Dawnnews Television Logo
شائع 28 فروری 2024 10:42am

آئس کریم کا مزہ لیتے ہوئے غزہ جنگ بندی پر بات کرنے پر جوبائیڈن کو تنقید کا سامنا

غزہ میں جنگ سے متعلق اسرائیل اور حماس کے درمیان جنگ بندی پر بات کرتے ہوئے آئس کریم کھانے پر امریکی صدر جوبائیڈن کو شدید تنقید کا سامنا ہے۔

امریکی اخبار ٹائم میگزین کے مطابق 27 فروری کو جوبائیڈن نے نیویارک شہر میں ایک آئس کریم شاپ کا دورہ کیا تھا۔

سوشل میڈیا پر گردش کرنے والی ویڈیو میں دیکھا جاسکتا ہے کہ وہ آئس کریم کا مزہ لے رہے ہیں اور ساتھ ہی وہاں صحافیوں سے اسرائیل غزہ جنگ بندی کے امکان سے متعلق سوالات کے جواب دے رہے ہیں۔

صحافی کے ایک سوال پر جوبائیڈن کہتے ہیں کہ ’مجھے امید ہے کہ ہفتے کے آخر تک جنگ بندی پر فیصلہ ہوجائے گا، میرے قومی سلامتی کے مشیر نے مجھے بتایا کہ ہم جنگ بندی کے قریب ہیں، ابھی حتمی فیصلہ نہیں ہوا، لیکن امید ہے کہ اگلے پیر تک جنگ بندی کا امکان ہے‘۔

آئس کریم کا مزہ لیتے ہوئے غزہ میں جنگ بندی پر بات کرنے پر سوشل میڈیا صارفین نے جوبائیڈن کو آڑے ہاتھوں لیتے ہوئے انہیں تنقید کا نشانہ بنایا۔

ایک صارف نے لکھا کہ ’نسل کشی کرنے والے جوبائیڈن آئس کریم کھا رہے ہیں جبکہ اسرائیل نے 14ہزار بچوں کا قتل کردیا ہے‘۔

ایک اور صارف نے لکھا کہ ’آئس کریم واقعی اس بات کو ظاہر کررہی ہے کہ مغربی دنیا نے غزہ میں ہونے والی نسل کشی کر کتنا سنجیدہ لیا ہے۔ ’

ایک اور صارف نے لکھا کہ ’اولڈ جوبائیڈن بھول چکے ہیں کہ انہوں نے کچھ دن پہلے جنگ بندی کو ویٹو کیا تھا‘، دوسرے صارف نے لکھا کہ ’غزہ میں لوگ مررہے ہیں اور یہ صاحب یہاں آئس کریم کے مزہ لے رہے ہیں، خواہش ہے کہ یہ ان کی آخری آئس کریم ہو‘۔

یاد رہے کہ 7 اکتوبر سے غزہ پر اسرائیلی حملوں میں کم از کم 29 ہزار 878 افراد شہید اور 70 ہزار 215 زخمی ہو چکے ہیں، جن میں زیادہ تر خواتین اور بچے ہیں جبکہ 7 اکتوبر کے حملوں سے اسرائیل میں ہلاک والوں کی تعداد 1,139 ہے۔

شائع 26 فروری 2024 06:27pm

غزہ میں اسرائیلی جارحیت: فلسطینی وزیر اعظم حکومت سمیت مستعفی

فلسطینی وزیر اعظم محمد اشتیہ اور ان کی حکومت نے غزہ میں جاری اسرائیلی جارحیت کے پیش نظر مستعفی ہونے کا اعلان کردیا ہے۔

خبر رساں ادارے ’اے ایف پی‘ کے مطابق فلسطینی وزیر اعظم کا کہنا تھا کہ میں صدر محمود عباس کو اپنی حکومت کا استعفیٰ پیش کرتا ہوں، محمد اشتیہ نے بتایا کہ انہوں نے مقبوضہ مغربی کنارے میں بڑھتے ہوئے تشدد اور غزہ میں جنگ کے باعث مستعفی ہونے کا فیصلہ کیا ہے۔

استعفی کا اعلان کرتے ہوئے محمد اشتیہ نے کہا کہ ان کے خیال میں اگلے مرحلے اور اس کے چیلنجز سے نمٹنے کے لیے نئی حکومتی اور سیاسی اقدامات کی ضرورت ہے۔

انہوں نے مزید بتایا کہ ان کی حکومت اپنے لوگوں کی ضروریات کو پورا کرنے اور بنیادی ڈھانچے جیسی خدمات فراہم کرنے کے درمیان توازن حاصل کرنے میں کامیاب رہی اور وہ فلسطین کی سرزمین پر ایک ریاست کے قیام کے لیے جدوجہد جاری رکھیں گے۔

