پاکستان میں کورونا وائرس کے کیسز پر ایک نظر

ملک میں 26 فروری کو پہلا کیس سامنے آیا تاہم اپریل کے آغاز سے اس میں تیزی ہوئی اور مئی اور جون میں صورتحال یکسر تبدیل ہوگئی۔
اپ ڈیٹ 05 جنوری 2021 11:39pm

دنیا بھر کی طرح پاکستان میں بھی کورونا وائرس کا پھیلاؤ جاری ہے تاہم یہ وائرس پاکستان میں کب آیا اور اب تک کس تیزی سے اس کے کیسز اور اموات کی تعداد بڑھی، اس کی مکمل تفصیل یہاں بیان کی گئی ہے۔

پاکستان میں کورونا وائرس کا پہلا کیس 26 فروری 2020 کو ملک کے سب سے بڑے شہر کراچی میں سامنے آیا۔

مارچ 2020

بعد ازاں سندھ حکومت کی جانب سے یہ تصحیح کی گئی تھی 'غلط فہمی' کے باعث ایک مریض کا 2 مرتبہ اندراج ہونے کے باعث غلطی سے تعداد 15 بتائی گئی تھی۔ تاہم اصل تعداد 14 ہے، اس تصحیح کے بعد ملک میں کورونا کیسز کی تعداد 10 مارچ تک 18 ریکارڈ کی گئی۔

اس کے بعد سے وائرس کے کیس میں تیزی دیکھی گئی اور 17مارچ کو ملک کے چاروں صوبوں سندھ، پنجاب، بلوچستان اور خیبرپختونخوا میں کورونا وائرس کے مزید کیسز رپورٹ ہوئے جس کے بعد ملک میں مجموعی تعداد 237 تک پہنچ گئی تھی

وائرس کی تیزی کے اثرات یہی سے آنا شروع ہوگئے تھے کیونکہ ایک سے 2 ہزار تک کیسز پہنچنے میں صرف 5 دن لگے تھے جبکہ اسی عرصے میں 18 اموات بھی دیکھی گئیں۔

اپریل 2020

تاہم اپریل کے آغاز سے ہی وائرس کے کیسز میں اضافے کی ایک نہی لہر سامنے آنا شروع ہوئی۔

اس طرح ملک میں 2 سے 3 ہزار تک کیسز پہنچنے میں 5 دن لگے جبکہ اسی عرصے میں 21 اموات بھی سامنے آئیں۔

یوں ملک میں کیسز مزید 4 روز بعد ایک ہزار سے زائد کیسز سامنے آگئے اور اسی عرصے میں 31 اموات بھی ریکارڈ کی گئیں۔

اس طرح 6 ہزار سے بڑھ کر کیسز 7 ہزار سے تجاوز کرنے میں ایک دن کا وقت لگا اور اس ایک روز میں 17 اموات بھی ہوئیں۔

ایک روز گزرنے کے ساتھ ہی ملک میں ریکارڈ کیسز کے بعد کیسز 8 سے بڑھ کر 9 ہزار سے تجاوز کرگئے اور 24 اموات بھی سامنے آئیں۔

مئی 2020

جون 2020

جولائی 2020

اگست 2020

ستمبر 2020

ستمبر کی21 تاریخ کو ملک میں عالمی وبا کورونا وائرس کے مزید 638 کیسز اور 6 اموات رپورٹ ہوئیں، اس طرح مجموعی کیسز کی تعداد 3 لاکھ 6 ہزار 630 ہوگئی اور اموات 6 ہزار 423 تک پہنچ گئیں۔

22 ستمبر کو سامنے آنے والے کیسز کی مجموعی تعداد 450 رہی جبکہ اموات میں 7 کا اضافہ دیکھنے میں آیا، اس کے بعد مجموعی کیسز کی تعداد 3 لاکھ 7 ہزار 80 اور اموات 6 ہزار 430 ہوگئیں۔

23 ستمبر کو یہ عالمی وبا پاکستان میں مزید 746 افراد کو متاثر اور 4 کی موت کا باعث بنی، تاہم 5 کیسز کو ایڈجسٹ کیا گیا جس جس کے بعد مجموعی کیسز 3 لاکھ 7 ہزار 821 ہوگئی اور اموات 6 ہزار 434 تک پہنچ گئیں۔

24 ستمبر کو ملک میں کورونا وائرس کے مجموعی کیسز میں 852 اور اموات میں 9 کا اضافہ رپورٹ ہوا، جس کے بعد مجموعی کیسز 3 لاکھ 8 ہزار 673 اور اموات 6 ہزار 443 تک پہنچ گئیں۔

25 ستمبر کو کیسز میں 584 کا اضافہ ہوا جبکہ 5 افراد لقمہ اجل بنے، جس کے بعد مجموعی کیسز کی تعداد 3 لاکھ 9 ہزار 257 ہوگئی اور اموات 6 ہزار 448 تک جاپہنچیں۔

26 ستمبر کو مزید 324 کیسز کا اضافہ ہوا اور 3 اموات بھی رپورٹ ہوئیں اور مجموع تعداد کیسز کی 3 لاکھ 9 ہزار 581 ہوگئیں اور اموات 6 ہزار 451 ہوگئیں۔

ستمبر کی 27 تاریخ ملک میں کورونا وائرس کے 694 افراد میں وائرس کی تشخیص ہوئی اور 6 مریض انتقال کرگئے اور اس طرح مجموعی کیسز کی تعداد 3 لاکھ 10 ہزار 275 اور اموات 6 ہزار 457 تک پہنچ گئی۔

28 ستمبر کو پاکستان میں مجموعی طور پر 944 کیسز اور 12 اموات کا اضافہ ہوا، جس کے بعد کیسز 3 لاکھ 11 ہزار 219 اور اموات 6 ہزار 469 تک پہنچ گئیں۔

29 ستمبر کو ملک میں وبا سے متاثر ہونے والوں کی تعداد میں 697 اور اموات میں 7 کا اضافہ رپورٹ ہوا، یوں مجموعی کیسز 3 لاکھ 11 ہزار 916 ہوگئے اور اموات کی تعداد بڑھ کر 6 ہزار 476 ہوگئیں۔

مہینے کے آخری روز یعنی 30تاریخ کو ملک میں 658 افراد میں وائرس کی تشخیص ہوئی اور 5 مریضوں کا انتقال ہوا، جس کے بعد اموات 6 ہزار 481 ہوگئیں جبکہ متاثرین کی تعداد 3 لاکھ 12 ہزار 574 تک جاپہنچی۔


مرتب کردہ: محمد بلال خان

کورونا وائرس سے متعلق اپ ڈیٹ کے لیے یہاں کلک کریں۔


نوٹ: یہ اعداد و شمار سرکاری کورونا پورٹل اور صوبائی صحت حکام کے فراہم کردہ ہیں، تاہم ان میں یومیہ کیسز کے اندراج میں فرق ہوسکتا ہے کیونکہ مختلف مواقع پر حکام کی جانب سے کیسز اور اموات تاخیر سے فراہم کیے گیے جبکہ انہیں ایڈجسٹ اور ڈپلکیٹ ہونے کی وجہ سے ڈیلیٹ بھی کیا گیا، لہٰذا اس میں انسانی غلطی خارج از امکان نہیں۔

ہیڈر تصویر: اے ایف پی