک شبیر رشتہ ازدواج میں منسلک

فلک شبیر نے ڈان امیجز سے بات کرتے ہوئے بتایا کہ ان کے اور سارہ خان کے درمیان پہلی باضابطہ ملاقات 2019 میں ہم ٹی وی برائڈل کوچر شو میں ہوئی تھی۔

انہوں نے بتایا کہ مذکورہ ملاقات کے بعد ہی انہوں نے باقی زندگی ایک ساتھ گزارنے کی منصوبہ بندی کی تھی۔

منگنی کا اعلان کرتے ہوئے دونوں نے شادی بھی کرلی تھی—فوٹو: انسٹاگرام سارہ خان
منگنی کا اعلان کرتے ہوئے دونوں نے شادی بھی کرلی تھی—فوٹو: انسٹاگرام سارہ خان

گلوکار نے بتایا کہ مذکورہ ملاقات سے قبل ان کے اور سارہ علی خان کے درمیان سرسری ملاقاتیں ہوتی تھیں لیکن اس دن وہ تنہا بیٹھ کر چائے پی رہے تھے تو انہوں نے سارہ خان اور نور کو ساتھ میں چائے پینے کی پیش کش کی اور پھر چائے کے ساتھ تفصیلی گفتگو کے بعد ان کے درمیان ایک نئے دور کا آغاز ہوا۔

فلک شبیر کے مطابق ان کے اور سارہ خان کے درمیان دوسری اہم اور باضابطہ ملاقات لاہور کے ایم ایم روڈ کے ایک ہوٹل میں اس وقت ہوئی جب وہ ایک شو کرنے کے بعد فری ہوئے۔

گلوکار نے انکشاف کیا کہ اس روز کا کھانا ایک ساتھ کھانے کے بعد جب انہوں نے سارہ خان کو گھر چھوڑا تو انہوں نے راستے میں ہی اداکارہ کو شادی کی پیش کش کی۔

مزید پڑھیں: منگنی ہوتے ہی سارہ خان اور فلک شبیر کی شادی کی تقریبات

فلک شبیر نے بتایا کہ انہوں نے سارہ خان کو یہ نہیں کہا کہ وہ ان سے پیار کرتے ہیں بلکہ انہوں نے براہ راست شادی کی پیش کش کی اور سارہ خان نے اس معاملے پر والدین سے ملاقات کے لیے کہا۔

گلوکار کے مطابق کچھ دن بعد انہوں نے سارہ خان کے والد سے گفتگو کی جو 2 گھنٹے تک جاری رہی، اس سے قبل انہیں سارہ نے بتایا تھا کہ اگر ان کے والد 15 منٹ سے قبل ملاقات سے اٹھ گئے تو ان کی شادی نہیں ہوسکتی۔

دونوں نے 15 جولائی کو منگنی کی تصدیق کی تھی—فوٹو: انسٹاگرام
دونوں نے 15 جولائی کو منگنی کی تصدیق کی تھی—فوٹو: انسٹاگرام

فلک شبیر نے اس بات پر خوشی کا اظہار کیا کہ سب کچھ ٹھیک رہا اور انہوں نے سارہ خان کے والد سے 2 گھنٹے تک ملاقات کی اور وہ ان کی اور سارہ کی شادی کے لیے راضی ہوگئے۔

گلوکار کے مطابق اگلے مرحلے میں ان کے تمام اہل خانہ ملے اور ان کی شادی کی باتیں طے ہوئیں اور پھر کورونا کی وبا کے دنوں میں لاک ڈاؤن کی حالت میں سادگی سے ان کی شادی ہوگئے۔

فلک شبیر کے مطابق ان کی شادی میں 40 تک افراد نے شرکت کی تھی اور وہ تمام قریبی رشتہ دار اور دوست تھے۔

یہ بھی پڑھیں: اداکارہ سارہ خان اور گلوکار فلک شبیر نے منگنی کرلی

ایک سوال کے جواب میں فلک شبیر نے کہا کہ شادی کے بعد بھی سارہ خان کو ہر وہ کام کرنے کی اجازت ہوگی جو وہ پہلے کرتی تھیں۔

انہوں نے کہا کہ شادی کے باوجود سارہ خان کو شوبز میں کام کرنے سے نہیں روکا جائے گا بلکہ اس کی اپنی مرضی ہوگی کہ وہ اداکاری کے علاوہ گلوکاری بھی کرتیں ہیں تو کریں۔

انہوں نے اس عزم کا اظہار بھی کیا کہ وہ سارہ خان کے ہر فیصلے میں ان کے ساتھ کھڑے ہوں گے اور انہیں ہر فیصلہ اپنی مرضی سے کرنے کی اجازت ہوگی۔

سارہ خان کو شادی کے بعد بھی شوبز میں کام کرنے کی اجازت ہوگی، فلک شبیر—فوٹو: سارہ خان انسٹاگرام
سارہ خان کو شادی کے بعد بھی شوبز میں کام کرنے کی اجازت ہوگی، فلک شبیر—فوٹو: سارہ خان انسٹاگرام