تاہم یہ ابھی تک واضح نہیں ہے کہ صدر محمود عباس وزیر اعظم کا استعفیٰ فوری طور پر قبول کریں گے یا نئے وزیر اعظم کی تقرری تک انتظار کریں گے۔

یاد رہے کہ مغربی کنارے میں حکومت کا استعفیٰ اس وقت سامنے آیا ہے جب امریکا سمیت کئی ممالک نے ایک اصلاح شدہ فلسطینی اتھارٹی کا مطالبہ کیا ہے جو غزہ میں جنگ کے خاتمے کے بعد تمام فلسطینی علاقوں کا انتظام سنبھالے گی۔

واضح رہے کہ غزہ میں جنگ 7 اکتوبر کو حماس کے جنوبی اسرائیل پر حملے کے بعد شروع ہوئی جہاں اسرائیلی اعداد و شمار کے مطابق حماس کے حملے کے نتیجے میں 1 ہزار 160 کے قریب اسرائیلی ہلاک ہوئے جن میں زیادہ تر عام شہری شامل تھے۔

دوسری جانب غزہ کی وزارت صحت کے مطابق غزہ میں اسرائیل کی جوابی کارروائیوں میں اب تک کم از کم 29 ہزار 782 افراد شہید ہو چکے ہیں، جن میں زیادہ تر خواتین اور بچے ہیں۔

شائع 26 فروری 2024 09:55am

صحافی تنظیمیں آج فلسطینی صحافیوں کا عالمی دن منا رہی ہیں

100 سے زائد ممالک کی صحافی یونینز اور ایسوسی ایشنز آج (26 فروری کو) فلسطینی صحافیوں کے عالمی دن کے طور پر منارہی ہیں۔

انٹرنیشنل فیڈریشن آف جرنلسٹس اور فیڈریشن آف عرب جرنلسٹس کا کہنا ہے کہ وہ فلسطین میں ساتھی صحافیوں کی حمایت میں یہ دن منا رہے ہیں۔

تنظیموں نے جنگ شروع ہونے کے بعد سے 4 ماہ میں 100 صحافیوں کی ہلاکت کو ایک ’خوفناک اور غیر ضروری سانحہ‘ قرار دیا۔

آسٹریلوی صحافیوں کی یونین ایم ای اے اے نے سوشل میڈیا پر ایک پوسٹ میں کہا کہ ’فلسطینی صحافیوں کی وجہ سے غزہ کی تباہی دنیا دیکھ رہی ہے اور ان کے بغیر انسانی بحران نظر نہیں آئے گا‘۔

اپ ڈیٹ 26 فروری 2024 09:54pm

امریکا میں اسرائیلی سفارت خانے کے باہر خود کو آگ لگانے والا ایئرمین چل بسا

امریکا کے دارالحکومت واشنگٹن ڈی سی میں اسرائیلی سفارت خانے کے باہر ایک شخص نے خود کو آگ لگالی جسے فوری ہسپتال پہنچایا گیا تاہم وہ جانبر نہ ہوسکا۔

امریکی میڈیا اور گارجین کی رپورٹ کے مطابق یہ واقعہ 25 فروری کو مقامی وقت کے مطابق رات ایک بجے پیش آیا، مذکورہ شخص نے اسرائیلی سفارت خانے کے سامنے ایک منٹ تک جھلستا رہا تاہم حکام فوری طور پر آگ بجھانے کے لیے آگے بڑھے۔

مقامی پولیس نے سماجی پلیٹ ’ایکس‘ پر مؤقف اختیار کیا کہ ’کچھ افسران کو امریکی خفیہ سروس کی مدد کے لیے بھیجا گیا تھا جب ایک شخص نے سفارت خانے کے سامنے خود کو آگ لگا دی جسے قریبی ہسپتال پہنچا دیا گیا جس کی حالت تشویشناک ہے۔‘

تاہم بعد ازاں وہ زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے ہسپتال میں دم توڑ گیا۔

امریکی میڈیا نے امریکی فضائیہ کے ترجمان کا حوالہ دیتے ہوئے بتایا کہ مذکورہ شخص امریکی ایئر مین تھا۔

واقعے سے متعلق واشنگٹن پولیس ڈپارٹمنٹ دیگر متعلقہ حکام کے ساتھ مل کر تحقیقات کر رہا ہے۔

رپورٹ کے مطابق سوشل میڈیا پر گردش ہونے والی ویڈیو میں دیکھا جاسکتا ہے کہ یونیفارم میں ملبوس ایک شخص ’آزاد فلسطین‘ کے نعرے لگاتے ہوئے خود کو امریکی فضائیہ کے افسر کے طور پر شناخت ظاہر کر رہا ہے۔

امریکی فضائیہ کے ایک ترجمان نے مذکورہ شخص کو اپنی ٹیم کا حصہ ماننے یا شناخت کرنے سے انکار کردیا ہے۔

اسرائیلی سفارتخانے نے ردعمل دیتے ہوئے کہا کہ اس کا کوئی عملہ زخمی نہیں ہوا، ایک بیان میں اسرائیلی وزارت خارجہ نے کہا کہ مذکورہ شخص ان کے سفارت خانے کے عملے کا حصہ نہیں ہے۔

امریکا میں موجود اسرائیلی سفارت خانہ فلسطینی حامی مظاہرین کے مظاہروں کا مرکز بنا ہوا ہے جہاں لوگ غزہ میں اسرائیلی فوجی جنگ کے خلاف فوری جنگ بندی کا مطالبہ کررہے ہیں۔

7 اکتوبر سے غزہ پر اسرائیلی بمباری میں کم از کم 29 ہزار 692 فلسطینی شہید اور 69 ہزار 879 زخمی ہو چکے ہیں۔ 7 اکتوبر کے حملوں سے اسرائیل میں مرنے والوں کی نظر ثانی شدہ تعداد 1,139 ہے۔

شائع 25 فروری 2024 09:48am

غزہ میں غذائی قلت کی صورتحال سنگین، دودھ کی کمی سے 2 ماہ کا بچہ انتقال

غزہ شہر کے الشفاء ہسپتال میں محمود فتوح نامی 2 ماہ کا بچہ غذائی قلت کے باعث انتقال کر گیا ہے۔

وفا نیوز ایجنسی کے مطابق بچے کی موت اس وقت ہوئی جب اس کے لیے دودھ اور بنیادی سامان نہ مل سکا۔

ایک پیرامیڈیک (جس نے بچے کے والدین کی ہسپتال لانے میں مدد کی تھی) کا کہنا تھا کہ ہم نے ایک خاتون کو دیکھا جو اپنے بچے کو گود میں لےکر مدد کے لیے چیخ رہی تھی، ایسا لگ رہا تھا کہ اس کا بچہ اپنی آخری سانسیں لے رہا ہے۔

پیرامیڈیک کا کہنا ہے کہ انہوں نے بچے کو ہسپتال پہنچایا جہاں اسے شدید غذائی قلت کے باعث آئی سی یو میں لے جایا گیا لیکن وہ زندہ نہ بچ سکا۔

شمالی غزہ کو غذائی قلت کا سامنا ہے، اسرائیل کی جانب سے مسلسل بمباری کے باعث اقوام متحدہ کی ایجنسی نے امدادی سرگرمیاں بند کر دی ہیں۔

غزہ کے نومولود بچوں کے لیے دودھ کی قلت

غزہ میں ماہر اطفال معاذ الماجدہ کا کہنا ہے کہ ماؤں کی صحت پہلے ہی خراب ہے جس کی وجہ سے وہ اپنے بچوں کو دودھ پلانے سے قاصر ہیں۔

المجیدہ نے مزید کہا کہ ’بچے ایسا کھانا کھا رہے ہیں جس میں ان کی نشوونما کے لیے ضروری غذائی اجزاء کی کمی ہے۔‘

اس ہفتے کے شروع میں یونیسیف اور دیگر امدادی تنظیموں کے ایک نئے تجزیے میں کہا گیا تھا کہ ’غزہ کی پٹی میں بچوں، حاملہ خواتین اور دودھ پلانے والی ماؤں میں غذائی قلت میں اضافہ ہوا ہے جس کے نتیجے میں ان کی صحت کو سنگین خطرات کا سامنا ہے۔

یونیسیف کے انسانی ہمدردی اور سپلائی آپریشنز کے ڈپٹی ایگزیکٹو ڈائریکٹر ٹیڈ چیبان نے کہا کہ غزہ میں بچوں کی اموات میں اضافہ ہورہا ہے جسے روکنا انتہائی ضروری ہے۔

شائع 25 فروری 2024 08:23am

غزہ میں مزید 92 فلسطینی شہید، ایران اور یورپی یونین کی اسرائیل و امریکا پر تنقید

غزہ کے علاقے رفح میں اسرائیلی فوج کی بمباری کے نتیجے میں مزید 7 فلسطینی شہید ہوگئے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق 24گھنٹےمیں92 فلسطینی اسرائیلی دہشتگردی کانشانہ بنے۔

خان یونس اور اردگرد علاقوں میں شدید بمباری کے بعد ہزاروں فلسطینی اب بھی رفح منتقل ہورہے ہیں۔

رفح میں 1.5 ملین لوگوں نے پناہ لی ہے، رفح وہ واحد مقام ہے جہاں سے امدادی ٹرک غزہ میں داخل ہو رہے ہیں لیکن اقوام متحدہ کی ایجنسی کا کہنا ہے کہ گزشتہ ہفتے اوسطاً روزانہ 35 سے کم ٹرک محصور علاقے میں داخل ہوئے۔

ترجمان عدنان ابو حسنہ نے الجزیرہ کو بتایا کہ ایجنسی اب شمالی غزہ میں امداد فراہم کرنے کے قابل نہیں ہے۔

یورپی یونین خارجہ پالیسی چیف جوزیف بوریل نے یہودآبادکاری منصوبے پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ مغربی کنارے میں یہود آبادکاری انتہائی خطرناک ہوگئی۔

دوسری جانب ایرانی سپریم لیڈر آیت اللّٰہ خامنہ ای نے مغرب کے دُہرےمعیار پر شدید تنقید کرتے ہوئے کہا کہ مغرب نےفلسطینیوں کی اموات پر آنکھیں بند کر رکھی ہیں۔

انہوں نے کہا کہ امریکا نے بمباری بند کرنےکی قراردادڈھٹائی سے ویٹوکردی، یہی مغربی ثقافت ،تہذیب اور لبرل جمہوریت کا اصل چہرہ ہے۔

7 اکتوبر سے غزہ پر اسرائیلی حملوں میں کم از کم 29 ہزار 606 فلسطینی ہلاک اور 69 ہزار 737 زخمی ہو چکے ہیں۔ 7 اکتوبر کے حملوں سے اسرائیل میں مرنے والوں کی نظر ثانی شدہ تعداد 1,139 ہے۔

اسرائیلی فورسز کا 8 فلسطینیوں پر تشدد

وفا نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق اسرائیلی فورسز نے مقبوضہ مغربی کنارے کے علاقے ہیبرون میں چھاپے کے دوران 8 فلسطینیوں کو شدید تشدد کا نشانہ بنایا۔

ٹیلی گرام پر پوسٹ کی گئی ویڈیوز، جن کی الجزیرہ نے تصدیق کی ہے، اسرائیلی فورسز کو ہیبرون کے الجابر محلے پر چھاپے کے دوران متعدد افراد کو گرفتار کرتے ہوئے دکھایا گیا ہے۔

الجزیرہ کی طرف سے تصدیق شدہ ایک اور ویڈیو میں، اتوار (25 فروری) کو صبح سویرے ہیبرون کے بنی نعیم محلے میں اسرائیلی فورسز کی گاڑی چلانے کے دوران فائرنگ کی آوازیں سنی جا سکتی ہیں۔

شائع 25 فروری 2024 07:53am

مسلمانوں کیخلاف نفرت انگیزبیان دینے پربرطانوی ممبرپارلیمنٹ معطل

مسلمانوں کےخلاف نفرت انگیزبیان دینےپربرطانوی ممبرپارلیمنٹ کو پارٹی سے معطل کردیا گیا۔

برطانوی نشریاتی ادارہ رپورٹ کے مطابق کنزرویٹو پارٹی کے لی اینڈرسن نے مسلمانوں کےخلاف بیان دیتے ہوئے کہا تھا کہ مسلمانوں نے صادق خان کے ذریعے لندن پر قبضہ کر لیا ہے۔

لی اینڈرسن کے ریمارکس پر لیبر اور کچھ کنزرویٹو کی جانب سے تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے اسے ’مضحکہ خیز‘ قرار دیا۔

اس کےعلاوہ ان کے بیان پر میئر لندن صادق خان نے شدید مذمت کرتےہوئے کہا کہ لی اینڈرسن کابیان جلتی پرتیل کا کام کرےگا۔

انہوں نے برطانوی وزیراعظم اور ان کی کابینہ پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ رشی سونک کی خاموشی متنازع بیان کےدفاع کے مترادف ہے۔

صادق خان نے لی اینڈرسن کے بیان کو ’اسلامو فوبک، مسلم مخالف اور نسل پرستانہ‘ قرار دیا اور کہا کہ ’مجھے ڈر ہے کہ رشی سنک اور کابینہ کی طرف سے خاموشی متنازع بیان کےدفاع کے مترادف ہے، مجھے سمجھ نہیں آتی کہ رشی سنک اور ان کی کابینہ اس کے خلاف کیوں نہیں بول رہی اور اس کی مذمت کیوں نہیں کر رہی ہے۔‘

یاد رہے کہ لی اینڈرسن کنزرویٹو پارٹی کے ڈپٹی چیئرمین کے طور پر کام کرتے رہے ہیں۔

شائع 24 فروری 2024 08:09am

اسرائیل کی بے گھر فلسطینیوں پر بمباری، مزید 24 فلسطینی شہید

اسرائیلی فوج کی غزہ میں مسلسل بمباری جاری ہے، رات گئے دیر البلاح میں بے گھر فلسطینیوں کے گھروں پر اسرائیلی بمباری کے نتیجے میں 24فلسطینی شہید ہوگئے۔

فلسطینی خبر رساں ادارے وفا نیوز کے مطابق دیر البلاح میں بمباری سے کئی زخمیوں کی حالت تشویش ناک ہے۔

ہسپتال میں محدود سہولیات کےباعث اموات کی تعداد میں اضافےکاامکان ہے، 24گھنٹے میں104فلسطینی اسرائیلی دہشت گردی کا نشانہ بنے۔

دوسری جانب فلسطینی پناہ گزینوں کے لیے اقوام متحدہ کی ایجنسی، یون این آر ڈبلیو اے کے نمائندے کا کہنا ہے کہ غزہ میں اسرائیل کی مسلسل بمباری کے باعث وہ شمالی غزہ میں مزید امدادی سرگرمیاں فراہم نہیں کر سکتے۔

انہوں نے شہریوں پر اسرائیلی حملوں اور خوراک کی امداد تک رسائی پر پابندیوں کا حوالہ دیتے ہوئے کہا ہے کہ شہری بھوک سے مر رہے ہیں۔

7 اکتوبر سے شہید فلسطینیوں کی تعداد 29 ہزار 514 ہوگئی جبکہ اب تک 69 ہزار 616 افراد زخمی ہوگئے ہیں۔

اپ ڈیٹ 23 فروری 2024 10:18am

پاکستان عالمی عدالت انصاف میں اسرائیل کے خلاف اپنا مؤقف آج پیش کرے گا

پاکستان آج (23 فروری) کو عالمی عدالت انصاف میں غزہ جاری جنگ سے متعلق اسرائیل کے خلاف اپنا مؤقف آج پیش کرے گا۔

غیر ملکی خبر رساں اداروں کی رپورٹس کے مطابق بین الاقوامی عدالت انصاف 19 سے 26 فروری تک دی ہیگ کے پیس پیلس میں عوامی سماعتوں کا انعقاد کر رہا ہے۔

پاکستان کے دفتر خارجہ نے اعلان کیا تھا کہ مشرقی یروشلم سمیت فلسطین سے متعلق اسرائیلی پالیسیوں کے حوالے سے 23 فروری کی شام وزیر قانون و انصاف احمد عرفان اسلم عالمی عدالت انصاف میں پاکستان کے موقف کی نمائندگی کریں گے۔

عدالت میں پیر (19 فروری) کو تین گھنٹے تک جاری رہنے والے سماعت کے دوران فلسطینی کی نمائندگی کرنے والے 7 نمائندوں نے کہا کہ ویسٹ بینک اور مشرقی یروشلم میں اسرائیل کی حکمرانی غیر قانونی ہے، انہوں نے اسرائیل پر نسل پرستی اور نسل کشی سمیت دیگر جرائم کا الزام لگایا۔

منگل (20 فروری) کو عدالت میں جنوبی افریقی وفد نے اسرائیل پر ایسے ہی الزامات لگائے۔

البتہ اسرائیل نے اپنے دفاع کے لیے کوئی وفد نہیں بھیجا ہے۔

شائع 18 فروری 2024 10:18am

اسرائیلی فوج کی غزہ میں وحشیانہ کارروائیاں جاری، مزید 83 فلسطینی شہید

اسرائیلی فوج کی غزہ میں وحشیانہ کارروائیوں کا سلسلہ جاری ہے، 24 گھنٹے کے دوران مزید 83 فلسطینی شہید کردیے گئے۔

غزہ کے علاقے دیر البلاح میں اسرائیلی فوج کے ہاتھوں 10 فلسطینیوں کو شہید کردیا گیا، شہدا کی مجموعی تعداد 28 ہزار 858 ہوگئی۔

سفاک اسرائیلی فوج نے نصر ہسپتال پردھاوا بول کر عملے کو گرفتار کرلیا اور سرجری آلات توڑ دیے۔

دوسری جانب چین نے اسرائیلی جارحیت پر رد عمل دیتے ہوئے غزہ میں جنگ بندی اور فوری امداد کی رسائی کی ضرورت پر زور دیا اور مطالبہ کیا کہ دو ریاستی حل کے لیے بین الاقوامی امن کانفرنس بلائی جائے۔

سربراہ حماس اسمعٰیل ہنیہ نے کہا ہے کہ اسرائیل جنگ بندی کے معاہدے میں تاخیری حربے استعمال کررہا ہے۔

ادھر حماس سے جنگ بندی کا معاہدہ نہ کرنے پر اسرائیلی دارالحکومت میں احتجاج جاری ہے۔

مظاہرین نے تل ابیب میں سڑکوں پر نکل کر امریکا اور اسرائیلی حکومت کے خلاف شدید نعرے بلند کیے۔

شائع 17 فروری 2024 06:24pm

غزہ جنگ: روس کی حماس اور دیگر فلسطینی گروپوں کو ماسکو کے دورے کی دعوت

روس نے غزہ جنگ اور مشرق وسطیٰ میں دیگر مسائل پر بات چیت کے لیے حماس اور دیگر فلسطینی گروپوں کو ماسکو کے دورے کی دعوت دے دی۔

ماسکو نے برسوں سے خطے کے تمام بڑے اسٹیک ہولڈرز کے ساتھ اچھے تعلقات قائم کرنے کی کوشش کی ہے اور غزہ میں جاری جنگ کے دوران اسرائیل اور اس کے مغربی حمایتیوں پر تنقید میں اضافہ کیا ہے۔

غیر ملکی خبر رساں ایجنسی ’اے ایف پی‘ کے مطابق روسی نیوز ایجنسی ’طاس‘ نے روسی نائب وزیر خارجہ اور مشرق وسطیٰ کے لیے صدر ولادیمیر پیوٹن کے نمائندہ خصوصی میخائیل بوگودانوف کے حوالے سے کہا ہے کہ خطے میں بڑھتی کشیدگی کے باعث انہوں نے تمام فلسطینی نمائندوں اور خطے کے دیگر ممالک بشمول شام، لبنان اور دیگر ممالک کے سیاسی رہنماؤں کو 29 فروری کو دورہ روس کی دعوت دی ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ ’ہم نے تمام فلسطینی نمائندوں کو مدعو کیا ہے، تمام سیاسی قوتوں کو جن کی شام، لبنان اور خطے کے دیگر ممالک میں اپنی پوزیشنز ہیں۔‘

دورے کے لیے مدعو کیے جانے والوں میں حماس اور فلسطینی اسلامی جہاد، الفتح اور وسیع تر فلسطین لبریشن آرگنائزیشن (پی ایل او) کے نمائندے شامل ہیں۔

عرب میڈیا کے مطابق روس نے اس سے پہلے اسرائیل غزہ جنگ کے آغاز میں بھی حماس کی قیادت کو روس کے دورے کی دعوت دی تھی۔

شائع 04 دسمبر 2023 10:00pm

فلسطینی اور اسرائیلی نمائندوں کا اقوام متحدہ میں ایک دوسرے پر ’نسل کشی‘ کا الزام

اقوام متحدہ میں اسرائیل اور فلسطینی نمائندوں نے ایک دوسرے پر ’نسل کشی‘ کے الزامات عائد کرتے ہوئے غزہ کی صورتحال پر بین الاقوامی ردعمل کا مطالبہ کیا۔

خبر ایجنسی ’اے ایف پی‘ کی رپورٹ کے مطابق جنیوا میں اسرائیلی مشن کی قانونی مشیر ییلا سائٹرن نے اقوام متحدہ کے یورپی ہیڈکوارٹرز میں جمع سفارت کاروں کو بتایا کہ ’7 اکتوبر کو حماس کے حملے نسل کشی کے نظریے سے متاثر ہوکر کیے گئے تھے۔‘

دوسری جانب فلسطینی نمائندہ دیما اسفور نے کونسل کے سامنے اصرار کیا کہ اسرائیل کی بڑے پیمانے پر بمباری کی مہم اور زمینی کارروائی کے نتیجے میں ’انسانی ساختہ تباہی نسل کشی کا درسی کتاب میں بیان کیا جانے والا کیس‘ ہے۔

شائع 04 دسمبر 2023 09:17pm

شمالی غزہ کے دو اسکولوں پر اسرائیلی حملے میں 50 فلسطینی جاں بحق ہوگئے، رپورٹ

فلسطین کی سرکاری خبر رساں ایجنسی ’وفا‘ نے کہا ہے کہ غزہ کی پٹی کے شمال میں دراج محلے میں بے گھر لوگوں کو پناہ دینے والے دو اسکولوں کو نشانہ بنانے والے اسرائیلی فضائی حملے میں کم از کم 50 افراد جاں بحق ہو گئے۔

آزادانہ طور پر رپورٹ کی تصدیق فوری طور پر ممکن نہیں ہوسکی۔

اسرائیلی فوج کے ترجمان نے کہا ہے کہ وہ اس رپورٹ کا جائزہ لے رہے ہیں۔

شائع 04 دسمبر 2023 02:50pm

غزہ: رہا ہونے کے بعد 6 تھائی شہری وطن واپس پہنچ گئے

حکام نے بتایا کہ حماس کے ہاتھوں غزہ پٹی میں اغوا کیے گئے اور کئی ہفتوں تک گرفتار رہنے والے6 تھائی باشندے اپنے ملک واپس پہنچ گئے۔

اے ایف پی کی رپورٹ کے مطابق کم از کم 32 تھائی باشندوں کو حماس نے اٹھا لیا تھا، بنکاک کی وزارت خارجہ اور تھائی مسلم گروپ ان کی رہائی کے لیے بات چیت کر رہے ہیں، تھائی لینڈ کے 17 یرغمالی گزشتہ ہفتے واپس لوٹے تھے، انہیں عارضی جنگ بندی کے دوران رہا کیا گیا جس میں یکم دسمبر کو جنگ بندی کی میعاد ختم ہونے سے پہلے ہی سیکڑوں افراد کو رہا کیا گیا۔

حماس کی طرف سے ان کی رہائی کے بعد سے 6 افراد اسرائیل کے ایک ہسپتال میں زیر علاج تھے۔

وزارت خارجہ کے مطابق رہا ہونے والوں میں سے 5 افراد کی فوری طور پر مملکت کے ارد گرد اپنے آبائی شہروں میں منتقلی کی امید ہے۔

شائع 04 دسمبر 2023 02:32pm

بنجمن نیتن یاہو پر جنگی مجرم کے طور پر مقدمہ چلایا جائے گا، صدر طیب اردوان

ترک صدر رجب طیب اردوان نے کہا ہے کہ غزہ پٹی میں جاری اسرائیلی جارحیت پر اسرائیلی وزیر اعظم بنجمن نیتن یاہو پر جنگی مجرم کے طور پر مقدمہ چلایا جائے گا۔

خبر رساں ادارے ’رائٹرز‘ کے مطابق استنبول میں اسلامی تعاون تنظیم کی کمیٹی کے اجلاس سے خطاب میں طیب اردوان کا کہنا تھا کہ غزہ فلسطینی سرزمین ہے اور ہمیشہ فلسطینیوں کی ہی رہے گی۔

شائع 04 دسمبر 2023 02:19pm

ایران شام میں پاسداران انقلاب کی ہلاکتوں کا جواب دے گا، وزیر خارجہ

ایرانی وزیر خارجہ نے کہا ہے کہ ان کا ملک شام میں پاسداران انقلاب کی ہلاکتوں کا جواب دے گا۔

اسرائیل کے ہاتھوں شام میں گزشتہ ہفتے دو ایرانی پاسداران انقلاب کی ہلاکت کے بارے میں پوچھے جانے پر وزارت خارجہ کے ترجمان ناصر کنانی نے کہا ہے کہ ایران شام میں اپنے مفادات پر حملوں کا جواب دے گا۔

خبر رساں ادارے رائٹرز کی رپورٹ کے مطابق انہوں نے کہا کہ شام میں ایران کے مفادات اور ہماری ایڈوائزری فورسز کے خلاف ہر اقدام کا جواب دیا جائے گا۔

شائع 04 دسمبر 2023 02:13pm

غزہ میں مزید 3 فوجی ہلاک، مجموعی تعداد 75 ہوگئی، اسرائیلی فوج

اسرائیلی فوج نے کہا ہے کہ غزہ کی پٹی میں لڑائی میں مزید تین فوجی مارے گئے ہیں جس کے بعد 7 اکتوبر کو تنازع شروع ہونے کے بعد سے فوجیوں کی ہلاکتوں کی تعداد 75 ہو گئی ہے۔

اے ایف پی کی رپورٹ کے مطابق فوج نے بتایا کہ تینوں اہلکار اتوار کو شمالی غزہ میں ہلاک ہوئے، ان ہلاکتوں سے 7 اکتوبر سے اب تک ہلاک ہونے والے اسرائیلی دفاعی اہلکاروں کی مجموعی تعداد 401 ہو گئی۔

شائع 04 دسمبر 2023 12:48pm

حکام کی جانب سے اسرائیل کی شرکت کی مخالفت کے بعد انڈونیشیا کی انڈر 20 ورلڈ کپ کی میزبانی میں دلچسپی

حکام کی جانب سے اسرائیل کی شرکت کی مخالفت کے بعد انڈونیشیا نے انڈر 20 ورلڈ کپ کی میزبانی میں دلچسپی کا اظہار کیا ہے۔

رائٹرز کی رپورٹ کے مطابق صدر نے کہا کہ انڈونیشیا فٹ بال کی عالمی گورننگ باڈی فیفا کو اظہار دلچسپی کا اعلامیہ بھیجے گا جس میں سنگاپور کے ساتھ 2025 کے انڈر 20 ورلڈ کپ کی مشترکہ میزبانی کی کوشش کی جائے گی۔

یہ فیصلہ مسلم اکثریتی ملک انڈونیشیا سے رواں اس سال کے شروع میں ٹورنامنٹ کی میزبانی کے حقوق چھیننے کے بعد سامنے آیا ہے جس کی وجہ بعض سرکاری عہدیداروں کی طرف سے اسرائیل کی شرکت کی مخالفت کی گئی تھی۔

شائع 04 دسمبر 2023 12:05pm

جنوبی غزہ میں حملے اتنے ہی جابرانہ ہیں جتنے شمالی غزہ نے برداشت کیے،ترجمان یونیسیف

اقوام متحدہ کے بچوں کے فنڈ (یونیسیف)کے ترجمان جیمز ایلڈر نے کہا ہے کہ جنوبی غزہ،جہاں کے رہائشیوں کو نقل مکانی کے لیے کہا جا رہا ہے،میں ہونے والے اسرائیلی حملے ہر حد تک اتنے ہی جابرانہ ہیں جتنے شمال نے برداشت کیےہیں۔

انہوں نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ’ایکس‘ پر لکھاکہ کسی نہ کسی طرح، یہ بچوں اور ماؤں کے لیے بدتر ہو تا جارہا ہے،ساتھ ہی انہوں نے لوگوں پر زور دیا کہ وہ بچوں کے خلاف اس جنگ کو روکنے کے لیے اپنی آواز بلند کریں۔

شائع 04 دسمبر 2023 11:50am

امریکا میں نوجوان طبقہ، خواتین کی اکثریت غزہ پر اسرائیلی حملوں کی مخالف

امریکا میں پولسٹر گیلپ کے سروے سے معلوم ہوتا ہے کہ امریکی خواتین اور نوجوان طبقے کی اکثریت غزہ پر اسرائیل کے حملوں کو ناپسند کرتی ہے۔

’ٹی آر ٹی ورلڈ‘ کی رپورٹ کے مطابق گزشتہ ماہ کیے گئے سروے کے رواں ہفتے نتائج جاری کیے گئے جس کے مطابق ایک ہزار 13 جواب دہندگان میں سے 52 فیصد خواتین اور 18 سے 34 سال کی عمر کے 67 فیصد بالغ افراد اسرائیل کے حملوں کی حمایت نہیں کرتے۔

44 فیصد خواتین جبکہ 59 فیصد مردوں نے اسرائیل کے حملوں کی حمایت کی، 37 فیصد بالغ مردوں نے اسرائیلی بمباری کی مخالفت کی۔

شائع 04 دسمبر 2023 11:45am

غزہ کے وسطی اور شمالی علاقوں کا رابطہ منقطع ہوگیا ہے،اقوام متحدہ

اقوام متحدہ کے دفتر برائے انسانی امور نے کہا کہ اسرائیلی فورسز نے غزہ کے وسطی اور شمالی علاقوں کو جنوب سے مکمل طور پر منقطع کر دیا ہے جس کی وجہ سے ضروری امداد کی ترسیل رک گئی ہے۔

ایک رپورٹ میں ایجنسی نے بتایا کہ 3 دسمبر کو رفح گورنریٹ غزہ میں وہ واحد مقام تھا جہاں بنیادی طور پر آٹے اور پانی کی محدود امداد کی تقسیم ہوئی، ملحقہ خان یونس گورنریٹ میں جنگ کی شدت کی وجہ سے امداد کی تقسیم بڑی حد تک روک دی گئی ہے۔

شائع 04 دسمبر 2023 11:30am

7 اکتوبر کے بعد ہر 3 میں سے ایک اسرائیلی کا ذہنی بیماری میں مبتلا ہونے کا انکشاف

اسرائیل اور نیویارک کی حالیہ تحقیق میں انکشاف میں ہوا ہے کہ 7 اکتوبر کو حماس کے حملے اور اسرائیل کی غزہ میں مسلسل بمباری کے بعد ہر تین میں سے ایک اسرائیلی میں ’پوسٹ ٹرومیٹک اسٹریس ڈس آرڈر‘ (پی ٹی ایس ڈی) نامی ذہنی بیماری کی علامات ظاہر ہوئی ہیں۔

قطری نشریاتی ادارے الجزیرہ کی رپورٹ کے مطابق یہ تحقیق اسرائیل کی اچوا اکیڈمک کالج حیفہ یونیورسٹی اور نیویارک کی کولمبیا یونیورسٹی کے محققین کی جانب سے کی گئی۔

الجزیرہ کی رپورٹ میں اسرائیل کی رپورٹ کا حوالہ دیا گیا کہ تحقیق میں 18 سال اور اس سے زیادہ عمر کے 420 اسرائیلیوں سے غزہ میں حملوں اور اس کے نتیجے میں ہونے والی جنگ کے بارے میں سروے کیا گیا۔

سروے کے نتائج سے معلوم ہوا کہ 34 فیصد اسرائیلیوں میں پی ٹی ایس ڈی کی علامات تھیں۔

رپورٹ کے مطابق وہ لوگ جو ان حملوں سے براہ راست متاثر ہوئے یا جنہوں نے اپنے کسی قریبی رشتہ دار کو کھو دیا، ان میں سے 50 فیصد سے زائد اسرائیلی پوسٹ ٹرامیٹک اسٹریس ڈس آرڈر کی علامات میں مبتلا ہیں۔

مزید پڑھنے کے لیے یہاں کلک کریں